Voice of Asia News

جعلی بینک اکاؤنٹس کیس: نیب کا تفتیش کیلئے آصف زرداری کو طلب کرنے کا فیصلہ

راولپنڈی(وائس آف ایشیا) قومی احتساب بیورو(نیب) نے جعلی بینک اکانٹس کیس میں تفتیش کیلئے سابق صدر آصف علی زرداری کو طلب کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔نیب ذرائع کا کہنا ہے فریال تالپور اور وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ کو بھی طلب کیا جائے گا اور تینوں رہنماں کی طلبی نیب راولپنڈی بیورو میں ہوگی۔ ذرائع کے مطابق تینوں رہنماں کو جلد طلبی کے نوٹس جاری کیے جائیں گے اور جعلی اکانٹس کیس سے متعلق تفتیش کی جائے گی۔آصف علی زرداری، فریال تاپور اور مراد علی شاہ کے بیانات ریکارڈ کرنے کے علاوہ سوالنامہ بھی دیا جائے گا۔یاد رہے کہ نیب نے لاہور ہائی کورٹ میں سا بق صدر آصف علی زرداری کی اثاثہ جات ریفرنس میں بریت کے خلاف رخواست کی جلد سماعت کیلئے بھی رجوع کر رکھا ہے۔نیب نے اکتوبر 2017 میں احتساب عدالت کے اس فیصلے کو ہائی کورٹ میں چیلنج کیا تھا تاہم اس پر سماعت نہیں ہوئی تھی۔ نیب کی درخواست پر ہائی کورٹ نے آصف زرداری کی بریت کیخلاف درخواست کو سماعت کیلئے 6 مارچ کو مقرر کر دیا ہے۔یاد رہے کہ وفاقی تحقیقاتی ایجنسی( ایف آئی اے) بے نامی اکانٹس سے منی لانڈرنگ کیس میں 32 افراد کے خلاف تحقیقات کر رہی ہے جن میں آصف علی زرداری اور فریال تالپور بھی شامل ہیں۔ایف آئی اے نے اسی معاملہ میں نجی بینک کے سربراہ حسین لوائی اور بینکر طحہ کو گرفتار کیا تھا جو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل میں ہیں۔ اومنی گروپ کے سربراہ جعلی بینک اکانٹس سے فائدہ اٹھانے والی کمپنیوں کے ساتھ تعلق کا اقرار بھی کر چکے ہیں۔سابق وزیر اعظم آصف علی زرداری اور فریال تالپور نے عدالت سے ضمانت قبل از گرفتاری حاصل کر رکھی ہے۔

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے