Voice of Asia News

وانی کی شہادت سے تحریک آزادی عظیم اثاثے سے محروم ہو گئی ، حریت قائدین

سرینگر(وائس آف ایشیا) حریت قائدین نے ہندواڑہ میں شہید ہونے والے عسکری کمانڈر اور اسکالر ڈاکٹر منان شیروانی اور اس کے ساتھی شہید عبدالغنی خواجہ کو شاندار الفاظ میں خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی شہادت سے رواں تحریک آزادی ایک عظیم اثاثے سے محروم ہو گئی ہے۔ اپنے مشترکہ بیان مین سید علی گیلانی ، میرواعظ عمر فاروق اور یاسین ملک نے ڈاکٹر عبدالمنان وانی کی شہادت کو تحریکی صفوں میں ایک زبردست نقصان قرار دیتے ہوئے کہاکہ کشمیر جہاد تحریک آزادی کے ساتھ یہاں کی چوتھی نسل جڑ چکی ہے پڑھے لکھے اعلی تعلیم یافتہ افراد کا عسکریت کی جانب رحجان دراصل بھارت کی جارحانہ پالیسیوں کا نتیجہ ہے اور جس طرح ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت طاقت اور تشدد کے بل پر نہ تو دبایا جا سکتا ہے اور نہ ہی ان کا جذبہ حریت چھینا جا سکتا ہے ۔ قائدین نے کہا کہ جموں و کشمیر دنیا کا واحد سب سے زیادہ فوجی جماؤ والا علاقہ ہے جہاں لاکھوں کی تعداد میں تعینات فوج اور فورسز خود کو حاصل بے پناہ اختیارات کے بل پر کسی جوابدہی کے عمل سے مبرا ہو کر نہتے عوام کو اپنے مظالم اور تشدد کا نشانہ بناتے ہیں اور جب چاہیں جہاں جائیں زندگی کا چراغ گل کر دیتے ہیں

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے