Voice of Asia News

ترکی نے ایک بار پھر شمالی شام میں امریکی اتحادیوں کو نشانہ بنانے کی دھمکی

انقرہ( وائس آف ایشیا )ترکی نے ایک بار پھرشمالی شام میں امریکا کے وفادار جنگجوؤں کو نشانہ بنانے کی دھمکی دی ہے۔ ترکی کے آپریشنل کنٹرول روم نے عندیہ دیا ہے کہ وہ خطے میں امریکی حمایت یافتہ کرد جنگجووں کو سر اٹھانے کی اجازت نہیں دے سکتے۔ ضرورت پڑنے پر ترکی شمالی شام میں امریکی حمایت یافتہ کرد ملیشیا کو نشانہ بنا سکتا ہے۔ادھر شام میں انسانی حقوق کیلیے کام کرنے والے ادارے "آبزر ویٹری” نے کہا ہے کہ اسدی فوج نے تلول الصفا نامی علاقے کو "داعش” کے جنگوؤں سے آزاد کرالیا ہے۔ یہ علاقہ دمشق مضافات مین السویدا گورنری میں واقع ہے۔آبزرویٹری کے مطابق داعش کے جنگجووں کے وہاں سے انخلا کے بعد شامی فوج نے علاقے کا کنٹرول سنبھال لیا۔ وہاں پر داعش کے جنگجوؤں کی تعداد 700 بتائی جاتی ہے

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے