Voice of Asia News

غزہ :تحریک حق واپسی کے شہدا ء کی تعداد 142 ہو گئی، 16 ہزار زخمی

غزہ (وائس آف ایشیا )فلسطین میں وزارت صحت کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ 30 مارچ 2018 سے غزہ کی پٹی میں جاری تحریک حق واپسی کے شہدا کی تعداد 142 ہوگئی ہے۔ ان میں کئی فلسطینی شہدا بھی شامل ہیں جن کے جسد خاکی اسرائیلی فوج نے قبضے میں لے رکھے ہیں۔ فلسطینی میڈیا کے مطابق وزارت صحت کی طرف سے جاری کردہ اعدادو شمار کے مطابق قبضے میں لیے گئے شہدا کے جسد خاکی کے علاوہ دیگر شہدا حق واپسی کی تعداد 142ہوگئی ہے جب کہ 16 ہزار 500 زخمی ہوئے۔ 7901 فلسطینی زخمیوں کو موقع پرطبی امداد مہیا کی گئی جب کہ 8695 زخمیوں کو علاج کے لیے اسپتالوں میں منتقل کیا گیا۔ اسرائیلی فوج کی تحویل میں موجود شہدا کے جسد خاکی 9 بتائے جاتے ہیں۔بیان میں بتایا گیا ہے کہ شہدا میں 18 بچے، دو خواتین، دو صحافی، طبی عملے کے ارکان اور تین معذور بھی شامل ہیں۔ زخمی ہونے والے بچوں کی تعداد 3126 اور خواتین کی تعداد1362 ہے۔ 391 شدید زخمی ہیں اور 3992 کو درمیانے درجے کے زخم آئے ہیں۔بیان میں بتایا گیا ہے کہ 30 مارچ کے بعد اسرائیلی فوج کے پرامن مظاہرین پرحملوں میں 16 ہزار پانچ سو شہری زخمی ہوئے ہیں۔ زخمیوں میں سے 370 کی حالت تشویشناک بیان کی جاتی ہے۔ اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے 45 ایمبولینسوں کو بھی نقصان پہنچا ہے۔ اسرائیلی فائرنگ سے دو فلسطینی صحافی شہید اور 175 زخمی ہوئے۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے