Voice of Asia News

افغان جنگ سے پاکستان اور افغانستان دونوں متاثر ہوئے: مشیر قومی سلامتی

اسلام آباد(وائس آف ایشیا ) مشیر قومی سلامتی ناصر جنجوعہ کا کہنا ہے کہ پاکستان اور افغانستان دکھ درد کے شراکت دار ہیں۔ پاکستان اب افغانستان کی جنگ کا سب سے متاثرہ ملک بن چکا ہے۔ افغان جنگ سے پاکستان اور افغانستان دونوں متاثر ہوئے۔تفصیلات کے مطابق مشیر قومی سلامتی ناصر جنجوعہ نے پاک افغان مذاکرات کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ افغان طالبان کو سیاسی دھارے سے باہر رکھنا بڑی غلطی تھی۔ پاکستان نے افغانستان کے باعث دہشت گردی کا سامنا کیا۔ناصر جنجوعہ کا کہنا تھا کہ پاکستان اور افغانستان کو مل کر امن و استحکام یقینی بنانا ہوگا۔ چین کے پاکستان اور افغانستان کا ساتھ دینے پر شکر گزار ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہمیں سیاست کو اقتصادیات سے الگ کرنا ہوگا۔ پاکستان اور افغانستان مواقع کی سرزمین ہیں۔ دونوں تجارتی راہداری اور تجارتی مراکز کی شکل بن سکتے ہیں۔مشیر قومی سلامتی کا کہنا تھا کہ پاکستان اور افغانستان دکھ درد کے شراکت دار ہیں۔ پاکستان اب افغانستان کی جنگ کا سب سے متاثرہ ملک بن چکا ہے۔ افغان جنگ سے پاکستان اور افغانستان دونوں متاثر ہوئے۔ناصر جنجوعہ نے مزید کہا کہ پاکستان نے افغان مسئلے کے امن سے حل کی کوشش کی۔ ہر مرتبہ طالبان کو امن عمل سے باہر رکھا گیا، ’کوشش کر رہے ہیں کہ طالبان امن عمل کا حصہ بنیں‘۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے