Voice of Asia News

حریت کانفرنس آج کی پارلیمانی انتخابات کا مکمل بائیکاٹ کر نے کی اپیل

سرینگر(وائس آف ایشیا) حریت کانفرنس’’گ‘‘ گروپ کے چیئرمین سید علی گیلانی نے آج ( منگل) کو اسلام آباد ( اننت ناگ) کے پارلیمانی انتخابات کا مکمل بائیکاٹ اور اس روز ضلع اسلام آباد میں مکمل اور ہمہ گیر ہڑتال کرنے کی اپیل دہراتے ہوئے کہا ہے کہ 10 لاکھ بھارتی افواج اور نیم فوجی فورسز کی موجودگی میں الیکشن ڈرامے کی کوئی اعتباریت اور وقعت نہیں ہے ۔ یہ جمہوری عمل کے بجائے اگرچہ محض ایک فوجی آپریشن ہوتا ہے البتہ بھارت اس کو اپنے جبری قبضے کے حق میں جواز کے طور پر پیش کرتا ہے اور عالمی برادری کو گمراہ کرتا ہے ۔ اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ کشمیری قوم حصول حق و خودارادیت کے لئے عظیم اور بے مثال قربانیاں پیش کر رہی ہیں اور ان قربانیوں کی حفاظت کے لئے ضروری ہے کہ لوگ ہر اس عمل کا حصہ بننے سے احتراز کریں ۔ جو ان کے سفر آزادی کو طویل بنانے کا موجب بنتا ہو اور جس سے ان قربانیوں پر حرف آنے کا احتمال پیدا ہوتا ہو ۔ انہوں نے کہاکہ لوگوں نے سرینگر پارلیمانی انتخاب کے دوران میں جس جذبے ، حوصلے اور یکسوئی کا مظاہرہ کیا ہے اس کو آج ایک بار پھر یاد رکھنے اور دہرانے کی ضرورت ہے تاکہ دنیا تک پیغام جائے کہ انتخابی ڈرامے اس رائے شماری کا بدل نہیں ہو سکتے ۔ جس کا کشمیری قوم کے ساتھ بین الاقوامی سطح پر وعدہ کیا گیا ہے اور جس کے لئے یہاں کے لوگ جدوجہد کر رہے ہیں حریت راہنما نے کہا کہ ہم ہر روز اپنے معصوم نوجوانوں کے جنازوں کو کندھا دیتے ہیں اور جن کے ہاتھ مہندی کے بجائے خون میں رنگے ہوتے ہیں ہر گھر ماتم کدہ بنا ہوا ہے اور ہر گلی میں آہ فغان کی صدائیں سنائی دے رہی ہیں البتہ کچھ بے ضمیر لوگوں کو اس کی کوئی پرواہ ہے اور نہ ان کے ضمیر میں کوئی خلش ہے انہیں بس ووٹ حاصل کر کے اپنے لئے مالی مفادات حاصل کرنا مقصود ہوتا ہے جس کے لئے یہ لوگ پوری قوم کی مصیبتوں میں اضافہ کر رہے ہیں ۔

image_pdfimage_print