Voice of Asia News

اس بار14اگست پہلے سے بھی زیادہ بھرپورانداز میں منائیں ،عمران خان

اسلام آباد(وائس آف ایشیا)پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا کہ اس بار14اگست پہلے سے  بھی زیادہ بھرپورانداز میں منائیں گے۔تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان سے پارلیمنٹ ہاؤس کر باہر صحافی نے سوال کیا مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے یوم آزادی نہیں منائیں گے، جس کے جواب میں انھوں نے کہا اس بار14اگست پہلے سے بھی زیادہ بھرپورانداز میں منائیں گے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ پنجاب کا ابھی کوئی فیصلہ نہیں کیا۔یاد رہے ملک کی 15 ویں قومی اسمبلی کا اجلاس ہوا، جس میں اسپیکرقومی اسمبلی سردار ایازصادق نے نومنتخب اراکین سے حلف لیا، عمران خان جب ارکان کی فہرست میں دستخط کرنے آئے تو ایوان عمران خان وزیراعظم”اور”آئی آئی پی ٹی آئی”کے نعروں سے گونج اٹھا۔بعد ازاں اجلاس 15 اگست تک ملتوی کردیا گیا۔پندرہ اگست کواسپیکر اورڈپٹی اسپیکرکاانتخاب ہوگا، سترہ اگست کونئے وزیراعظم کا انتخاب ہوگا جبکہ اٹھارہ اگست کو عمران خان ملک کے نئے وزیراعظم کا حلف اٹھائیں گے۔

خیال رہے کہ اس سے قبل بھی پاکستان کے متوقع وزیراعظم عمران خان نے قوم سے اپیل کی تھی کہ تمام پاکستانی یوم آزادی پورے جوش وجذبے سے منائیں، ہم نئے پاکستان کے قیام کی منزل کی جانب گامزن ہیں، انشاءاللہ نئے پاکستان میں قائداعظم کے خواب کو تعبیر ملے گی۔

واضح رہے کہ الیکشن کمیشن کے سامنے متحدہ اپوزیشن کے احتجاج کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمٰن نے کہا تھا کہ ہر سال 14 اگست یوم آزادی کے طور  پر منایا جاتا ہے لیکن اب کی بار ہم 14 اگست کو یوم آزادی نہیں منا سکتے کیونکہ ہماری رائے کا حق چھین لیا گیا ہے، 14 اگست کو یوم جدوجہد آزادی کے طور پر منائیں گے۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے