Voice of Asia News

معدے کے امراض میں اضافہ کی ایک وجہ ذہنی ٹینشن بھی ہے

لاہور (وائس آف ایشیا) معدے کے امراض میں اضافہ کی ایک وجہ ذہنی ٹینشن بھی ہے۔ ٹینشن سے معدے کی تیزابیت بڑھ جاتی ہے جس سے معدے میں سوزش ہو جاتی ہے، جس سے معدے میں زخم ہو جاتے ہیں اور وہ زخم السر بن جاتے ہیں۔ اس کے علاوہ ناقص خوراک کا استعمال بھی معدے کے امراض کا سبب ہے جس میں اشیاء خوردونوش میں ملاوٹ اور کیمیکل اسپرے والی سبزیاں ہیں۔ان خیالات کا اظہاراے ایم ایس ایڈمن جنرل ہسپتال لاہورڈاکٹرجعفرشاہ نے اپنے آفس میں سینئرصحافی ڈاکٹرمحمدعدنان،سیدصدا حسین کاظمی سے خصوصی گفتگوکرتے ہوئے کیا،ڈاکٹرجعفرشاہ کا کہنا ہے کہ سیوریج کے پانی سے اْگنے والی سبزیاں بہت خطرناک ہوتی ہیں۔ ان کے استعمال سے معدے اورانتڑیوں میں انفیکشن ہوتی ہے، پیٹ میں کیڑے ہو جاتے ہیں، پیٹ خراب رہتا ہے۔قبض ہوجاتی ہے، معدے میں زہریلے مادے جمع ہونے سے ہیضہ ہوجاتا ہے۔اس لئے اس کو ریگولیٹ کرنے کی اشد ضرورت ہے۔ ڈاکٹرجعفرشاہ کا مزیدکہنا ہے کہ مشروبات اور مٹھائیوں میں فوڈ کلر کی بجائے کپڑوں کو رنگنے والی ڈائی استعمال کی جا رہی ہے جس کی وجہ سے معدے کے علاوہ مثانے، گردوں، منہ اور مختلف نظام انہضام کے کینسر ہوتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ کھلے گندے نالوں کے اردگرد رہنے والے ماحولیاتی فضائی آلودگی کی وجہ سے بہت سی بیماریوں کا شکار ہو جاتے ہیں اس لیے گندے نالوں کو اوپر سے کور کرنا بے حد ضروری ہے۔
image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے