Voice of Asia News

کشمیر کے مقامی نوجوان عسکری صفوں میں شامل ہورہے ہیں ہم انہیں ماریں گے بپن راوت

سری نگر(وائس آف ایشیا) بھارتی فوج کے سربراہ جنرل بپن راوت نے کہاہے کہ نئی دہلی کی کشمیر میں مذاکرات کی پیش کش احسن قدم ہے اور امن کو ایک موقع دیا جانا چاہئے۔ اکنامک ٹائمز کے ساتھ ایک خصوصی بات چیت کے دوران فوجی سربراہ کا کہنا تھا کہ وہ مذاکرات کے حق میں ہیں تاکہ کشمیر ی نوجوانوں کی عسکریت میں بھرتی کی لہر کو روکا جاسکے ۔انہوں نے کہاکہ مذاکرات ضرور ہونے چاہیں ۔معاملہ یہ ہے کہ کشمیر کے مقامی نوجوان عسکری صفوں میں شامل ہورہے ہیں ۔ہم انہیں ماریں گے اور پھر نئے نوجوان بھرتی ہونگے۔ دراندازی کو روکا جاسکتا ہے لیکن مقامی نوجوانوں کی عسکریت میں بھرتی جاری رہے گی لہذا اب امن کو ایک موقع دیا جانا چاہئے اور نتائج کا انتظار کرنا چاہئے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے