Voice of Asia News

لاہور ہائی کورٹ کا فیصلہ کالعدم‘ پرائیویٹ اسکولز فیس کی مد میں سالانہ پانچ فیصد اضافے پابند

 
اسلام آباد(وائس آف ایشیا)سپریم کورٹ نے پرائیویٹ اسکولوں کو فیس کی مد میں سالانہ پانچ فیصد اضافے کرنے کا پابند کرتے ہوئے لاہور ہائی کورٹ کا فیصلہ کالعدم قرار دے دیا ہے۔ بدھ کو سپریم کورٹ آف پاکستان میں اسکولز فیس سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی،جہاں عدالت عظمی نے محفوظ شدہ فیصلہ سناتے ہوئے پرائیویٹ اسکولوں کے لئے فیس میں پانچ فیصد سالانہ اضافہ مقرر کردیا۔فیصلے کے مطابق اسکول پانچ فیصد سے زیادہ اضافہ نہیں کرسکیں گے،اس کے علاوہ سپریم کورٹ نے نجی اسکولز کے حق میں آنے والا لاہور ہائی کورٹ کا فیصلہ کالعدم جبکہ سندھ ہائی کورٹ کے فل بینچ کا فیصلہ برقرار رکھاہے۔مختصر فیصلہ جسٹس اعجازالاحسن نے پڑھ کر سنایا جبکہ جسٹس فیصل عرب نے فیسوں میں پانچ فیصداضافے کی حد سے اختلاف کیا،تفصیلی فیصلہ بعد میں جاری کیا جائے گا۔اس کے علاوہ عدالت نے فیسوں میں بیس فیصد کمی سمیت اپنے تمام عبوری حکم بھی واپس لیتے ہوئے پرائیویٹ اسکولز کو آج تک کم کی گئی فیس بطور بقایاجات لینے سے بھی روک دیاہے،عدالت کا کہنا ہے کہ نجی اسکولز قانون کے مطابق ہی فیس وصول کر سکتے ہیں۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •