Voice of Asia News

پی سی بی گورننگ بورڈ اراکین کا ایم ڈی وسیم خان کی تقرری تسلیم کرنے سے انکار

لاہور ( وائس آف ایشیا ) پاکستان کرکٹ بورڈ(پی سی بی ) کے گورننگ بورڈ اراکین نے بورڈ کے منیجنگ ڈائریکٹر (ایم ڈی) وسیم خان کی تقرری تسلیم کرنے سے انکار کردیا۔کوئٹہ میں پاکستان کرکٹ بورڈ کے گورننگ بورڈ کا 53 واں اجلاس اس وقت ہنگامی صورت حال کا شکار ہو گیا جب گورننگ بورڈ کے 7 میں سے 5 ارکان نعمان بٹ، شاہ ریز روکڑی، کبیر خان، شاہ دوست اور ایاز خان نے اجلاس میں پیش کیے جانے والا ایجنڈا مکمل طور پر مسترد کردیا۔ان پانچوں اراکین نے بورڈ کا اجلاس 30 اپریل کو لاہور میں بلانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ آئین کے مطابق 4 ریجنز اور4 محکموں کے ساتھ اجلاس منعقد کیا جائے،اراکین نے ڈیپارٹمنٹل کرکٹ ختم کرنے کے پی سی بی کے فیصلے کو تسلیم کرنے سے انکار کرتے ہوئے ایم ڈی وسیم خان کی تقرری کو بھی چیلنج کردیا اور چیئرمین احسان مانی کی جانب سے وسیم خان کے اختیارات سے متعلق ایجنڈا پیش کر نے سے قبل ہی ماننے سے انکار کردیا۔ذرائع کے مطابق گورننگ بورڈ اجلاس میں 5 ارکان کا بورڈ کے ایجنڈے کو ماننے سے صاف انکار کا مطلب احسان مانی کیخلاف عدم اعتماد کے مترادف ہے۔پی سی بی گورننگ بورڈ میں یہ پہلا موقع ہے ،جب بورڈ اراکین چیئرمین پی سی بی کے فیصلوں کے آگے ڈٹے ہیں اور انہوں نے احسان مانی کے تمام فیصلے تسلیم کرنے سے انکار کردیا۔کرکٹ ماہرین کے مطابق ماضی میں ربڑ سٹیمپ کی حیثیت رکھنے والے ریجنز کے سربراہ اپنی کرسیاں ہلتی دیکھ کر پی سی بی کے سامنے ڈٹ گئے ہیں،پی سی بی سے ملنے والی گرانٹ سے اپنے ریجنز میں گراس روٹ لیول پر کام نہ کرنے والے ریجنز اب کرکٹ بورڈ کو نچلی سطح پر کام کرنے اور بہتری لانے کا مشورہ دے رہے ہیں۔

image_pdfimage_print