Voice of Asia News

اسلام آباد ہائی کورٹ: آصف زرداری کی تمام درخواستوں پر عبوری ضمانت میں توسیع

اسلام آباد( وائس آف ایشیا ) اسلام آباد ہائی کورٹ نے سابق صدر آصف زرداری کی تمام درخواستوں میں عبوری ضمانت میں توسیع کردی، جسٹس عامرفاروق نے ریمارکس دیئے کہ لگتاہے طلبی اورضمانتوں کا سیلاب آرہا ہے. تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس عامر فاروق اورجسٹس محسن اختر کیانی پر مشتمل ڈویژن بینچ نے جعلی اکاﺅنٹس کیس میں آصف زرداری کی 7 اور فریال تالپورکی 3 درخواستوں پر سماعت کی‘آصف زرداری،فریال تالپور ضمانت میں توسیع کے لیے چوتھی بار عدالت میں پیش ہوئے. عدالت نے آصف زرداری کی 2 درخواستوں پر عبوری ضمانت 22مئی تک منظور کرتے ہوئے نوٹس جاری کردیئے اور آصف زرداری کو5،5لاکھ کے مچلکے جمع کرانے کا حکم دیا.اسلام آباد ہائی کورٹ نے اوپل 225 انکوائری میں بھی آصف زرداری کی عبوری ضمانت 12جون منظور کرلی ، ضمانت 5لاکھ روپے کے مچلکوں کے عوض منظور کی گئی. وکیل فاروق ایچ نائیک نے کہا نئے نئے طلبی کے نوٹسز آرہے ہیں، جس پر جسٹس عامرفاروق نے ریمارکس دیئے کہ لگتاہے طلبی اورضمانتوں کا سیلاب آرہا ہے‘پارک لین کیس میں بھی آصف زرداری کی ضمانت میں12جون تک توسیع کردی گئی.خیال رہے جعلی اکاﺅنٹس کیس میں نیب کے طلبی نوٹس پر سابق صدر آصف زرداری اورفریال تالپور کی عبوری ضمانت آج ختم ہورہی تھی. دوسری جانب آصف زرداری نے وکیل کے ذریعے ضمانت قبل از گرفتاری کے لیے مزید 2درخواستیں دائر کیں تھیں جبکہ نیب کی جانب سے دو مزید کال اپ نوٹس جاری کیے گئے تھے، آصف علی زرداری کی پیشی کال اپ نوٹس کے مطابق کل ہے. گذشتہ روز جعلی اکاﺅنٹس کیس میں پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری کی درخواست ضمانت پر نیب نے اپنا تحریری جواب اسلام آباد ہائی کورٹ میں جمع کرایا تھا ، نیب کا تحریری جواب 11 صفحات پر مشتمل ہے، جس میں آصف علی زرداری کی منی لانڈرنگ اوردیگر کیسز سے متعلق جامع رپورٹ رجسٹرار آفس میں جمع کرائی تھی. جواب میں موقف اختیارکیاگیا تھا کہ زرداری کے خلاف انکوائری اے میں 22 انکوائیرز او ر انویسٹی گیشن بی میں 3 ریفرنسز اور ریفرنس میں ایک ریفرنس زیر تفتیش ہے‘زرداری ہائی کورٹ سے ریلیف کے مستحق نہیں، اسلام آبادہائی کورٹ آصف زرداری کی درخواست کوخارج کردے، زرداری کے خلاف ٹھوس شواہد نیب کے پاس موجود ہے. نیب نے جواب میں استدعا کی تھی کہ عدالت زرداری کی درخواست ضمانت کو ہائی کورٹ ناقابل سماعت قرار دے. خیال رہے سابق صدر آصف علی زرداری کے خلاف جعلی اکاﺅنٹس کے ذریعے اربوں روپے کی منی لانڈرنگ کا مقدمہ احتساب عدالت میں زیر سماعت ہیں اور آصف زرداری نے 15 مئی تک جعلی اکاﺅنٹس کیس میں عبوری ضمانت حاصل کر رکھی تھی.

image_pdfimage_print