Voice of Asia News

مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے پر بھارت کے خلاف دنیا بھر میں احتجاج

لندن(وائس آف ایشیا)مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے پر بھارت کے خلاف دنیا بھر میں احتجاج کا سلسلہ جاری ہے،امریکہ ،برطانیہ، فرانس ، بلجیم اور نیوزی لینڈ میں ہونے والے مظاہروں میں شرکا نے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے کے بھارتی اقدام کو مسترد کردیا اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق مسلہ کشمیر کے حل پر زرر دیا گیا ہے ۔ کشمیری تارکین وطن نے مقبوضہ کشمیر میں مسلسل کرفیو نہتے کشمیریوں پر بھارتی مظالم کی شدید الفاظ میں مذمت کی ۔ کے پی آئی کے مطابق دنیا کے مختلف ملکوں میں مظاہرین نے مطالبہ کیا ہے کہ کشمیریوں کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حق خود ارادیت دیا جائے۔نیویارک میں بھارتی قونصلیٹ کے سامنے پاکستانی اور کشمیری کمیونٹی نے احتجاج کیا،مظاہرے میں کولمبیا یونیورسٹی میں زیر تعلیم مختلف ممالک کے طلبہ بھی شریک ہوئے۔احتجاج میں سکھ برادری نے بھی حصہ لیا، اس موقع پر مقررین نے مظلوم کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیا،مظاہرین کا کہنا تھا کہ مودی سرکار کا ظلم و جبر کشمیریوں کے حوصلے پست نہیں کرسکتا۔ کشمیر بھارتی فوجیوں کا قبرستان بنے گا۔برطانوی شہر برمنگھم میں بھی پاکستانی کمیونٹی اور کشمیریوں نے بھارتی قونصلیٹ کے سامنے احتجاج کیا،برطانوی سیاستدان جارج گیلوے بھی شریک ہوئے،شرکا نے مقبوضہ کشمیر میں مودی سرکار کی جارحیت اور وادی میں ریاستی دہشت گردی کے خلاف نعرے لگائے۔برمنگھم میں نریندری مودی حکومت کے خلاف احتجاج کرنے والے مظاہرین نے بھارتی قونصلیٹ کویاد داشت بھی جمع کرائی۔مانچسٹر میں بھی کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لئے مظاہرہ کیا گیا جس میں بچوں اور خواتین کے علاوہ برطانوی رکن پارلیمنٹ افضل خان بھی شریک ہوئے۔پیرس میں بھی بھارتی جارحیت کے خلاف احتجاج کیا گیا۔ مظاہرین نے کشمیر کی مخصوص ریاستی حیثیت کو ختم کرنے کے بھارتی اقدامات کی مذمت کی۔بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کے خلاف بین الاقوامی پیمانے پر احتجاج کا سلسلہ جاری ہے۔ اس سلسلے میں جمعہ کو جموں و کشمیر لبریشن فرنٹ کے زیر اہتمام برسلز میں یورپی پارلیمان کے باہر مظاہرہ ہوا، جس میں کثیر تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔اس موقع پر علامتی بھوک ہڑتال بھی کی گئی۔ مظاہرین نے بھارتی آئین کے آرٹیکل 370 کے خاتمے اور جے کے ایل ایف کے رہنما یاسین ملک کی گرفتاری کی مذمت کی۔ اسی طرح کا مظاہرہ ویلنگٹن میں بھارتی ہائی کمیشن کے باہر منعقد ہوا، جس میں کثیر تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔ مظاہرین نے پلے کارڈز اور بینرز اٹھا رکھے تھے جن پر بھارتی اقدامات کے خلاف نعرے درج تھے
وائس آف ایشیا10اگست 2019 خبر نمبر2

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •