Voice of Asia News

نیب اگلے ماہ میں کئی اہم سیاسی شخصیات کو گرفتار کر سکتا ہے

اسلام آباد(وائس آف ایشیا) ذرائع کا دعویٰ ہے کہ نیب اس وقت مختلف ہائی پروفائلز کیسز میں پیش رفت کے حوالے سے بہت فعال ہو چکا ہے۔آئندہ مارچ اور اپریل کے مہینوں میں کئی اہم سیاسی شخصیات گرفتار ہو سکتی ہیں۔ ذرائع کے مطابق پنجاب کے ایک بااثر سیاسی خاندان کی اہم شخصیت جن پر مبینہ کرپشن کے الزامات ہیں، اْن سے بھی نیب کی پْوچھ گچھ جاری ہے۔مگر وہ نیب کے سوالنامے کا کوئی تسلی بخش جواب دینے میں ناکام رہے ہیں۔ جس سے یہ اشارہ مل رہا ہے کہ اس اہم شخصیت کو گرفتار کیے جانے کی تیاریاں ہو رہی ہیں۔ ذرائع کے مطابق اس سیاسی شخصیت کی گرفتاری سے مْلکی سیاست میں مزید بھونچال آ سکتا ہے۔ دو روز قبل پنجاب کے سینئر صوبائی وزیر علیم خان کی گرفتاری نے بھی اس وقت مْلکی سیاست میں ہلچل پیدا کی ہے۔جس کے باعث پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے مستقبل کے لیے اہم سیاسی فیصلے لیے جا سکتے ہیں۔ سندھ کے 9، بلوچستان کی 6 شخصیات کے علاوہ 13 بیوروکریٹس کے گرد بھی گھیرا تنگ ہونے جا رہا ہے۔ ذرائع کے مطابق مارچ اوراپریل میں بڑے بڑے نام نیب کے ریڈار پر آ سکتے ہیں۔یاد رہے کہ سپریم کورٹ کے حکم کے بعد جعلی اکاونٹس کیس کی بھرپور تحقیقات کرنے والی نیب نے کئی ٹھوس اور تہلکہ خیز شواہد اکٹھے کر لیے ہیں۔اطلاعات ہیں کہ آنے والے دن تحریک انصاف یا مسلم لیگ ن سے زیادہ پیپلز پارٹی کیلئے مشکل ثابت ہونے والے ہیں۔ ذرائع کے مطابق نیب جعلی اکاونٹس کیس کے سلسلے میں 30 یا اس سے زائد کیسز دائر کرے گا۔ یہ کیسز آصف زرداری، ان کی ہمشیرہ فریال تالپور، وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ، انور مجید اور دیگر کیخلاف دائر کیے جائیں گے۔ جبکہ ضرورت پڑنے پر یا ٹھوس شواہد ملنے پر بلاول بھٹو بھی تحقیقات میں شامل کیے جا سکتے ہیں۔بتایا جا رہا ہے کہ جعلی اکاونٹس پاکستان کی سیاسی تاریخ کا "مدر آف آل کیسز” ثابت ہوگا۔ اس میگا اسکینڈل میں آصف زرداری اور ان کے ساتھیوں کے بچنے کے امکانات بہت معدوم ہیں۔ آنے والے چند دنوں میں جعلی اکاونٹس اسکینڈل کے سلسلے میں بڑی گرفتاریاں شروع ہو جائیں گی۔ اس کریک ڈاون میں پیپلز پارٹی کی قیادت سمیت سندھ کی بیوروکریسی بھی نشانے پر ہوگی۔ سیاسی تجزیہ نگار کہتے ہیں کہ جعلی اکاونٹس کیس ممکنہ طور پر آصف زرداری کے سیاسی کیرئیر کا خاتمہ ثابت ہوگا۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے