Voice of Asia News

ملک میں کورونا کی پانچویں لہر کی شدت میں کمی‘ مثبت کیسز کی شرح 5 فیصد پر آگئی

اسلام آباد ( وائس آف ایشیا ) پاکستان میں علامی وباء کورونا وائرس کی پانچویں لہر کا زور ٹوٹ رہا ہے کیوں کہ ملک میں اس وقت کورونا کیسز کی شرح 5 فیصد پر آچکی ہے جب کہ گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران ریکارڈ کیے گئے نئے کیسز کی تعداد بھی 3 ہزار سے نیچے آگئی ۔ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کی جانب سے جاری کردہ تازہ ترین اعداد و شمار میں بتایا گیا ہے کہ ملک بھر میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا وباء سے مزید 29 مریض انتقال کرگئے ، جس کے ساتھ ہی ملک میں کورونا سے انتقال کرنے والے افراد کی مجموعی تعداد 29 ہزار 801 ہوچکی ہے جب کہ پچھلے چوبیس گھنٹوں میں ملک میں کورونا کے 47 ہزار 307 ٹیسٹ مزید کیے گئے ، جس میں سے 2 ہزار 662 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی۔این سی او سی کے مطابق ملک میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے کیسز مثبت آنے کی شرح 5 اعشاریہ 62 فیصد ریکارڈ کی گئی اور اس وقت ملک بھر میں کورونا وباء کے 1 ہزار 566 مریض انتہائی نگہداشت میں زیرعلاج ہیں جب کہ ملک بھر میں کورونا سے متاثر ہونے والے شہریوں کی مجموعی تعداد اب 14 لاکھ 86 ہزار361 تک پہنچ چکی ہے۔ دھر وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت اجلاس میں بتایا گیا کہ عالمی سطح پر اومی کرون کیسز میں بلند ترین سطح کے بعد کمی آنا شروع ہوگئی، وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ کورونا کے دوران اسمارٹ لاک ڈاؤن سے کمزور طبقات کا تحفظ یقینی بنایا، حکومتی اقدامات سے معاشی سرگرمیوں پر کورونا کے کم اثرات مرتب ہوئے،ایس اوپیز پر عملدرآمد اور ویکسی نیشن میں مزید تیزی لائی جائے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت انسداد کورونا سے متعلق اقدامات پراجلاس ہوا ، اجلاس میں بتایا گیا کہ جنوری میں عالمی سطح پر اومی کرون کیسز میں بلند ترین سطح کے بعد کمی آنا شروع ہوگئی ہے، یورپ اور امریکا میں اومی کیسز کی تعداد سب سے زیادہ ہے، خطے میں کورونا ہلاکتوں سے متعلق بھارت سرفہرست ہے، بھارت میں یومیہ ایک ہزارافراد کورونا سے ہلاک ہو رہے ہیں، اسی طرح پاکستان میں اومی کرون سے یومیہ 42 اموات ہورہی ہیں۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں