Voice of Asia News

شدید غربت، بڑھتی بے روزگاری اور طویل خشک سالی افغانستان کے بڑے مسئلے

کابل(وائس آف ایشیا) شدید غربت، بڑھتی بے روزگاری اور طویل خشک سالی کئی عشروں سے جنگ کا شکار افغانستان کے بڑے مسئلے بن چکے ہیں۔گذشتہ نو ماہ کے دوران تشدد کے واقعات میں 2,790 شہری ہلاک اور 5,250 زخمی ہو چکے ہیں۔افغانستان میں اقوام متحدہ کے مشن کی طرف سے جاری اعداد و شمار کے مطابق افغانستان کی 54 فیصد ا?بادی جو تقریباً تین کروڑ کے لگ بھگ ہے خط غربت سے نیچے زندگی بسر کرنے پر مجبور ہے۔افغان وزیر زراعت، آبپاشی و لائیو سٹاک نصیر احمد اس بات کا اعتراف کر چکے ہیں کہ حکومت اکیلے ان تمام لوگوں کو ضروری امداد فراہم نہیں کر سکتی۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے دیگر اقدامات کے ساتھ ساتھ ملک کے 34 میں سے 25 صوبوں کے انتہائی ضرورت مند افراد میں 119 ٹن گندم تقسیم کی ہے۔اس کے علاوہ 60 ٹن گندم ورلڈ فوڈ پروگرام نے بھی فراہم کی ہے۔ملک کے 20 اضلاع شدید خشک سالی کا شکار ہیں اور آنے والے چند ماہ کے دوران 30 لاکھ افراد کو غذائی امداد کی ضرورت پڑے گی۔اس صورتحال میں ملک میں بے روزگاری کی شرح بھی بڑھ کر 27 فیصد کی بلند سطح پر پہنچ چکی ہے اور نجی شعبہ کی طرف سے سرمایا کاری میں بھی مسلسل کمی دیکھی جارہی ہے۔افغان عوام کو حالیہ انتخابات کے نتیجہ میں صورتحال میں بہتری کی توقع ہے۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے