Voice of Asia News

چین میں حب الوطنی کو فروغ دینے کی منصوبہ بندی

بیجنگ(وائس آف ایشیا)چین میں حب الوطنی کو فروغ دینے کے لئے ایک مہم چلانے کی منصوبہ بندی کی گئی ہے جس کے تحت ملک کے دانشوروں کو وطن سے محبت کے حوالے سے تربیت دی جائیں گی۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق اس مہم کا مقصد نئے دور میں وطن پرست جدوجہد اور اسٹیبلشمنٹ کے قیام کو آگے بڑھانا ہے۔مہم کے ذریعے مدارس میں نظریاتی تعلیم کو فروغ دیا جائے گا۔چینی مدارس پر اس بات پر زور دیا جا رہا ہے کہ وہ چینی کمیونسٹ پارٹی کے اس تازہ ترین اقدام میں ان سے قدم سے قدم ملاکر چلیں اور ملک کے نوجوان دانشور مدارس میں حب الوطنی پر مبنی سرگرمیوں میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیں۔چین کی کمیونسٹ پارٹی کی جانب سے جاری ہونے والے ایک نوٹس کے مطابق دانشوروں کو اپنی سیاسی شعور کو مضبوط کرنا چاہئے۔اس کے علاوہ دانشوروں کو وطن سے محبت پر مبنی تعلیم و تربیت دینے پر بھی زور دیا گیا ہے۔پارٹی چاہتی ہے کہ دانشور اپنے عمل سے حب الوطنی کو فروغ دیں۔چینی اخبار گلوبل ٹامز لکھتا ہے کہ حالیہ برسوں میں ملک میں حب الوطنی پر مبنی تعلیم میں کمی آئی ہے جس کے باعث حکومت مخالف مباحثے سننے میں آرہے ہیں۔چین اور امریکا کے درمیان ہونے والی تجارتی کشیدگی کو لے کر بہت سے چینی دانشور اپنے ملک کی حمایت کرنے کی بجائے سوشل میڈیا پر ملک مخالف مواد شائع کرتے نظر آرہے ہیں۔کچھ دانشوروں نے تو ملک سے غیر حقیقی عدم اطمینان کا اظہار بھی کیا ہے۔حالیہ مثال چین کی ایک نامور یونیورسٹی کے ایک پروفیسر کی ہے جنہوں نے ملک کے اعلیٰ حکام کی جانب سے حالیہ پالیسیوں کے خلاف انتہائی غیر معمولی اور سخت تنقید شائع کی تھی۔بیجنگ کے ایک آزاد تھنک ٹینک نے نیو یارک ٹائمز سے بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ چین میں اکثریت ایسے دانشوروں کی ہے جو حکومت مخالف سوچ رکھتے ہیں مگر وہ کہنے کی ہمت نہیں رکھتے

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے