Voice of Asia News

اسرائیلی فوج کا وحشیانہ کریک ڈاؤن، 24 فلسطینی گرفتار

غرب اردن ( وائس آف ایشیا )قابض صہیونی فوج نے رواں ہفتے غرب اردن میں ایک مزاحمتی کارروائی میں دو یہودی آباد کاروں کو ہلاک کرنے والے فلسطینی کی وسیع پیمانے پر تلاش شروع کی ہے۔ مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق قابض صہیونی ریاست کی جانب سے کریک ڈاؤن میں 24 فلسطینیوں کو حراست میں لیا گیا ہے۔ فلسطینی میڈیا کے مطابق اسرائیلی فوج نے غرب اردن کے شمالی شہر طولکرم میں قصبوں، پناہ گزین کیمپوں، شہری کالونیوں اور یہودی کالونیوں کے اطراف میں "برکان” کالونی میں دو یہودیوں کو جھنم واصل کرنے والے فلسطینی کی تلاش کے لیے چھاپے مارے گئے۔گزشتہ روز علی الصباح غرب اردن کے شمالی شہر نابلس، جنوبی شہروں الخلیل، قلقیلیہ اور بیت لحم میں گھر گھر تلاشی کی کارروائیوں میں کئی فلسطینیوں کو حراست میں لے لیا گیا۔تلاشی کی کارروائیوں کی آڑ میں گھروں میں گھس کر لوٹ مار اور توڑپھوڑ کی گئی۔ چادر و چار دیواری کا تقدس پامال کیا گیا ۔نابلس میں المعاجین کالونی میں چھاپہ مار کارروائی کے دوران ڈاکٹر نصر شریم کے گھر پر چھاپہ مارا گیا اور ان کی اہلیہ فیروز نعالو سے پوچھ تاچھ کی گئی۔تین فلسطینیوں کو الخلیل کے نواحی علاقے بیت کاحل اور بیت امر سے حراست میں لیا گیا۔ بدھ کے روز حراست میں لیے گیے فلسطینیوں کی شناخت ربیع محمد ابو ربیعہ، کمال ابدو، مھمود البدو، سلیمان عزام ابو شیخہ، حسام عزام ابو شیخہ، طارق زید، نائل عویص، احمد قوزح، اوس عبید، کرم مروان دحیلیہ، محمد احمد دحیلیہ، محمد عماد ناقوری، یحیی السمحان،محمد الشخشیر، برا لوئی یوسف اورلیث سامی عواد کے ناموں سے کی گئی ہے۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے