Voice of Asia News

اسلامی تعاون تنظیم نے کشمیر کازکے لئے بار بار اپنی غیر متزلزل حمایت کا اعادہ کیا ‘ رپورٹ

اسلام آباد( وائس آف ایشیا )اسلامی تعاون تنظیم نے کشمیر کازکے لئے بار بار اپنی غیر متزلزل حمایت کا اعادہ کیا ہے۔کشمیرمیڈیاسروس کے شعبہ تحقیق کی طرف سے آج جاری کی گئی ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ او آئی سی نے کشمیریوں پر بھارتی مظالم کی مذمت کرتے ہوئے متعدد قراردادیں منظور کی ہیں اور وہ اقوام متحدہ کی متعلقہ قراردادوں کے مطابق تنازعہ کشمیر کے پر امن حل کے لئے پرعزم ہے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ او آئی سی کشمیر سے متعلق اقوام متحدہ کی قراردادوں کی حمایت میں مسلسل بیانات جاری کرتا رہتا ہے جوبھارت کے لئے مایوسی کا باعث ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ جموں و کشمیرکے بارے میںاو آئی سی کے رابطہ گروپ کے اجلاس بلانے کے لئے پاکستان نے ہمیشہ قائدانہ کردار ادا کیا ہے۔رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ جدوجہدآزادی میں مصروف کشمیریوں کو بھارتی تسلط سے آزادی کرانے کے لئے او آئی سی کو اپنی کوششوں کو دوگنا کرنا چاہئے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ غیر قانونی طور پر بھارت کے زیر قبضہ جموں و کشمیر میں انسانیت کے خلاف جرائم پر انسانی حقوق کی عالمی تنظیمیں بھارت کو بڑے پیمانے پر تنقید کا نشانہ بنا رہی ہیں اور اپنے تمام پڑوسی ممالک کے ساتھ تنازعات کے باعث بھارت الگ تھلگ ہوکررہ گیا ہے۔رپور ٹ میں کہا گیا ہے کہ بھارت عالمی برادری کو گمراہ کرنے کے لئے حق خود ارادیت کے حصول کے لئے کشمیریوں کی جدوجہد کو دہشت گردی کا نام دے رہا ہے لیکن اپنے حقوق کے حصول کے لئے کشمیریوں کی تحریک ایک جائز جدوجہد ہے۔رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ بھارت کامکروہ چہرہ دنیا کے سامنے بے نقاب ہوچکا ہے اورکشمیریوں کی جدوجہد کو دہشت گردی سے جوڑنا بین الاقوامی قانون کی خلاف ورزی ہے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ گزشتہ سال اگست میں دفعہ 370 منسوخ کرنے کا مودی کاغیر قانونی اقدام بین الاقوامی اصولوں کے منافی ہے اور او آئی سی کے لئے بہترین موقع ہے کہ وہ مقبوضہ جموںوکشمیر کی سنگین صورتحال پر غور کے لئے ہنگامی اجلاس طلب کرے۔ رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ اسلامی تعاون تنظیم کو بھارت سے مقبوضہ جموںوکشمیر اورپورے بھارت میں مسلمانوں کے خلاف متعصبانہ اقدامات روکنے کا مطالبہ کرنا چاہئے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے