Voice of Asia News

عدالت کا وزیراعظم کو حنیف عباسی کی تعیناتی پر نظر ثانی کا حکم

اسلام آباد(وائس آ ف ایشیا)عدالت نے وزیراعظم شہباز شریف کو حنیف عباسی کی تعیناتی پر نظر ثانی کا حکم دے دیا ۔ تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ نے حنیف عباسی کی بطور معاون خصوصی تعیناتی کے خلاف شیخ رشید احمد کی درخواست پر سماعت کرتے ہوئے وزیراعظم کو اپنے فیصلے پر نظر ثانی کا حکم دیا ، اسلام آباد ہائیکورٹ نے حنیف عباسی ، سیکرٹری کابینہ ڈویژن کو نوٹس جاری کر دیا جب کہ کام سے روکنے کی متفرق درخواست پر بھی نوٹس جاری کرتے ہوئے کیس کی سماعت 17 مئی تک کے لیے ملتوی کر دی۔بتایا گیا ہے کہ سابق وزیر داخلہ شیخ رشید احمد کی جانب سے اسلام آباد ہائی کورٹ میں جمع کرائی گئی درخواست میں استدعا کی گئی تھی کہ حنیف عباسی کو کام سے روکیں ، حنیف عباسی کے خلاف 2012 میں اینٹی نارکوٹکس فورس نے مقدمہ درج کیا، حنیف عباسی ایفی ڈرین کوٹہ کیس میں سزا یافتہ ہیں، ان کے خلاف ٹرائل کورٹ نے 21 جولائی 2018 کو سزا سنائی کیوں کہ لاہور ہائی کورٹ نے ٹرائل کورٹ کی سزا معطل کر رکھی ہے تاہم مجرم ہونے کا فیصلہ ختم نہیں ہوا ، درخواست میں یہ نقطہ بھی اٹھایا گیا کہ سیکرٹری کابینہ بتائیں کس قانون کے تحت حنیف عباسی کواس عہدے پر تعینات کیا گیا ہے؟۔دالت کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید احمد نے کہا کہ میں سوچ سمجھ کر آیا ہوں اور عدالت پر مکمل اعتماد ہے، نااہل حکومت ہم پر مسلط کردی گئی ہے، وزیر اعظم شہباز شریف نے خود پر فرد جرم عائد نہیں ہونے دی، اے این ایف کیس میں ملزمان پر وکلاء نے فرد جرم عائد نہیں ہونے دی، میرا بھتیجا روز عدالت میں ذلیل و خوار ہورہا ہے، عوام کو پیغام دینا چاہتا ہوں کہ جلد انتخابات ہوررہے ہیں۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں