Voice of Asia News

شر یف برا دارن کو نکال دیا جائے تو پارٹی کی سربراہی سنبھاللیں گے ،پرویز الہی

اسلام آباد(وائس آف ایشیا)مسلم لیگ (ق) کے سینئر رہنما پرویز الہی نے کہا ہے کہ اگر مسلم لیگ (ن) سے نواز شریف اور شہباز شریف کو نکال دیا جائے تو پھر پی ایم ایل (این) کی سربراہی سنبھال لیں گے نواز شریف ختم نبوت کے معاملے پر اللہ کی پکڑ میں آیا ہے مریم نواز کبھی بھی بے نظیر بھٹو نہیں بن سکتی ہے کیونکہ اس پر کرپشن اور جھوٹ کے کوئی الزامات نہیں تھے جو آج مریم نواز پر ہیں ۔ان خیالات کا اظہار پرویز الہی نے لاہور میں نجی ٹی وی چینل کو انٹر ویو کے دوران کیا انہوں نے کہا کہ وہ نیشنل اسمبلی کی سیٹ کیلئے گجرات ،تلہ گنگ اور صوبائیسیٹ کے لئے انتحابات میں حصہ لے رہے ہیں 2013 میں مسلم لیگ (ق) دھاندلی کی وجہ سے نہیں جیت سکی تھی اور اس حوالے سے ہم عمران خان کے بھی ساتھ تھے کیونکہ افتخار چوہدری نے بڑی دھاندلی کرکے ہم سب کی امیدوں پر پانی پھیر دیا تھا انہوں نے مزید کہا کہ وہ ایک صورت میں مسلم لیگ (ن) کی سربراہی کو سنبھال سکتے ہیں اگر نواز شریف اور شہباز شریف دونوں کو (ن) لیگ سے نکال دیا جائے پرویز الہی نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ مریم نواز کا سیاست میں کوئی تجربہ بھی نہیں ہے وہ کبھی بھی بے نظیر نہیں بن سکتی ہے کیونکہ بے نظیر نے اپنے والد سے سیاست سیکھی اور پھر بی بی کی اپنی بھی بڑی سیاست میں جدوجہد تھی اسکے علاوہ مریم نواز پر جو آج جھوٹ اور کرپشن کے الزامات ہیں وہ بے نظیر پر کبھی بھی نہیں تھے پرویز الہی نے نواز شریف کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ نواز شریف ختم نبوت کے قانون میں ترمیم کی وجہ سے اللہ کی پکڑ میں آئے ہیں انہوں نے مزید کہا کہ میں نے جو بھی اپنے حکومت میں فلاحی کام کئے ان میں دوسروں کے بچوں کو بھی اپنے بچے سمجھ کر کئے ہیں جیسے ریسکئیو 1122 ہے لیکن شہباشریف جن ترقیاتی کاموں پر میری تختی دیکھتا ہے تو پاگل ہو جاتا ہے انہوں نے کہا کہ میرے کسی بھی پراجیکٹ میں 1کی کرپشن ثابت ہو جائے تو میں عوامی نمائندہ ہوں مجھے تو عوام پکڑ لے گی

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے