Voice of Asia News

انار کو زمانے میں غذا اور دوا کی حیثیت سے بلند مقام حاصل ہے

لاہور(وائس آف ایشیا)قدرت کے عطا کردہ پھل بے شمار ہیں لیکن ان میں انار کو زمانے میں غذا اور دوا کی حیثیت سے بلند مقام حاصل ہے۔ اس پھل کا بیرونی چھلکا سخت ہوتاہے، اس کے اندر سفید سرخ رنگ کے رسیلے دانے بھرے ہوتے ہیں جوٹھوس گودے میں لپٹے اور محفوظ ہوتے ہیں۔ انار کی بعض اقسام کے خوش ذائقہ،شیریں اور نیم ترش دانوں میں سخت بیج ہوتے ہیں اور بعض اقسام میں نرم بیچ ہوتے ہیں۔انار قلب اور جگر کیلئے بہت مفید ہوتاہے۔ طب یونانی اور مشرق کے علاوہ طب ہندی میں بھی اسے قلب اور جگر کے امراض کے علاج میں اہم مقام حاصل ہے۔انار شریانوں کو صاف رکھنے کے علاوہ جگر کی صحت اس کی اصلاح اور کار گزاری میں اضافہ کرتا ہے۔ انار مفرح، مسکن اور زور ہضم ہوتاہے۔ شربت انار اور جوراش اناریں طب میں بہ کثرت استعمال ہوتے ہیں۔۱۰۰۰؍ گرام انار میں ۳۴۶؍حرارے ،۷ء۱۸؍ نشا ستے ،۷ء۱۳؍گرام شکر ،۰ء۴؍گرام ریشہ،۲ء۱ چکنائی،۷ء۱؍گرامرائبو فلاون،۲۹ء۰؍ملی گرام نیاسن، پینٹوتھینک، ایسڈ۳۸
ء۰ ملی گرام اور حیا طین ب،۶؍(وٹامن سی)۸۰ء۰ ملی گرام ہوتے ہیں۔ فولیٹ کے علاوہ اس میں حیاطین ج،(وٹامن سی)۱۰؍ملی گرام کیلشیم۱۰؍ ملی گرام،فولاد۳ء۰؍ ملی گرام میگنیشئیم۱۲؍ملی گرام، فاس فورس ۳۶؍ ملی گرام،پوٹا شیم ۲۳۶ ملی گرام اور جست (زنک) ۳۵ء۰ ملی گرام بھی ہوتے ہیں۔
انار مانع تکسید ہونے کے علاوہ خون کو پتلا رکھتاہے۔ اس کے کھانے سے خون کادباؤ تیزی سے معمول پر آجاتاہے۔ یہ قلب کی تکالیف دور کرنے میں بہت مؤثر ہوتاہے۔
تازہ تحقیق کے مطابق بھول نسیان کے مرض کے خاتمے کیلئے بھی انار کھانا مفید ہوتا ہے، اچھی صحت برقرار رکھنے کیلئے روزانہ ایک گلاس انار کا رس پینا بہت مفید اور صحت بخش قراردیا جاتاہے۔انار پیٹ کے اطراف جمع ہونے والی چربی کم کرنے کے علاوہ فالج کے خطرے سے بھی محفوظ رکھتاہے اس کیلئے انار گردوں کی سوجن دور کرنے میں بھی بہت مفید ہے۔ مصلح جگر کی حیثیت سے انار کا کھانا خاص طور پر یاقان سے چھٹکارا پانے کیلئے بہت مفید اور مؤثر ثابت ہوتا ہے اسی طرح اس کا رس خشک کھانسی دور کرنے کیلئے مفید ہے۔
انار کی جڑ کا چھلکا پیٹ کے کیڑے خارج کرنے کیلئے مؤثرثابت ہوتاہے۔ بعض معالجین کے مطابق جڑ کی چھال کا جوشاندہ پرانے بخار کے مریضوںکو پلانے سے فائدہ ہوتا ہے۔ اس جو شاندہ کو پینے سے بڑھی ہوئی تلی معمول پر آجاتی ہے۔ انار کے رس سے جیلی بھی بنائی جاتی ہے۔ اس میں انگور یا سیب کارس شامل کرنے سے بنائی ہوئی جیلی مقوی اور صحت بخش ہوتی ہے۔ یہ جیلی خاص طور پر قلب اور دماغ کی کمزوری دور کرنے کیلئے مؤثر ثابت ہوتی ہے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے