Voice of Asia News

ای سگریٹ تمباکو نوشی سے چھٹکارے کا راستہ نہیں،ماہرین

سان فرانسسکو (وائس آف ایشیا) ایک تازہ تحقیقی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ای سگریٹ کا استعمال تمباکونوشی ترک کرنے میں زیادہ معاون نہیں دیکھا گیا ہے، ای سگریٹ کا استعمال کرنے والوں کا دوبارہ باقاعدہ سگریٹ نوشی کی جانب لوٹ آنا آسان ہے ۔یورپی تحقیقی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ تمباکونوشی ترک کرنے کے لیے ای سگریٹس کا استعمال کرنے والے سگریٹ نوشی کو یکسر ختم کرنے والوں کے مقابلے میں نصف تعداد میں کامیاب ہو پاتے ہیں۔اس مطالعاتی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ایسے افراد جو تمباکونوشی ترک کرنے کے بعد کبھی کبھار ای سگریٹ کے کش لگا لینے والوں کے تمباکونوشی مکمل طور پر ترک کر دینے کی شرح 67 فیصد کم ہوتی ہے۔ اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ روزانہ کی بنیاد پر ای سگریٹ کا استعمال کر کے سگریٹ نوشی کو خیرباد کہنے والوں کی کامیابی کی شرح اس عادت کو یکسر ختم کر دینے والوں کے مقابلے میں 48 فیصد کم ہے۔یونیورسٹی آف کیلی فورنیا، سان فرانسِسکو کے مرکز برائے انسدادِ تمباکونوشی تحقیق سے وابستہ اس مطالعاتی رپورٹ کے سینیئر مصنف اسٹانٹون گلانٹس کے مطابق، ’’یہ بات لوگوں تک پہنچانا انتہائی ضروری ہے کیوں کہ عوامی سطح پر بتایا یہی جا رہا ہے کہ ای سگریٹ تمباکو نوشی ترک کرنے کا ذریعہ ہیں۔‘‘ان کا مزید کہنا ہے، ’’اس میں کوئی شک نہیں کہ بعض افراد نے ای سگریٹ کا استعمال کر کے تمباکو نوشی ترک کر دی، مگر اس طریقے کو استعمال کر کے ناکام ہونے والوں کی تعداد کہیں زیادہ ہے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے