Voice of Asia News

این آئی اے کی طرف سے مذہبی سیاسی قائدین کے سمن انتقام گیری ہے ، اشرف صحرائی

سرینگر(وائس آف ایشیا) تحریک حریت کے چیئرمین محمد اشرف صحرائی نے این آئی اے کی جانب سے میرواعظ محمد عمر فاروق اور حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی کے فرزند ڈاکٹر سید نسیم گیلانی کے نام سمن اجراء کئے جانے پر رنج و افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس طرح کی کارروائیوں سے تحریک آزادی کے قائدین کو حق بات کرنے سے باز رکھنے پرمجبور کرنا فسطائی طرز عمل ہے ۔ بھارتی حکمران اپنی ایجنسیوں اور ذیلی اداروں کو استعمال کرکے جان بوجھ کر مذہبی و سیاسی قائدین کے خلاف سمن جاری کر کے انہیں اپنے حصول آزادی کے موقف سے دستبردار کرانے کا حربہ اختیار کرتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اس طرح کی کارروائیوں سے بھارتی حکمران اصولوں کی بیخ کنی کرنے کے مرتکب ہوئے ہیں ۔ انہوں نے میرواعظ کے خلاف این آئی اے کے بلاوے اور سمن جاری کئے جانے کے عمل کو سیاسی انتقام گیری اور مداخلت فی الدین قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ جدوجہد آزادی کے ترجمان ہیں وہاپنے قوم کے دین و اخلاق کی بنیادوں پر تہذیب نفس بھی کرتے ہیں اور دوسری طرف بھارت کے سامنے مسئلہ کشمیر کے سیاسی اور انسانی پہلوؤں کی اہمیت کے پیش نظر کشمیری عوام کی طرف سے وکالت کا فریضہ بھی انجام دیتے ہیں ۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •