Voice of Asia News

بھارتی ہم جنس پرست خواتین نے ماں باپ کے ڈر سے پولیس سے تحفظ مانگ لیا

نئی دہلی(وائس آف ایشیا)بھارت کے شہر نئی دہلی میں شادی کی خواہش مند ہم جنس پرست خواتین اپنے والدین کے ڈر سے دہلی ہائی کورٹ سے رجوع کرلیا۔بھارتی ٹی وی مطابق دہلی ہائی کورٹ نے پولیس کو خواتین کو سیکیورٹی فراہم کرنے کا حکم جاری کردیا۔ہم جنس پرست خواتین کے اس جوڑے نے ہائی کورٹ سے بھارتی سپریم کورٹ کے ہم جنس پرستی کو جرم کے دائرے سے خارج کرنے کے فیصلے کے پیش نظر رجوع کیا۔20 اور 21 سالہ خواتین کا کہنا تھا کہ ان دونوں کے درمیان ڈیڑھ سال سے تعلقات قائم ہیں اور ایک ساتھ رہتی ہیں تاہم ان کو ان کے اہل خانہ کی جانب سے خطرہ ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ان کی قربت کو ان کے والدین نے مسترد کردیا ہے اور ہم سے علیحدہ ہونے کا کہا گیا ہے۔انہوں نے بتایا کہ والدین کے دباؤ کے پیش نظر ہم راجستھان چھوڑ کر دہلی میں رہائش اختیار کرنے پر مجبور ہوئی ہیں۔دونوں خواتین کی درخواست پر جسٹس نجمی وزیری نے دہلی پولیس کو ہدایات جاری کیں کہ انہیں حفاظت فراہم کیا جائے اور پولیس افسر روزانہ کی بنیاد پر ان کی خیریت معلوم کریں۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے