Voice of Asia News

چین پر یوکرین بحران کی ذمہ داری عائد کرنے کا الزام مضحکہ خیز ہے، نائب وزیر خارجہ

بیجنگ(وائس آ ف ایشیا) چین کے نائب وزیر خارجہ لی یوچینگ نے کہا کہ چین پر یوکرین بحران کی ذمہ داری عائد کرنے کا الزام مضحکہ خیز ہے۔ چینی میڈیا کے مطابق 20ممالک کے عالمی تھنک ٹینکس کے آن لائن ڈائیلا گ سے خطاب کرتے ہوئے چینی نائب وزیر خارجہ نے کہا کہ بعض ممالک نے چین پر یوکرین بحران کے حوالے سے بے بنیاد الزامات لگانے، چین کے موقف کو مسخ کرنے اور ہم پر اس بحران کی ذمہ داری عائد کرنے کی کوشش کی ہے ۔انہوں نے کہا کہ بعض ممالک نے چین اور روس کے حالیہ مشترکہ بیان کو توڑ مروڑ کر پیش کیا اوردوستی کی کوئی حد نہیں ہے اور تعاون کی کوئی ممنوعہ جگہیں نہیں ہیں کا مطلب یہ لیا گیا کہ چین کو یوکرین میں روس کے خصوصی فوجی آپریشن بارے پہلے سے علم تھا اور انہوں نے اس کی تصدیق کی ہے ، اس لیے انھوں نے یہ نتیجہ اخذ کیا کہ چین کو اس تنازعے کے لیے جوابدہ ہونا چاہیے۔انہوں نے کہا کہ یہ عمل مضحکہ خیز ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ چین اس تنازعہ میں ملوث نہیں ہے تو چین اس کا ذمہ دار کیسے ہو سکتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ چین اور روس کے درمیان تعلقات عدم تصادم اور تیسرے فریق کو نشانہ نہ بنانے کے اصولوں پر مبنی ہیں اور یہ کسی تیسرے فریق کے اثر و رسوخ کے تابع نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ چین تمام ممالک کے ساتھ دوستانہ تعلقات کا خواہاں ہے اور ہم نے کبھی بھی تعاون کی کوئی حد مقرر نہیں کی اور نہ ہی ہمیں ایسا کرنے کی ضرورت پیش آئی ہے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں