Voice of Asia News

ختم نبوت قوانین میں کسی نے ٹمپرنگ کی تو سب سے پہلے استعفیٰ دوں گا ،فروغ نسیم

اسلام آباد( وائس آف ایشیا)وفاقی وزیر قانون فروغ نسیم نے کہا ہے کہ میرا دین اور پاکستان لازم و ملزوم ہے،ختم نبوت قوانین میں ٹمپرنگ کی کوشش کی گئی تو سب سے پہلے میں استعفیٰ دے دونگا،عمران خان کی بھی ایسی ہی سوچ ہے،مولانا عبدالکلام کی سوچ کو ہندوستان میں شکست دے دی گئی۔مقامی ہوٹل میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر قانون فروغ نسیم کا کہناتھا کہ میرا دین اور پاکستان لازم و ملزوم ہے، کچھ لوگ کہتے ہیں کہ پاکستان فلاں فلاں خطرہ ہے، جب ابرحہ نے مکہ پر حملہ کیا تھا تع اﷲ نے خود اپنے گھر کو بچایا تھا، پاکستان کی حفاظت بھی خدا خود کرے گا، پاکستان کا معمار مولوی ہے، وزیر قانون نے کہا کہ اگر خدانخوانستہ کبھی ختم نبوت قوانین میں ٹمپرنگ کی کوشش کی گئی تو سب سے پہلے میں استعفیٰ دے دونگا، اگر کوئی ایسی کوشش کی گئی تو بھرپور مزاحمت کریں گے ۔انہوں نے کہا کہ ریاست پاکستان سے اسلام نکال دیا جائے تو ہندوستان سے الگ ہونے کا کوئی جواز نہیں رہ جاتا، فروغ نسیم نے کہا کہ عمران خان کی بھی ایسی ہی سوچ ہے،مولانا عبدالکلام کی سوچ کو ہندوستان میں شکست دے دی گئی ہے، آج ایم کیو ایم پاکستان کے ساتھ مل کر کھڑی ہے، مسلمان سائنس میں ترقی نہ کر کے پستی میں گر گیا، مسلم امہ کا اتحاد قائم کرنے کی ذمہ داری علما کی ہے، انگریز بین المذاہب ہم آہنگی ڈائیلاگ کراتے ہیں، انگریز اپنے خطے کو فساد سے بچاتا ہے۔انہوں نے کہاکہ ہمیں آج سے ہی ایک دوسرے پر تنقید بند کرنی ہوگی، آنے والی نسلیں دیکھیں گی کہ پاکستان کتنی ترقی کرے گا، اسلام میں غوروفکر کا سبق دیا گیا ہے، اسلام میں ھدی للناس، ھدی للمتقین اور ہوالالباب کو تصور غورو فکر سے پورا ہوگا،اسلام آخری مذہب ہے اس کے بعد کوئی دین نہیں آئے گا، ہمیں امت اور پاکستان کو متحد کرنے کی کوشش کرنی چاہئیے۔وفاقی وزیر قانون نے کہا کہ سعودی عرب نے پاکستان کے ساتھ ہمیشہ پیار کا اظہار کیا،سعودی عرب کا روڈ ٹو مکہ مکرمہ میں شامل کرنے پر شکریہ ادا کرتا ہوں۔
وائس آف ایشیا11جولائی 2019 خبر نمبر158

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •