Voice of Asia News

جسمانی وزن میں اضافہ بھی کینسر کا خطرہ بڑھا دیتا ہے تحقیق

لاہور (وائس آف ایشیا خصوصی رپورٹ میمونہ عزیز)برطانیہ میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں خبردار کیا گیا ہے کہ جسمانی وزن میں صرف 6 کلو گرام اضافہ بھی کینسر کے مرض کا خطرہ 50 فیصد سے زیادہ بڑھا دیتا ہے۔طبی جریدے میں شائع ہونے والی امپیریل کالج لندن کی تحقیق میں بتایا گیا کہ موٹاپے کا شکار ہونا 11 مختلف اقسام کے کینسر جیسے معدے، آنتوں اور غذائی نالی کے سرطان کا باعث بنتا ہے۔تحقیق میں یہ بات سامنے آئی کہ صحت مند جسمانی وزن میں 5 سے 6 کلو گرام اضافہ جگر کے کینسر کا خطرہ 56 فیصد تک بڑھاتا ہے۔تحقیق میں یہ بات بھی بتائی گئی کہ اگر ہر شخص جسمانی وزن کو صحت مند پیمانے پر برقرار رکھ سکے تو ہر سال سامنے آنے والے کئی قسم کے کینسر کی روک تھام کی جاسکتی ہے۔محققین کا کہنا تھا کہ تمباکو نوشی سے ہٹ کر جسمانی وزن وہ اہم ترین ذریعہ ہے جس سے لوگ کینسر کے خطرے کو کم کرسکتے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ دنیا بھر میں موٹاپے کی شرح میں اضافے کے باعث یہ ضروری ہے کہ اس کی روک تھام کو فوری ترجیح دی جائے۔2 سال قبل کینسر ریسرچ یوکے کی تحقیق کے دوران اس جان لیوا مرض کی دس ایسی علامات بیان کی گئی تھیں جن سے اس کی تشخیص کو آسان بنایا جاسکتا ہے۔محققین کا کہنا تھا کہ ان علامات کو اکثر افراد عمر بڑھنے کے اثرات کا حصہ سمجھ کر نظر انداز کردیتے ہیں حالانکہ ان پر توجہ دی جانی چاہیئے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •