Voice of Asia News

یہاں ہم نوکریاں یا الاﺅنس دینے کے لیے نہیں بیٹھے، چیف جسٹس

اسلام آباد ( وائس آف ایشیا) سپریم کورٹ نے ملازم وزارت خارجہ ممتاز احمد کی فارن الاﺅنس کی درخواست خارج کردی، چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے ،یہاں نوکریاں یا الاﺅنس دینے کے لیے نہیں بیٹھے، ہمیں اپنا کام قانون کے تحت کرنا ہے ۔تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں چیف جسٹس آصف کھوسہ کی سربراہی میں بینچ نے ملازم وزارت خارجہ ممتاز احمد کی فارن الاﺅنس کی درخواست پر سماعت کی۔دور ان سماعت وکیل ممتاز احمد نے کہاکہ عدالت نے معاملہ کا دوبارہ جائزہ لینے کا حکم دیا، عدالتی حکم کے باوجود معاملہ کا وزارت نے جائزہ نہیں لیا ۔چیف جسٹس کا کہنا تھا محکمہ اپنے رولز میں ترمیم کرنے کا اختیار کھتا ہے، جس پر وکیل نے کہاکہ عدالت ہوا کے لیے تھوڑا دروازہ کھول دے۔چیف جسٹس نے کہاکہ ہمدری کے لیے یہاں نہیں بیٹھے ، راستہ قانون سے نکلے گا، قانون راستہ نہ دیں تو ہمدردی بھی نہیں کر سکتے ،یہاں نوکریاں یا الاﺅنس دینے کے لیے نہیں بیٹھے ، ہمیں اپنا کام قانون کے تحت کرنا ہے۔بعد ازاں سپریم کورٹ نے ملازم وزارت خارجہ ممتاز احمد کی فارن الاﺅنس کی درخواست خارج کردی۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •