Voice of Asia News

مولی کے انتہائی حیرت انگیز طبی فوائد محمد جمیل بھٹی

 

لاہور(وائس آف ایشیا)موسم سرما کی آمد آمد ہے اوراس موسم میں ہری بھری سبزیاں بھی وافر مقدار میں مارکیٹ میں موجود ہوتی ہیں اوران ہی میں سے ایک ہے مولی گوکہ لوگ اسے سلاد بنانے کے دوران استعمال کرتے ہیں لیکن اس کے انتہائی حیرت انگیز طبی فوائد ہے شاید جن سے ہم اب تک لا علم تھے لیکن ہم آپ کو بتارہے ہیں ان کے فوائد۔
   مولی میں فاسفورس ، کیلشیم اور وٹامن سی کے ساتھ فولاد کی بھی کافی مقدار پائی جاتی ہے۔
   مولی پتھری کے مرض کے لئے ایک مفید سبزی ہے اس کے کھانے سے پتھری کے مرض میں مبتلا مریضوں کو افاقہ ہوتا ہے، اس کے روزانہ کھانے سے پتھری گھل کر ریزہ ریزہ ہو کو پیشاب کے ذریعے نکل جاتی ہے۔
   مولی بواسیر کے مرض میں بھی مبتلا مریضوں کے لئے انتہائی کارآمد سبزی ہے، بواسیر کے مرض میں مبتلا مریض کو اس کا رس روزانہ کی بنیاد پرپلائیں تو اس بیماری سے چھٹکارہ حاصل کیا جاسکتا ہے۔
   یرقان کے مرض میں مبتلا مریضون کو مولی کے پتوں کا رس نکال کراس میں چینی ملاکر پلائیں توبہت جلد یرقان کا خاتمہ ہو جائے گا۔
   مولی جگر اورتلی کے مرض میں بھی مبتلا مریضوں کے افاقے کا ایک ذریعہ ہے جب کہ پیشاب کے مرض میں بھی مبتلا مریضوں کے لئے انتہائی مفید ہے۔
  مولی قبض کشا بھی ہے اور اس کے کھانے سے آنتوں کی حرکتیں تیز ہوجاتی ہیں جو قبض میں مبتلا مریضوں کے لئے افاقے کا سبب بنتی ہے۔

ایک پودے کی جڑ ہے جسے سبزی کے طور پر استعمال کیا جاتا ہے۔ اس کا رنگ عموماً سفید ہوتا ہے ۔ ایشیاء اور افریقہ کے بیشتر علاقوں میں کاشت ہوتا ہے۔ اس کا آبائی وطن ایک اندازہ کے مطابق جاپان ہے اس لیے اسے جاپانی مولی بھی کہا جاتا ہے۔ حیاتین جیم کی اچھی مقدار کے لیے مشہور ہے۔

ﻣﻮﻟﯽ ﮐﮯ ﻃﺒﯽ ﺧﻮﺍﺹ ﺍﻭﺭ ﻋﻼﺝ ﮔﺮﺩﮮ ﺍﻭﺭ ﻣﺜﺎﻧﮧ ﻣﯿﮟ ﭘﺘﮭﺮﯼ ﯾﺎ ﺭﯾﺖ ﺍٓﻧﮯ ﻣﯿﮟﺍﺱ ﮐﺎ ﺍﺳﺘﻌﻤﺎﻝﺍﮐﺴﯿﺮ ﺍﻋﻈﻢ ﮨﮯ ﺍﺱ ﮐﺎﻣﺘﻮﺍﺗﺮ ﺍﺳﺘﻌﻤﺎﻝ ﺍﻥﺍﻣﺮﺍﺽ ﮐﺎ ﺷﺎﻓﯽ ﻋﻼﺝﮨﮯ ﺧﻮﺩ ﺩﯾﺮ ﺳﮯ ﮨﻀﻢﮨﻮﺗﯽ ﮨﮯ ﻣﮕﺮ ﺩﻭﺳﺮﯼﻏﺬﺍﻭٔﮞ ﮐﻮ ﻓﻮﺭﯼ ﮨﻀﻢ ﮐﺮﺩﯾﺘﯽ ﮨﮯ بواسیر ﮐﮯ ﻣﺮﯾﻀﻮﮞ ﮐﯿﻠﺌﮯﻣﻮﻟﯽ ﺍﻭﺭ ﺍﺱ ﮐﮯﭘﺘﻮﮞ ﮐﺎ ﺭﺱ ﺑﮯ ﺣﺪ ﻣﻔﯿﺪ ﮨﮯﺟﻮ ﺟﻠﻦ ﺍﻭﺭ ﺧﺎﺭﺵ ﺑﮭﯽ ﺧﺘﻢ ﮐﺮﺩﯾﺘﺎ ﮨﮯ۔ ﺧﺮﺍﺑﯽﺟﮕﺮ ﻣﯿﮟ ﺑﮯ ﺣﺪ ﻣﻔﯿﺪ ﮨﮯ۔ ﯾﺮﻗﺎﻥ ﮐﮯ ﻣﺮﯾﻀﻮﮞﮐﯿﻠﺌﮯ ﺗﻮ ﯾﮧ ﺑﮯ ﺣﺪ ﻓﺎﺋﺪﮦ ﻣﻨﺪ ﺳﺒﺰﯼ ﮨﮯ اﺱﮐﮯ ﺳﺎﺗﮫ ﮔُﮍ ﮐﮭﺎﻧﮯﺳﮯ ﯾﮧ ﺟﻠﺪ ﮨﻀﻢ ﮨﻮﺟﺎﺗﯽ ﮨﮯ۔ ﺟﮕﺮ ﺍﻭﺭﺗﻠﯽ ﮐﮯ ﺍﻣﺮﺍﺽ ﮐﯿﻠﺌﮯ ﺑﮯ ﺣﺪ ﻣﻔﯿﺪ ﮨﮯ۔ ﭘﯿﺸﺎﺏﮐﺎ ﺟﻞ ﮐﺮ ﺍٓﻧﺎ ﯾﺎ ﺭﮎ ﺭﮎ ﮐﺮ ﺍٓﻧﺎ ﻣﻮﻟﯽﮐﮭﺎﻧﮯ ﺳﮯ ﭨﮭﯿﮏ ﮨﻮﺟﺎﺗﺎ ﮨﮯ۔ یرﻗﺎﻥ ﻭﺍﻟﮯ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﺭﺱ چینی ﻣﯿﮟ ﻣﻼ ﮐﺮ ﭘﺌﯿﮟ ﺍﻓﺎﻗﮧ ﮨﻮﮔﺎ۔ ﻣﻮﻟﯽ ﺧﺎﻟﯽ ﻣﻌﺪﮦﮐﮭﺎﻧﮯ ﺳﮯ ﻧﻘﺼﺎﻥ ﮨﻮﺗﺎ ﮨﮯ۔ موﻟﯽ ﮐﺎ ﻧﻤﮏﺩﺍﻧﺘﻮﮞ ﭘﺮﻟﮕﺎﻧﮯ ﺳﮯ ﭘﺎﺋﯿﻮﺭﯾﺎ ﺍﻭﺭ ﺩﺍﻧﺘﻮﮞﮐﮯ ﺍﻣﺮﺍﺽ ﺩﻭﺭ ﮨﻮﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ۔ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﺭﺱ ﺗﻠﻮﮞ ﮐﮯ ﺗﯿﻞ ﻣﯿﮟﮈﺍﻝ ﮐﺮ ﭘﮑﺎﺋﯿﮟ ﺟﺐﺻﺮﻑ ﺗﯿﻞ ﺭﮦ ﺟﺎﺋﮯ ﺗﻮﺍﺳﮯ ﺑﻮﺗﻞ ﻣﯿﮟ ﮈﺍﻝ ﻟﯿﮟ ﯾﮧ ﮐﺎﻧﻮﮞ ﮐﮯﺍﻣﺮﺍﺽ ﮐﺎ ﺷﺎﮨﯽ ﻋﻼﺝ ﮨﮯ۔ ﺩﺱ ﺗﻮﻟﮧ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎﭘﺎﻧﯽ ﻧﻤﮏ ﻣﻼ ﮐﺮ ﭘﯿﻨﮯﺳﮯ ﺑﮍﮬﯽ ﮨﻮﺋﯽ ﺗﻠﯽ ﺩﺭﺳﺖ ﮨﻮﺟﺎﺗﯽ ﮨﮯ۔ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﺭﺱ ﺑﭽﮭﻮ ﭘﺮﮈﺍﻟﯿﮟ ﺗﻮ ﻭﮦ ﻣﺮﺟﺎﺋﮯ ﮔﺎﺍﻭﺭ ﺟﮩﺎﮞ ﺑﭽﮭﻮ ﻧﮯ ﮈﻧﮓﻣﺎﺭﺍ ﮨﻮ ﻭﮨﺎﮞ ﺭﻭﺋﯽ ﺳﮯﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﭘﺎﻧﯽ ﻟﮕﺎﺋﯿﮟﺯﮨﺮ ﮐﺎ ﺍﺛﺮ ﺯﺍﺋﻞﮨﻮﺟﺎﺋﮯ ﮔﺎ۔ ﮨﺎﺗﮭﻮﮞ ﭘﺮﻣﻞ ﻟﯿﮟ ﺗﻮ ﺑﭽﮭﻮ ﮈﻧﮓ ﻧﮧ ﻣﺎﺭ ﺳﮑﮯ ﮔﺎ۔ گنج ﭘﺮ ﺭﻭﺯﺍﻧﮧ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﺭﺱﺭﮔﮍﻧﮯ ﺳﮯ ﻭﮨﺎﮞ ﺑﺎﻝ ﺍُﮒ ﺍٓﺗﮯ ﮨﯿﮟ۔ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﮯ ﺑﯿﺠﻮﮞ ﮐﺎﺭﺱ ﺑﮑﺮﯼ ﮐﮯ ﺩﻭﺩﮪﻣﯿﮟ ﻣﻼ ﮐﺮ ﻟﮕﺎﻧﮯ ﺳﮯﺧﻨﺎﺯﯾﺮ ﮐﯽ ﮔﻠﭩﯿﺎﮞ ﺩﻭﺭ ﮨﻮﺟﺎﺗﯽ ﮨﯿﮟ۔ ﻣﺘﻮﺍﺗﺮﮐﮭﺎﻧﮯ ﺳﮯ ﻣﺜﺎﻧﮧ ﮐﯽﭘﺘﮭﺮﯼ ﺧﺘﻢ ﮨﻮﺟﺎﺗﯽ ﮨﮯ۔ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﺍﭼﺎﺭ ﺑﮭﯽﺍﯾﮏ ﺍﭼﮭﯽ ﭼﯿﺰ ﮨﮯ۔ﻣﻮﻟﯽ ﮐﮯ ﭨﮑﮍﮮﮐﺎﭦ ﻟﯿﮟ ﺍﻭﺭ ﻣﺮﺗﺒﺎﻥﻣﯿﮟ ﮈﺍﻝ ﮐﺮ ﺭﮐﮫ ﻟﯿﮟﻋﻤﺪﮦ ﺍﻭﺭ ﻟﺬﯾﺬ ﺍﭼﺎﺭ ﺑﻨﮯﮔﺎ۔ ﯾﮧ ﺍﭼﺎﺭ ﮐﮭﺎﻧﮯ ﺳﮯ ﺗﻠﯽ ﺑﻮﺍﺳﯿﺮ ﺭﮐﺎ ﮨﻮﺍﭘﯿﺸﺎﺏ ﮐﯽ ﺗﮑﺎﻟﯿﻒ ﺩﻭﺭ ﮨﻮﺟﺎﺗﯽ ﮨﯿﮟ۔ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﺭﺱ ﻧﮑﺎﻝ ﮐﺮﺍﺳﮯ ﺍٓﮒ ﭘﺮ ﮔﺮﻡ ﮐﺮﯾﮟﺍﻭﺭ ﮔﺎﮌﮬﺎ ﮨﻮﺟﺎﺋﮯ ﺗﻮﺩﮬﻮﭖ ﻣﯿﮟ ﺭﮐﮫ ﮐﺮﺍﺳﮯ ﺳﮑﮭﺎﻟﯿﮟ۔ ﯾﮧﺟﻮﮨﺮ ﻣﻮﻟﯽ ﺗﯿﺎﺭﮨﻮﺟﺎﺋﮯ ﮔﺎ۔ ﺍﺳﮯ ﮐﮭﺎﻧﮯﺳﮯ ﺳﺨﺖ ﺳﮯ ﺳﺨﺖﺩﺭﺩ ﮔﺮﺩﮦ ﮐﻮ ﺍٓﺭﺍﻡ ﺍٓﺟﺎﺗﺎﮨﮯ ﺍﻭﺭ ﺭﮐﺎ ﮨﻮﺍ ﭘﯿﺸﺎﺏ ﺟﺎﺭﯼ ﮨﻮﺟﺎﺗﺎ ﮨﮯ۔ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﻧﻤﮏ بنانے کا طریقہ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﻧﻤﮏ ﺑﮩﺖ ﺳﮯﺍﻣﺮﺍﺽ ﮐﺎ ﻋﻼﺝ ﮨﮯﺳﺨﺖ ﺑﮍﯼ ﺑﮍﯼ ﻣﻮﻟﯿﺎﮞ ﻟﮯ ﻟﯿﮟ ﺍﻧﮩﯿﮟ ﮐﺎﭦ ﻟﯿﮟﺍﻭﺭ ﺑﺎﺭﯾﮏ ﮐﺮﮐﮯﺩﮬﻮﭖ ﻣﯿﮟ ﺳﮑﮭﺎﻟﯿﮟﺧﺸﮏ ﮨﻮﻧﮯ ﭘﺮ ﺍﻧﮩﯿﮟﺟﻼﻟﯿﮟ ﺟﺐ ﺭﺍﮐﮫ ﺑﻦﺟﺎﺋﮯ ﺍﺳﮯ ﭘﺎﻧﯽ ﻣﯿﮟﮈﺍﻝ ﺩﯾﮟ ﺍﻭﺭ ﺩﻭ ﭼﺎﺭ ﺩﻥﭘﮍﯼ ﺭﮨﻨﮯ ﺩﯾﮟ ﭘﺎﻧﯽﻣﯿﮟ ﻧﻤﮏ ﺍٓﺟﺎﺋﮯ ﮔﺎ ﺍﻭﺭﺭﺍﮐﮫ ﻧﯿﭽﮯ ﺑﯿﭩﮫ ﺟﺎﺋﮯﮔﯽ۔ ﭘﺎﻧﯽ ﻧﺘﮭﺎﺭ ﻟﯿﮟﺍﺳﮯ ﺍٓﮒ ﭘﺮ ﭘﮑﺎ ﮐﺮﺧﺸﮏ ﮐﺮﻟﯿﮟ ﻧﯿﭽﮯ ﺟﻮﮨﻮﮔﺎ ﺍﺳﮯ ﮐﮭﺮﭺ ﮐﺮﺷﯿﺸﯽ ﻣﯿﮟ ﺑﮭﺮﻟﯿﮟ ﯾﮧ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﻧﻤﮏ ﮨﻮﮔﺎ۔ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﮯ ﻧﻤﮏ ﮐﮯﻣﻨﺪﺭﺟﮧ ﺫﯾﻞ ﻓﻮﺍﺋﺪ ﮨﯿﮟ ﺷﮩﺪ ﻣﯿﮟ ﻣﻼ ﮐﺮ ﺍﯾﮏﺍﯾﮏ ﺗﻮﻟﮧ ﻧﻤﮏ ﻣﻮﻟﯽﮐﮭﺎﻧﮯ ﺳﮯ ﺩﻣﮧ ﺩﻭﺭ ﮨﻮﺟﺎﺗﺎ ﮨﮯ۔ ۔ﭼﮭﺎﭼﮫ ﮐﮯﺳﺎﺗﮫ ﺍﯾﮏ ﻣﺎﺷﮧ ﻣﻮﻟﯽﮐﺎ ﻧﻤﮏ ﺭﻭﺯ ﮐﮭﺎﻧﮯﺳﮯ ﺟﮕﺮ ﮐﮯ ﺳﺐ ﮨﯽ ﺍﻣﺮﺍﺽ ﺩﻭﺭ ﮨﻮﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ ﺍﻭﺭ ﯾﺮﻗﺎﻥ ﺧﺘﻢ ﮨﻮﺟﺎﺗﺎ ﮨﮯ۔ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎﺍﯾﮏ ﻣﺎﺷﮧ ﻧﻤﮏ ﮔﺮﻡﭘﺎﻧﯽ ﺳﮯ ﮐﮭﺎﻧﮯ ﺳﮯﻧﺰﻟﮧ ﺯﮐﺎﻡ ﮐﻮ ﺍٓﺭﺍﻡ ﺍٓﺟﺎﺗﺎ ﮨﮯ۔ نمک ﻣﻮﻟﯽ ﭼﺎﺭ ﮔﻨﺎ ﺷﮩﺪ ﻣﯿﮟﻣﻼﻟﯿﮟ ﺍﺱ ﮐﯽ ﺍﯾﮏﺳﻼﺋﯽ ﺍٓﻧﮑﮫ ﻣﯿﮟ ﻟﮕﺎﻧﮯﺳﮯ ﺍٓﺷﻮﺏ ﭼﺸﻢ ﮐﻮﺍٓﺭﺍﻡ ﺍٓﺟﺎﺗﺎ ﮨﮯ۔ ﭼﭩﮑﯽﺑﮭﺮ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﻧﻤﮏﻧﺴﻮﺍﺭ ﺑﻨﺎﮐﺮ ﺳﻮﻧﮕﮫ ﻟﯿﮟ ﺩﻣﺎﻍ ﮐﮯ ﮐﯿﮍﻭﮞﻧﺰﻟﮧ ﺍﻭﺭ ﺯﮐﺎﻡ ﮐﯿﻠﺌﮯ ﻣﻔﯿﺪ ﮨﮯ۔ ﭼﯿﻨﯽ ﻣﻼ ﮐﺮ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎﻧﻤﮏ ﻧﺼﻒ ﺳﮯ ﺍﯾﮏﻣﺎﺷﮧ ﺗﮏ ﮐﮭﺎﻧﮯ ﺳﮯﭘﺮﺍﻧﯽ ﮐﮭﺎﻧﺴﯽ ﮐﻮ ﺍٓﺭﺍﻡ ﺍٓﺟﺎﺗﺎ ﮨﮯ۔ نمک ﻣﻮﻟﯽ ﺍﯾﮏ ﻣﺎﺷﮧﺑﺪﮨﻀﻤﯽ ﮐﯿﻠﺌﮯ ﮔﺮﻡ ﭘﺎﻧﯽ ﮐﮯ ﺳﺎﺗﮫ ﺩﯾﻨﺎ ﺿﺮﻭﺭﯼ ﮨﮯ۔ ﭘﯿﺸﺎﺏﺭﮎ ﺭﮎ ﮐﺮ ﺍٓﺟﺎﺗﺎ ﮨﻮ ﯾﺎﺟﻞ ﮐﺮ ﺍٓﺗﺎ ﮨﻮ ﺗﻮ ﺍﺱﮐﯿﻠﺌﮯ ﭨﮭﻨﮉﮮ ﭘﺎﻧﯽ ﺳﮯ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﺎ ﻧﻤﮏ ﺩﯾﮟ۔ ﻣﺜﺎﻧﮧ ﮐﯽ ﭘﺘﮭﺮﯼ ﺩﺭﺩﮔﺮﺩﮦ ﺍﻭﺭ ﺭﯾﺖ ﺍٓﻧﮯ ﭘﺮﺑﮭﯽ ﯾﮧ ﻧﻤﮏ ﺍﮐﺴﯿﺮﮐﺎﮐﺎﻡ ﮐﺮﺗﺎ ﮨﮯ۔ ﻣﻮﻟﯽ ﮐﮯ ﺭﺱ ﻣﯿﮟﺭﺳﻮﻧﺖ ﮐﻮ ﺩﻭ ﮔﻨﺎﭘﺎﻧﯽ ﮨﻮ ﺗﻮ ﺣﻞ ﮐﺮﯾﮟ ﻧﺮﻡﺍٓﮒ ﭘﺮ ﺍﺳﮯ ﭘﮑﺎﺋﯿﮟ ﺍﻭﺭﭘﮭﺮ ﭼﻨﮯ ﮐﮯ ﺑﺮﺍﺑﺮﮔﻮﻟﯿﺎﮞ ﺑﻨﺎﻟﯿﮟ ﺩﻭ ﺗﯿﻦﮔﻮﻟﯿﺎﮞ ﺻﺒﺢ ﺍﻭﺭ ﺷﺎﻡﮐﮭﺎﻧﮯ ﺳﮯ ﺑﻮﺍﺳﯿﺮ ﺧﺘﻢ ﮨﻮﺟﺎﺋﮯﮔﯽ۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے