Voice of Asia News

احتساب کے عمل کو مزید تیز کیا جائے گا، سینیٹر فیصل جاوید کی وائس آف ایشیا سے گفتگو

اسلام آباد(وائس آف ایشیا) پی ٹی آئی رہنما اور سینیٹر فیصل جاوید نے کہا ہے کہ ماضی میں کرپشن چھپانے کے لیے قانون سازی ہوتی رہی ہے، احتساب کے عمل کو مزید تیز کیا جائے گا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سینیٹ اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے کیا، سینیٹر فیصل جاوید نے کہا کہ اب وہ وقت آنے والا ہے پاکستان سے ہمیشہ کے لیے کرپشن، منی لانڈرنگ کا خاتمہ ہوگا، عوام کا سب سے پہلا مطالبہ احتساب، منی لانڈرنگ اور کرپشن ختم کرنا ہےانہوں نے کہا کہ پاناما پیپرز اس وقت آئے جن ن لیگ کی حکومت تھی، ماضی میں اقامہ کے ذریعے منی لانڈرنگ کی جاتی رہی ہے، پی ٹی آئی کی قیادت پر عوام کا اعتماد بحال ہوا ہے۔سینیٹر فیصل جاوید نے کہا کہ ریکوری ایسیٹ یونٹ نے انکشاف کیا دبئی میں کئی پاکستانیوں کی جائیدادیں ہیں، یہ سب ملک سے باہر نوکریاں ڈھونڈتے اور اقامہ لیتے ہیں، منی لانڈرنگ کرکے جائیداد بنانے والوں کے پیچھے جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ چارٹر آف کرپشن دو پارٹیوں کی آپس کی ڈیل تھی، چوری پر چوکیدار لگانے والا خود چور ہونا چاہئے یہ کہاں کی منطق ہے، ہمارے یہاں کس طرح کرپشن کرنی ہے اس کے لیے قانون سازی ہوتی تھی، آنے والا وقت پاکستان کے لیے سب سے زبردست ہے۔فیصل جاوید نے کہا کہ صحیح معنوں میں منی لانڈرنگ کرپشن پر ہاتھ ڈالا جارہا ہے اس کے نتائج اچھے آرہے ہیں، دنیا کے تمام ممالک منی لانڈرنگ روکنے کے لیے قانون سازی کرتے ہیں۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے