Voice of Asia News

گردےمیں پتھری کیوں بنتی ہے؟

لاہور ( وائس آف ایشیا)گردے کی پتھری پاکستان میں پائی جانے والی ایک عام بیماری ہے۔ اس کا مریض پتھری کی وجہ سے بار بار شدید تکلیف برداشت کرتا ہے۔ ہم یہاں اس بیماری کے بارے چند عام سوالات کے جوابات دینے کی کوشش کریں گے۔ اس کے لئے ہم پہلے تو یہ سمجھنا چاہیں گے کہ گردے کا کام کیا ہے اور اس میں پتھری ہوتی کیوں ہے۔ تو آئیں دیکھتے ہیں۔۔۔
گردہ کیا کام کرتا ہے؟

انسانی گردہ جسم کا ایک بہت اہم عضو ہے جس کے بغیر زندگی ممکن نہیں۔ گردے کا کام جسم سے فاسد مادوں کا اخراج ہے۔ یہ کام گردے خون کو چھان کر کرتے ہیں۔ گردہ فاسد مادوں کو پیشاب کی صورت میں جسم سے نکالتا ہے۔

اللہ نے ہر انسان کو دو گردے عطا کیے ہیں۔ اگر کسی وجہ سے انسان کا ایک گردہ ناکارہ ہو جائے تو دوسرا گردہ اس خون کی صفائی کا کام اکیلا کر سکتا ہے مگر دونون گردے ناکارہ ہونے کی صورت میں انسان کا ڈائیلیسز یا گردے کے ٹرانسپلانٹ کے بنا زندہ رہنا مشکل ہوتا ہے۔
گردے میں پتھری کیوں ہوتی ہے؟

چونکہ گردے کا کام فاسد مادوں کو پانی میں حل کر کے جسم سے نکالنا ہے، اس لیے جسم میں پانی کی کمی یا کچھ خاص قسم کے فاسد مادوں کی زیادتی کی صورت میں پیشاب میں چھوٹے چھوٹے پتھر بننے لگتے ہیں۔ اس کی مثال ایسے لے لیجئے کہ جس طرح پانی میں بہت زیادہ چینی ملانے کی کوشش کرنے پر ایک وقت ایسا آتا ہے جب چینی کے ذرات حل ہونے کی بجائے تہہ میں بیٹھنے لگتے ہیں۔بالکل ایسے ہی جب گردوں میں بننے والے پیشاب میں جب پانی کا تناسب فاسد مادوں سے بہت کم ہونے لگتا ہے تو فاسد مادوں کے ذرات گردے میں جمع ہونے لگتے ہیں اور رفتہ رفتہ یہ ذرات کیمیائی عمل کے ذریعے چھوٹے چھوٹ پتھروں کی صورت اختیار کرنے لگتے ہیں۔

گردیکی پتھری پیدا کرنے والے عام مادے کیلشم آکزلیٹ، کیلشم فاسفیٹ ، یورک ایسڈ اور سٹرووائیٹ ہیں۔ کیلشم آکزلیٹ والی غذاؤں میں ٹماٹر، پالک وغیرہ شامل ہیں۔ یورک ایسڈ لال گوشت میں زیادہ پایا جاتا ہے اور سٹرووائیٹ سے بنی پتھری کی وجہ عموما گردے کا انفیکشن ہوتا ہے۔
گردے کی پتھری کی علامات کیا ہیں؟

پیٹ کے دائیں یا بائیں حصے میں شدید درد
پیشاب میں خون آنا
الٹی متلی

پتھری سے کیسے بچا جا سکتا ہے؟

چونکہ پتھری کا مسئلہ پانی کی کمی یا پھر خاص نوعیت کے فاضل مادے کی زیادتی کی وجہ سے ہوتا ہے، اس لئے اس سے بچاؤ کے بھی دو سادہ طریقے ہیں

پانی کا زیادہ استعمال
پتھری کا سبب بننے والی غذا سے مناسب پرہیز
پتھری کے مریض کو کیا احتیاطی تدابیر کرنی چاہئیں؟
شدید گرمی سے بچاؤ
غذا کا پرہیز
پانی کا زیادہ سے زیادہ استعمال
بڑے سائز کی پتھری کا بروقت علاج کروانا
پتھری کی علامات پر نظر رکھنا
پتھری کا علاج کیسے کیا جاتا ہے؟

چھوٹے سائز کی پتھری پانی کے زیادہ استعمال کے ساتھ پیشاب میں نکل جاتی ہے مگر بڑے سائز کی پتھری کے لئے شعاؤں یا آپریشن کے ذریعے علاج کی ضرورت پڑ سکتی ہے۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے