گزشتہ مالی سال کے دوران سمندرپار پاکستانیوں کی جانب سے ترسیلات زر میں 9.68 فیصد اضافہ ہوا،سٹیٹ بنک

اسلام آباد ( وائس آف ایشیا) حکومت کی جانب سے قانونی ذرائع سے ترسیلات زرارسال کرنے کیلئے اقدامات کے نتیجہ میں گزشتہ مالی سال کے دوران سمندرپارمقیم پاکستانیوں کی جانب سے ترسیلات زر میں 9.68 فیصد اضافہ ریکارڈکیا گیاہے۔سٹیٹ بنک آف پاکستان کی طرف سے جاری کردہ اعدادوشمارکے مطابق مالی سال 2018-19 ء کے دوران سمندرپارمقیم پاکستانیوں نے 21.84 ارب روپے کا زرمبادلہملک بجھوایا جو مالی سال 2017-18ء کے اسی عرصہ کے مقابلے میں 9.68 فیصد زیادہ ہے، مالی سال 2017-18ء کے اسی عرصہ میں سمندرپارمقیم پاکستانیوں نے 19.91 اربڈالر کازرمبادلہ ملک ارسال کیاتھا۔اعدادوشمارکے مطابق جون 2019 ء کے دوران سمندرپارمقیم پاکستانیوں کی جانب سے ترسیلات زرکاحجم 1650.52 ملین ڈالر ریکارڈ کیا گیا جو مئی کے مقابلے میں 28.72 فیصد کم ہے تاہم جون 2018 ء کے مقابلے میں 1.40 فیصد زیادہ ہے۔اعداد و شمارکے مطابق اس عرصہ میںسعودی عرب، متحدہ عرب، متحدہ عرب امارات، امریکا، برطانیہ اورخلیج تعاون کونسل کے ممالک سے جون کے مہینے میں بالترتیب 334 ملین ڈالر، 356.03، 276.76، 268.97 ، 163.46 ملین ڈالر اور52.49 ملین ڈالر کی ترسیلات زرریکارڈ کی گئیں۔اسی طرح جون کے مہینے میں ملائیشیاء، ناروے، سویٹزرلینڈ، آسٹریلیاء، کینیڈا، جاپان اور دیگر ممالک سے 198.81 ملین ڈالر کی ترسیلات زرریکارڈ کی گئیں ، جون 2018ء میں ان ممالک سے مجموعی طورپر199.47 ملین ڈالر کی ترسیلات زرریکارڈ کی گئی تھی۔