Voice of Asia News

بھارتی سیلزمین کو بچی سے شرمناک حرکات پر گرفتار کر لیا گیا

دْبئی( وائس آف ایشیا) دْبئی پولیس نے ایک سْپر مارکیٹ کے سیلز مین کو پانچ سالہ بچی سے غلط حرکات کرنے اور اس کی تصویریں بنانے کے الزام میں گرفتار کر لیا ہے۔ استغاثہ کی جانب سے 38 سالہ بھارتی شہری پر الزام عائد کیا گیا کہ اْس نے بچی کے گال کو چْوما اور اس دوران اس کی تصویریں بھی بنائیں۔ اس وقت بچی اپنی گھریلو ملازمہ کے ساتھ کچھ خریداری کے سلسلے میں ایک سْپر مارکیٹ میں آئی تھی۔تاہم ملزم نے اس الزام کو درست تسلیم کرنے سے انکار کر دیا۔اس کا کہنا تھا کہ وہ بچی کو اپنی اولاد کی طرح سمجھ کر پیار کرتا تھا۔ ملزم نے موبائل میں موجود بچی کی تصویریں بھی دکھائیں۔ اس واقعے کی رپورٹ الرشیدیہ پولیس اسٹیشن میں درج کرائی گئی تھی۔ بچی کے والد نے بتایا کہ بچی گھریلو ملازمہ کے ساتھ سپر مارکیٹ گئی تو ملازم نے اس کے گال کو زبردستی چْوما۔ ملازمہ نے بتایا کہ یہ سیلزمین اس سے قبل بھی بچی کے گال چْومتا تھا جب بھی وہ شاپنگ کے لیے ملازمہ کے ساتھ جاتی تھی۔ بچی کو سیلزمین کی جانب سے عجیب و غریب انداز سے چْومنا بہت بْرا لگتا تھا۔ بچی نے یہ بات وقوعہ کے روز والد کو بھی بتائی کہ ملزم اْسے بڑے عجیب انداز سے چْومتا ہے۔ وہ آئندہ اس کے پاس نہیں جائے گی۔ ملازمہ نے بتایا کہ وہ جب بھی بچی کو ملزم کی دْکان پر لے کر جاتی تو وہ اسے ٹیبل پر بٹھا کر اس کا گال چومتا اور پھر اس کی تصویریں بنانے لگتا۔ اس مقدمے کا فیصلہ 24 ستمبر کو سْنایا جائے گا جس میں ملزم کو سزا ملنے کا قوی امکان ہے۔
وائس آف ایشیا08اگست 2019 خبر نمبر18

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •