Voice of Asia News

امپورٹڈ حکومت کو چاہیے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کرے، شہباز گل

اسلام آباد(وائس آ ف ایشیا)پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما شہباز گل نے کہا ہے کہ امپورٹڈ حکومت کو چاہیے کہ فوری طور پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کرے۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے جاری کردہ پیغام میں شہباز گل نے کہا کہ عالمی مارکیٹ میں تیل کی قیمتوں میں بڑی کمی کے بعد امپورٹڈ حکومت کو چاہیے کہ فوری طور پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کرے۔شہباز گل نے مزید کہا کہ عمران خان نے ورثے میں ملے ریکارڈ خسارے، کم ترین زرمبادلہ، کم ترین ایکسپورٹ، کم ترین ریمیٹنس، کورونا اور عالمی کساد بازاری کے باوجود عوام کو پیٹرول پر بڑا ریلیف فراہم کیا۔واضح رہے کہ آئی ایم ایف کی شرائط پر پیٹرولیم مصنوعات پر سبسڈی ختم کرنے کی تیاریاں، وزارت خزانہ رواں ہفتے کے دوران سبسڈی ختم کرنے کا پلان تیار کریں گے۔ذرائع کے مطابق بجلی کے فی یونٹ پر دی گئی سبسڈی بھی ختم کیے جانے کا امکان ہے، آئی ایم ایف سے مذاکرات کے دوران سبسڈی ختم کرنے کا پلان پیش کیا جائے گا۔ذرائع کے مطابق پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان مذاکرات 18 مئی سے شروع ہوں گے، آئی ایم ایف کے ساتھ قطر میں دس روز تک مذاکرات جاری رہیں گے۔ذرائع کا کہنا تھا کہ پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان مذاکرات میں آئندہ بجٹ تجاویز زیر غور آئیں گی۔ذرائع کے مطابق حکومت اس وقت پیٹرولیم مصنوعات پر 65 ارب روپے کی سبسڈی دے رہی ہے، پٹرول پر 21 ارب اور ڈیزل پر 44 ارب روپے سبسڈی دی جا رہی ہے۔پیٹرولیم مصنوعات پر سبسڈی مرحلہ وار ختم کیے جانے کا امکان ہے۔یاد رہے کہ پیٹرولیم مصنوعات اور بجلی پر سبسڈی ختم ہونے سے مہنگائی کی شرح بڑھنے کا امکان ہے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں