Voice of Asia News

پھلوں اور سبزیوں سے علاج: ڈاکٹر رفیق احمد

لاہور (وائس آف ایشیا)پھلوں اورسبزیوں میں موجود قدرتی اجزا کے بے شمار فوائد ہوتے ہیں جو مختلف بیماریوں سے بچاؤ میں بہت اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ ہر سبزی اور پھل اپنے اندر مختلف افادیت لیے ہوئے ہے جن کا باقاعدہ استعمال صحت کے لیے مثبت اثرات کا حامل ہوتا ہے کیونکہ سبزیاں خالص قدرتی اجزا ہونے کے علاوہ مختلف وٹامن، نمکیات، قدرتی پانی اور ہزاروں دوسرے پلانٹ فائبر (ریشے دار اجزا) سے بھرپور ہوتی ہیں جن کا استعمال انسان کو تندرست و توانا اور چاک و چوبند رکھنے کے لیے نہایت ضروری ہے۔ ان فوائد کے علاوہ سبزیوں میں چکنائی (FAT) کی مقدار نہ ہونے کے برابر ہوتی ہے اور ان میں موجود ریشہ دار اجزا توانائی حاصل کرنے کے لیے بہترین ہوتے ہیں یہ ریشہ دار اجزا نظام انہضام کو بہتر طور پر رواں رکھتا ہے جب کہ دیگر وٹامنز جسم کے اعصابی نظام اور مسلز کو مضبوط بنانے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ تمام سبزیاں چکنائی، کیلوریز اور سوڈیم سے پاک ہوتی ہیں۔
حالیہ تحقیق نے بھی یہ بات ثابت کر دی ہے کہ پھلوں اور سبزیوں کا استعمال نہ صرف مختلف اقسام کے امراض کا تدراک کرتا ہے بلکہ انسان کو صحت مند رکھنے میں موثر کردار ادا کرتا ہے۔
جوڑوں کا درد
بندگوبھی:
بند گوبھی کا شمار بھی ان سبزیوں میں ہوتا ہے جن کے طبی فوائد بہت زیاد ہیں۔ حال ہی میں برطانیہ کی ایک یونیورسٹی میں کی جانے والی تحقیق سے انکشاف ہوا ہے کہ بند گوبھی کا استعمال جوڑوں کی تکالیف سے نجات حاصل کرنے کا بہترین ذریعہ ہو سکتا ہے۔
طبی ماہرین کے مطابق بند گوبھی میں پایا جانے والا قدرتی مرکب سلفر و فین ہڈیوں اور جوڑوں کی تکالیف کے خلاف موثر حفاظت کی طاقت رکھتا ہے۔
قبض سے نجات:
بند گوبھی ایک سخت اور ریشہ دار سبزی ہے جو قبض کو دور کرنے میں نہایت مفید ہے یہ آنتوں کو متحرک کرتی ہے اور نظام انہضام کو بہتر بناتی ہے۔ کٹی گوبھی کھانے سے قبض کے لیے نہایت سود مند ہے جو منفی اثرات مرتب کیے بغیر فوری اثر دکھاتا ہے۔ باریک کئی ہوئی گوبھی میں تھوڑا سا نمک، کالی مرچ اور لیموں شامل کر کے استعمال کرنے سے قبض فوراً ختم ہو جاتا ہے۔
معدے کا السر:
بند گوبھی کا جوس معدے کے السر کو حیرت انگیز طور پر فائدہ پہنچاتا ہے۔ یہ ایک قدیم علاج ہے۔ Stand ford University School of Medicine کے ایم ڈی (Garner Cheney) نے تیس سال پہلے بہت سے السر کے مریضوں کا کچی گوبھی کے جوس سے علاج کیا تھا کیونکہ گوبھی کے جوس میں Antiulcer Factor یعنی وٹامن U موجود ہوتا ہے جو پکانے سے ختم ہو جاتا ہے۔ یہ علاج 80 سے 90 گرام بند گوبھی کے جوس پر مشتمل ہوتا ہے جسے روزانہ تین وقت استعمال کیا جا سکتا ہے۔
موٹاپا:
حالیہ تحقیق نے یہ ثابت کیا ہے کہ بند گوبھی اپنے اندر ایک نہایت مفید اور موثر جزو رکھتی ہے جو Tractronic acid کہلاتا ہے۔ یہ ایسڈ چکنائی میں شکر اور دوسرے کاربوہائیڈریٹ (Carbohyderate)کی منتقلی کو روک دیتی ہے۔ اس لیے بند گوبھی وزن کو کم کرنے میں اہم کردار ادا کرتی ہے۔
خود کو سلم رکھنے کا آسان طریقہ بند گوبھی کا سلاد ہے جو Dieting کی تکلیف سے گزرے بغیر وزن کو کم کر دیتا ہے۔
منہ کی بو سے نجات
ٹماٹر:
روزانہ ایک یا دو ٹماٹروں کا استعمال منہ کی ناخوش گوار بو کو ختم کر دیتا ہے سبب ناخوشگوار بو والا عنصر سلفر ہے جو بیکٹیریا کے ذریعے پیدا ہوتا ہے اور ایسی جگہ پر زیادہ پنپتا ہے جہاں آکسیجن کی کمی ہوتی ہے جیسے کہ زبان کے پچھلے حصہ میں۔ ٹماٹر میں ایسے مرکبات ہوتے ہیں جو Lonones کہلاتے ہیں۔ یہ مرکبات سلفر کی بو کو ختم کر دیتے ہیں۔
دہی:
ٹماٹر کے علاوہ ہر روز تھوڑی مقدار میں دہی کھا لینے سے منہ میں موجود متحرک بیکٹیریا ان بیکٹیریا کو ختم کر دیتے ہیں جو منہ میں بو پیدا کرنے کا باعث بنتے ہیں۔
گاجر:
کچی گاجر چبانے سے منہ کی ناخوشگوار بو ختم ہو جاتی ہے جو اکثر دانتوں میں پھنسے ہوئے کھانے کے ذرات کے سڑنے کی وجہ سے پیدا ہوتی ہے۔ گاجر چبانے سے منہ میں تھوک (Saliva) بننے کا عمل تیز ہو جاتا ہے جو کھانے کے ذرات سے چھٹکارا دینے میں مدد کرتا ہے۔
چوٹ یا خراش
سفید سرکہ:
چوٹ یا خراش کو ٹھیک کرنے میں سرکہ کا استعمال بہت مفید ہے۔ روئی کے پھائے کو سفید سرکہ میں بھگو کر چوٹ یا خراش پر لگا لیں اور ایک گھنٹے تک لگا رہنے دیں۔ سرکہ چوٹ کی نیلاہٹ کم کر دیتا ہے اور چوٹ تیزی سے ٹھیک ہونا شروع ہو جاتی ہے۔
پیاز:
پیاز قدرتی اجزا Euercetin سے بھرپور ہوتا ہے جسے جراثیم کش مادہ سمجھا جاتا ہے یہ چوٹ یا خراش کے اردگرد موجود سوجن کو کم کر دیتا ہے اور خون کو جمنے سے روکتا ہے۔
ڈائریا(Diarrhea)
سیب:
سیب کو چھلکا اتارے بغیر کدوکش کریں اور اسے پندرہ سے بیس منٹ تک پلیٹ میں پڑا رہنے دیں جب ان کا رنگ براؤن ہو جائے تو کھا لیں۔ سیب میں موجود Pectin نظام انہضام کی کارکردگی کو بہتر بناتاہے۔اس پھل میں Tartavic Acid اور Mclic شامل ہوتا ہے جو معدے کی تیزابیت میں باقاعدگی لاتا ہے۔ سیب کو براؤن کر کے استعمال کرنے کا مطلب ان اجزا کو حاصل کرنا ہوتا ہے۔
جسم کی ناخوش گوار بو سے نجات
سوڈیم بائی کاربونیٹ:
کھانے میں استعمال ہونے والا سوڈا پسینے کی بو ختم کرنے کے لیے انتہائی موثر نسخہ ہے۔ اگر اسے پاؤڈر پف کی مدد سے جسم پر چھڑک لیا جائے یہ تو پسینے کو فوراً جذب کر کے جسم کی ناخوش گوار بو کو ختم کر دیتا ہے۔
ایلوویرا:
ایلوویرا کا جوس قبض کے لیے انتہائی مفید ہے کیونکہ اس میں شامل کیمیکلز آنتوں کو متحرک کر کے قبض کو ختم کر دیتے ہیں۔
خشکی کو دور کرنے میں ایلوویرا ایک مفید اور قدیم علاج ہے۔ ایلو ویرا ایک ریگستانی پودا ہے جو تقریباً چھ ہزار سال سے ادویات میں استعمال ہو رہا ہے اور آج کل یہ امریکہ میں بہت زیادہ استعمال ہونے والا پود ہے۔ ایلوویرا کے پتوں کے اندر موجود صاف شفاف گودا مختلف اقسام کے جلدی امراض میں استعمال کیا جاتا ہے جیسے کہ خشک جلد، جلی ہوئی جلد وغیرہ۔
تاہم ایلوویرا خشکی کو روکنے میں بھی اہم کردار ادا کرتا ہے۔ رات کو سونے سے پہلے بالوں پر پوری طرح ایلوویرا کا گودا مل لیں، خاص طور پر سر کی کھال پر اور صبح کسی اچھے شیمپو سے سردھو لیں اور جب بھی ضرورت پڑے یہ عمل دہرائیں خشکی دور ہو جائے گی۔
کھیرا:
قبض کو ختم کرنے میں بہت اہم کردار ادا کرتا ہے۔ دن میں ایک کھیرا ضرور کھانا چاہیے کیونکہ یہ قدرتی پانی اور ریشے دار اجزا سے بھرپور ہوتا ہے۔ جو نظام انہضام کی کارکردگی کو بہتر بناتا ہے۔
کھانسی اور ٹھنڈ کا علاج
لہسن اور شہد:
کھانسی کو دور کرنے کے لیے لہسن اور شہد کا استعمال نہایت آزمودہ اور فائدہ مند علاج ہے جو بآسانی دستیاب ہوتا ہے۔
لہسن کے ایک جوئے کوکچل کر ایک چائے کے چمچ شہد میں ملائیں اب اس میں ایک چائے کا چمچ سفید سرکہ یا لیموں ڈال کر ہلا لیں۔ اس مرکب کے استعمال سے کھانسی میں کافی افاقہ ہو گا کیونکہ یہ مرکب ناک کی بند نالیوں کو کھول دیتا ہے جب کہ شہد بلغم کو توڑتا ہے لہسن اور شہد وٹامن اور جراثیم کش خصوصیات کے حامل ہوتے ہیں۔
خشکی سے نجات
کوکونٹ آئل:
خشکی سے نجات حاصل کرنے کیلئے کوکونٹ آئل استعمال نہایت مفید ہے۔ خشکی عام طور پر فنگل ایفیکشن کی وجہ ہوتی ہے جب کہ ناریل کے تیل میں موجود Auric اور Capryli Acid ایٹنی فنگل اور اینٹی وائرل خصوصیات کے حامل ہوتے ہیں۔
rafiqdr891@gmail.com

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے