Voice of Asia News

پاکستان مجاہدین بھیج کر حالات نہ بگاڑے تو کشمیرمیں امن ہی امن ہے ،راج ناتھ سنگھ کی ہرزہ سرائی

 سرینگر(وائس آف ایشیا ) بھارتی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ نے پاکستان پر ایک بار پھر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کشمیر میں جنگجوں کو بھیج کر حالات بگاڑ رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی سرکار کشمیر میں امن چاہتی ہے اور اس کیلئے کئی پروگراموں پر کام کیا جارہا ہے ۔ راجناتھ سنگھ نے راجستھان کے بیکانیر میں میڈیا کے نمائندوں کے ساتھ تقریب کے اختتام کے بعد کشمیر سے متعلق پوچھے گئے سوالات کے جواب میں کہا کہ پاکستان کشمیر میں حالات بگاڑنے کی کوششوں میں مصروف ہیں جس کیلئے پاکستانی ایجنیساں کام کررہی ہیں اور ان کے ان ناپاک عزائم کو کبھی بھی کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا۔ وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ کشمیری عوام فوج کو اپنا بھر پور تعاون پیش کررہے ہیں جس کے نتیجے میں فوج ملی ٹنٹنوں کے خلاف کامیاب کارروائیاں انجام دے پارہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر ی عوام نے بھارت کے ساتھ اپنا مستقبل وابستہ کرلیا ہے اور اس پر کاربند ہیں تاہم وادی میں پاکستان کی شہہ پر کچھ لوگ حالات کو بگاڑ نے کیلئے ذمہ دار ہیں جن کیخلاف سخت کارروائی کی جائے گی ۔ راجناتھ سنگھ نے کہا کہ کشمیر بھارت کا اٹوٹ انگ ہے جس کو الگ کرنے کی کوئی بھی کوشش کامیاب نہیں ہونے دی جائے گی ۔ انہوں نے پاکستان پر الزامات عائد کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان گذشتہ تین دہائیوں سے کشمیر کے حالات بگاڑنے کی سرتوڑ کوششیں کرتا آرہا ہے وادی میں جنگجوئیت کو فروغ دے رہا ہے اس کے ساتھ ساتھ سنگبازی کو بڑھاوادے رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ بھارت اپنے تمام پڑوسیوں کے ساتھ اگرچہ بہتر تعلقات چاہتا ہے لیکن اس کے بدلے وہ ملک کی سالمیت کے ساتھ کوئی سمجھوتہ کرنے کیلئے تیار نہیں ہے ۔ پاکستان کے ساتھ مذاکرات کی بحالی کے حوالے سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں راجناتھ سنگھ نے کہا کہ بھارت امن کا متلاشی ہے اور مذاکرات میں ہی یقین رکھتا ہے لیکن پاکستان نے بار بار بھارت کے بھروسے کو ٹھیس پہنچائی ہے جب تک نہ پاکستان عسکریت پسندی کے ڈھانچے کو مکمل طور پر تباہ نہیں کرے گا تب تک مذاکرات شروع کرنے کا عمل بے سود ہی ثابت ہوگا۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے