Voice of Asia News

مقبوضہ کشمیر میں نو اور دس محرم الحرام کے عزاداری جلوسوں پر پابندی

سری نگر(وائس آف ایشیا) مقبوضہ کشمیر کی کٹھ پتلی حکومت نے نو اور دس محرم الحرام کے عزاداری جلوسوں پر پابندی لگا دی ہے، نام نہاد پابندی پر سخت تشویش کا اظہار کیا جارہا ہے ۔ اتحاد المسلمین جموں و کشمیر کے صدر و سینئر حریت رہنما حج الاسلام والمسلمین مولانا مسرور عباس انصاری نے نو اور دس محرم الحرام کے عزاداری جلوسوں پر پابندی کو بلا جواز،مداخلت فی الدین قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس سال ہزاروں قدغنوں کا پرواہ کئے بغیر ان دو بڑے مرکزی جلوسوں کو شان و شوکت کے ساتھ بر آمد کیا جائے گا۔ جموں و کشمیر اتحاد المسلمین کے اہتمام سے گلشن باغ بٹہ کدل سے ایک عظیم الشان علم شریف کا جلوس بر آمد ہوا جس میں دسیوں ہزار عزاداروں نے شرکت کرکے سید الشہدا ابا عبد اللہ الحسین (ع)اوردیگر شہدائے کربلا کو خراج پیش عقیدت پیش کیا اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے مولانا مسرور عباس انصاری نے ملت کشمیر سے اپیل کی کہ بلا لحاظ مذہب و ملت نواسہ رسول (ص) کے ان دو بڑے جلوس عزاء میں جوش و جذبہ اور عقیدت کے ساتھ شرکت کرکے کشمیر میں رائج طاغوتی اور جابرانہ نظام کو لرزہ بہ اندام کریں۔جلوس عزاء گلشن زہرا (ع) ڈونی پورہ علمگری بازار میں دعائیہ کلمات کے ساتھ اختتام پذیر ہوا۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے