Voice of Asia News

وزیر اعظم کے احتساب کی بات کرنے سے انکی عزت مجروح نہیں بلکہ اضافہ ہوا ہے،چیئرمین نیب

لاہور ( وائس آف ایشیا) چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نے کہا ہے کہ نیب کی جانب سے وزیر اعظم عمران خان کے احتساب کی بات کرنے سے وزیر اعظم کی عزت مجروع نہیں بلکہ ان کی عزت میں اضافہ ہوا ہے۔ ” احتساب سب کا” کا نعرہ وزیر اعظم عمران خان کا ہے اور نیب وزیر اعظم عمران خان کے اسی ویژن کے تحت کام کو آگے بڑھائے ہوئے ہے۔ گزشتہ روز نیب ہیڈ کواٹر میں منعقدہ ایک تقریب کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین نیب نے کہا کہ نیب کا قانون سب کے لئے یکساں ہے اور اسی بنیاد پر پورے ملک میں کرپشن کے خلاف بلاامتیاز کام جاری ہے۔ جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے کہا کہ علیمہ خان کے بارے میں کہا گیا ہے کہ انہیں نیب نے این آر او جاری کیا گیا ہے ،ہم نے کسی کو این آر او جاری کیا ہے نہ ہی ہمارا کوئی تعلق ہے انہوں نے کہا کہ نیب کو منشا بم نہیں کہنا چاہئے کیونکہ نیب منشا بم نہیں ہے۔ جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے کہا کہ وہ نیب کے پلی بارگین رولز کے حق میں ہیں اور اگر پلی بار گین کو ختم کر دیا گیا تو لوگوں کو اپنے حق کے حصول میں مشکلات پیش آ سکتی ہیں انہوں نے کہا کہ پلی بار گین نہ ہوتی تو آج لوگ اپنا حق حاصل نہ کر سکتے۔ انہوں نے افسران کو ہدایت کی کہ وہ لوگوں کو نیب آفس میں زیادہ دیر انتظار نہ کروائیں یہ تھانہ کلچر نہیں نیب کا ادارہ ہے جہاں آنے والے ہر شخص کو چائے کا کپ پیش کیا جائے طلبی کی صورت میں کسی کو کال کر کے طلب نہ کیا جائے بلکہ نوٹس بھجوا کر طلب کیا جائے۔ نیب کی ساری کاروائیاں پنجاب میں نہیں بلکہ ملک کے تمام صوبوں میں ہو رہی ہیں۔ نیب نے کسی کو این آر او نہیں دیا اور نہ ہی نیب کسی این آر او کا حصہ بنے گا۔ انہوں نے کہا کہ نیب کسی دباؤ میں نہیں آئے گا جبکہ نیب کے خلاف پراپیگنڈا کرنے والوں کو کچھ حاصل نہیں ہو گا۔ تقریب میں ڈی جی نیب سمیت دیگر افسران نے بھی خطاب کیا اس موقع پر چیئرمین نیب نے مختلف کیسز میں اربوں روپوں کی ریکوریوں پر نیب کے افسران کو خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ لوگوں کی ڈوبی ہوئی رقم کی واپسی اللہ تعالیٰ کا بہت بڑا کرم ہے یہاں ہر چوتھے روز کوئی نہ کوئی ڈبل شاہ پیدا ہو جاتا ہے اور کوئی نہ کوئی ہاؤسنگ سوسائٹی سامنے آ جاتی ہے لوگوں کو اپنے حق حلال کی کمائی کو سوچ سمجھ کر انویسٹ کرنا چاہئے انہوں نے کہا کہ لوگوں کے حق حلال کے پیسے کہیں نہیں جا سکتے۔ تقریب میں چیئرمین نیب نے فیروز پور روڈ ہاؤسنگ سکیم کے متاثرین میں57 کروڑ روپے مالیت کے چیک تقسیم کئے۔ اس موقعہ پر ڈی جی نیب کا کہنا تھا کہ نیب نے بڑی محنت سے پلی بار گین کے تحت 2 ارب 22 کروڑ روپے ریکور کئے ہیں جسے جلد ہی نیب 21 سو متاثرین میں تقسیم کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ نیب اب تک مختلف مدات میں متاثرین میں اربوں روپے کی رقم تقسیم کر چکا ہے انہوں نے کہا کہ احتساب سب کا ہو گا کسی کو احتساب سے استثنیٰ نہیں دیا جائے گا۔ انہوں نے عوام سے اپیل کی کہ وہ نیب سے تعاون کریں نیب میں کسی سے کوئی زیادتی نہیں ہو گی۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے