Voice of Asia News

عمران خان 21 تا 23 جولائی تک امریکا کا تین روزہ دورہ کریں گے، امریکی صدر سے بھی ملاقات ہوگی

 
اسلام آباد/واشنگٹن ( وائس آف ایشیا)وزیراعظم عمران خان 21 سے 23 جولائی تک امریکا کا تین روزہ دورہ کریں گے جس میں وہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے بھی ملاقات کریں گے۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق وزیراعظم عمران خان صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی دعوت پر امریکا کا تین روزہ دورہ کریں گے۔ترجمان کے مطابق وزیراعظم عمران خان اور صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے درمیان 22 جولائی کو وائٹ ہاؤس میں ملاقات ہوگی، ملاقات میں دو طرفہ تعلقات اور علاقائی صورتحال پر بات چیت ہوگی۔ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ وزیر اعظم کانگریس ارکان، کارپوریٹ سربراہان اور پاکستانی کمیونٹی سے بھی ملاقات کریں گے۔دفتر خارجہ کے ترجمان نے بتایا کہ وزیراعظم امریکا میں مختلف تقاریب میں نیا پاکستان وڑن سے آگاہ کریں گے، وزیراعظم امریکا کے ساتھ کثیر جہتی تعلقات کی اہمیت کا بھی بتائیں گے۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق وزیر اعظم افغانستان میں امن و استحکام کے لیے پاکستان کے عزم سے آگاہ کریں گے، وزیر اعظم اپنے دورہ امریکا کے دوران پاکستان کی پرْ امن ہمسائیگی کی پالیسی پر روشنی ڈالیں گے۔دفتر خارجہ کے مطابق دورے سے باہمی مفاد پر مبنی شراکت داری مزید مضبوط ہو گی۔دوسری جانب ترجمان وائٹ ہاؤس کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ وزیراعظم عمران خان کا 22 جولائی کو وائٹ ہاؤس آنے پر خیر مقدم کریں گے۔وائٹ ہاؤس کے ترجمان کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے دورے میں پاک امریکا تعاون کی مزید مضبوطی توجہ کا مرکز ہو گی، پاک امریکا تعاون کا مقصد خطے میں امن و استحکام اور معاشی خوشحالی لانا ہے۔اعلامیے میں کہا گیا کہ صدر ٹرمپ اور وزیرعظم عمران خان کے درمیان انسداد دہشتگردی، دفاع، توانائی اور تجارت سے متعلق امور پر بات چیت ہو گی۔ترجمان وائٹ ہاؤس کے مطابق دونوں ممالک کے درمیان بات چیت کا مقصد جنوبی ایشیاء میں امن اور پاک امریکا دیرپا شراکت داری کا ماحول پیدا کرنا ہے۔
وائس آف ایشیا11جولائی 2019 خبر نمبر121

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •