Voice of Asia News

دل سے جڑے حقیقت: دل کی بیماری سے موت کا خطرہ

لاہور(وائس آف ایشیا کی خصوصی رپورٹ)طرز زندگی ڈیسک: خاندان، بچے اور شوہر کی توجہ ركھتے- رکھتے آپ خود کا خیال رکھنا بھول جاتی ہیں. اپنے ساتھ ہونے والی دككتو کو نظر انداز کرتی ہیں. ہمارے ملک میں ایسا نہیں ہے کہ صرف مردوں میں ہی دل کی بیماری ہوتی ہے. دراصل، حال ہی میں ایک رپورٹ کے مطابق 45 فیصد خواتین کی موت ہارٹ اٹیک کی وجہ سے ہو رہی ہے. آج ہم آپ کو خواتین کو دل کی بیماری سے منسلک معلومات کے بارے میں بتا رہے ہیں، جو تمام خواتین کو معلوم ہونا ضروری ہے. 

 دل سے جڑے حقیقت

ایسا نہیں ہے کہ مردوں میں ہی موت ہونے کی وجہ ہارٹ اٹیک ہوتا ہے، بلکہ خواتین میں بھی دل سے جڑی بیماری ہونے پر موت ہونے کا خطرہ بنا رہتا ہے. ایک نئی تحقیق کے مطابق،  ہر پانچ میں سے تین خواتین میں 35 سال کی عمر سے ہی دل کی بیماری کی زد میں آنے کا خطرہ رہتا ہے. لیکن زیادہ تر خواتین کا یہی خیال ہوتا ہے کہ کم سے کم 50 سال کی عمر تک وہ دل کی بیماری سے محفوظ ہیں.

  ینگ خواتین میں بھی ہو سکتی ہے دل کی بیماری کی شکار

ایسٹروجن اور دیگر هارموس دل کی بیماری سے خواتین کی حفاظت کرتے ہیں، اس لئے نوجوان خواتین کو فکر کرنے کی ضرورت نہیں ہے. یہ سب سے بڑی غلط فہمی ہے کہ نوجوان خواتین کو دل کی بیماری سے منسلک خطرے والے عوامل کے بارے میں فکر کرنے کی ضرورت نہیں ہے. نیو یارک سٹی میں موٹےپھيور سینٹر کے كرڈيولجسٹ جے جولیا شن کے مطابق، هالهي میں یہ بھی دیکھا گیا ہے کہ نوجوان خواتین بھی دل سے جڑی بیماریوں کی شکار ہو رہی ہے. دراصل آج کل کی بدلتی طرز زندگی سے اس طرح کی بیماریوں کا خطرہ بڑھ جاتا ہے.

 دل کی بیماری سے موت کا خطرہ

ہر سال مردوں کے مقابلے میں کافی تعداد میں خواتین کی موت دل کی بیماری اور سٹروک کی وجہ سے ہیں. سيكت امریکہ میں ہر 90 سیکنڈ میں ایک خاتون کے دل کے دورے کا شکار ہوتی ہے. خواتین کے لئے سب سے بڑی صحت خطرہ دل کی بیماری کا سب سے بڑا سبب معلومات کی کمی ہے. امریکہ ہرٹ ایسوسی ایشن (اےےچے) کی رپورٹ کے مطابق، 2004 میں تقریبا 42.1 ملین خواتین کو دل کی بیماری تھی اور جس کی وجہ سے 461 ہزار موت ہوئی تھی.

 دل کی بیماری پر کنٹرول کے لئے کیا کریں.

40 سے 60 کی عمر تقریبا 80 فیصد خواتین میں ایک یا ایک سے زیادہ دل کی بیماری کے خطرے کا عنصر کو کنٹرول یا کم کیا جا سکتا ہے. خطرے کے عوامل کو نمک کے استعمال، تمباکو نوشی، ہائی ایل ڈی ایل (گندا) کولیسٹرول کی سطح کم یا اےچڈيےل (اچھا) سطح، ہائی بلڈ پریشر، موٹاپا، جسمانی غیرفعالیت، انینترت ذیابیطس اور ہائی کشیدگی کی سطح کو کنٹرول کرکے کم کیا جا سکتا ہے.
5-علاج کی کمی کی وجہ سے

مردوں کے مقابلے میں خواتین اپنی توجہ کم رکھتی ہے جس کی وجہ سے آپ کے علاج پر توجہ نہیں دیتی اور بیماری سے ججھتي رہتی ہے. جن خواتین میں دل کی بیماری کا خطرہ ہوتا ہے، ان کا بھی مردوں کی طرح باقاعدگی سے ٹیسٹ ہونا چاہئے.

 اسٹروک کا خطرہ زیادہ ہونا

خواتین میں دل کے اٹیک کئی بار ہونے سے دل کے دورے کا خطرہ بڑھ جاتا ہے. لیکن وہ پہچانا نہیں جاتا ہے. ڈاکٹروں کے تحت مولياكن اور عورتوں کا علاج ہو سکتا ہے، کیونکہ ان میں آدمی کی طرح اعلی خطرے کو ظاہر نہیں کرتے، خاص طور پر اگر وہ نوجوان ہیں اور صحت مند دکھائی دیتی ہے.
  دل کے اٹیک کے لكش مردوں سے مختلف ہوتے ہیں

مردوں کے مقابلے میں خواتین میں دل کے دورے کے لكش مختلف ہو سکتے ہیں، ایسا ذرروي نہیں کہ جو لكش آپ مردوں میں ظاہر ہے وہ ہی خواتین میں بھی دکھائی دیں. خواتین کو سانس، تھکاوٹ، پیٹ دباؤ، متلی یا حسد، جبڑے، گردن، پیٹھ یا اوپری کندھے کے درد کی تکلیف کو محسوس کرنے کا امکان زیادہ ہوتا ہے.

 دل کی بیماری کو متاثر کرنے والے عوامل

اکثر خواتین کا یہ ماننا ہے کہ کولیسٹرول اور بلڈ پریشر کے عام ہونے پر دل کے دورے کے بارے میں فکر کرنے کی کوئی ضرورت نہیں ہوتی. اگرچہ کولیسٹرول اور بلڈ پریشر دونوں دل کی بیماری کے عنصر شراکت ہے، لیکن دیگر عوامل بھی اسے متاثر کر سکتا ہے. خاندان کی تاریخ کا اہم اہمیت ہے. اس کے علاوہ زیادہ وزن اور خون میں شکر بھی خطرے کا عنصر ہو حاصل ہے.
  حمل کے دوران ہونے والی صحت کے مسائل

حمل کے دوران ہونے والی صحت واقعات جیسے پريكلمپسيا یا دوران حمل ذیابیطس کے طور پر زندگی میں بعد میں هردي بیماری کے لئے خطرے کا عنصر ہو سکتا ہے. پريكلمپسيا، دوران حمل ذیابیطس حمل کے دوران ہائی بلڈ پریشر کے بارے میں ہمیشہ کہا جاتا ہے کہ یہ مسائل بچے کی پیدائش کے بعد دور ہو جاتی ہے. لیکن ان کا اثر دل کی بیماری کے خطرے کو بڑھا دیتا ہے. پريكلمپسيا کی وجہ سے ایک خاتون میں وسط عمر میں دل کی بیماری کا خطرہ دوگنا بڑھ جاتا ہے. جبکہ گربھاودھ ڈايبٹيیز ہونے پر اکثر گلوکوز پر اثر ڈالتا ہے جس وجہ موٹاپا اور دوسری دقتیں بڑھ لگتی ہے.

 ہاٹ فلیش ہمیشہ رجونورت کا اشارہ نہیں

ہاٹ فلیش اکثر رجونورتی میں ہونے والے تبدیلی کے ساتھ شامل کی جاتی ہے. لیکن کیا آپ جانتی ہیں کہ یہ دل کی مسئلہ کا اشارہ بھی ہو سکتا ہے. یہ اس بار پر انحصار کرتا ہے کہ یہ کب اور کس طرح ہوتا ہے. اگر ہاٹ فلیش کا مسئلہ ٹی وی کے ارد گرد یا فون پر بات کرتے وقت ہوتی ہے، تو یہ ہارمون ہوتی ہے. لیکن کوئی مشکل کام کرنے پر ایسا ہونے پر اینجائینا کے علامات ہو سکتے ہیں. ایننجانا دل کی بیماری کی ایک شکل ہے کہ دل کی عضلات سے متعلق مسئلہ ہوتی ہے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے