Voice of Asia News

مقبوضہ کشمیر، پلوامہ میں شہید نوجوان کی نماز جنازہ میں ہزاروں افراد کی شرکت

سرینگر (وائس آف ایشیا)مقبوضہ کشمیر کے ضلع پلوامہ میں آج ہزاروں نے کٹھ پتلی انتظامیہ کی طرف سے عائد کردہ پابندیوں کو خاطر میں نہ لاتے ہوئے شہید نوجوان مصور احمد وانی کی نماز جنازہ میں شرکت کی۔ کشمیر میڈیاسروس کے مطابق بھارتی فوجیوں نے مصور احمد وانی کو گزشتہ رات ضلع کے علاقے کنگن میں محاصرے اور تلاشی کی کارروائی کے دوران شہید کیا تھا۔کٹھ پتلی انتظامیہ نے لوگوں کو شہید نوجوان کی نماز جنازہ میں شرکت اور بھارت مخالف مظاہروں سے روکنے کیلئے آج پورے ضلع پلوامہ میں سخت پابندیاں عائد کر رکھی تھیں تاہم ضلع کے اطراف واکناف سے لوگ پابندیوں کو خاظر میں نہ لاتے ہوئے نماز جنازہ میں شرکت کیلئے شہید نوجوان کے آبائی گائوں دیلی پورہ پہنچے ۔عینی شاہدین کے مطابق نماز جنازہ کے موقع پر چند مجاہدین اچانک نمودار ہوئے اور ہوا میں فائرنگ کر کے شہید نوجواں کو سلامی پیش کی۔نماز جنارہ کے بعد لوگوں نے زبردست مظاہرے کیے اور بھارت کے خلاف اور آزادی کے حق میں فلک شگاف نعرے لگائے ۔ بھارتی فورسز کے اہلکاروں نے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے آنسوگیس کی شدید شیلنگ کی جس کے بعد فورسز اہلکاروں اور مظاہرین کے جھڑپیں شروع ہو گئیں جو آخری اطلاعات تک جاری تھیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے