مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم جاری،حریت ترجمان گرفتار

سرینگر( وائس آف ایشیا )مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم جاری،حریت ترجمان گرفتار،کنٹرول لائن سے گرفتار چاروں نوجوان رہا،وادی میں نوجوانوں کی ہلاکت کیخلاف احتجاج کا سلسلہ جاری ،دکانیں اور بازار بند انٹر نیٹ اور موبائل سروس معطل،ڈوڈہ کا نوجوان دریائے نیرو میں ڈوب کر لاپتہ ہو گیا۔تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز نے حریت (گ) کے ترجمان اعلی غلام احمد گلزار کو پولیس کی طرف سے گرفتار کرنے کی کارروائی کی چیئرمین سید علی گیلانی نے شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔ حریت بیان کے مطابق علی الصبح پولیس کی ایک ٹیم نے ترجمان کے گھر پر چھاپہ ڈال کر اس کو گرفتار کرکے شیر گڑھی تھانے میں بند کردیا ہے۔ گیلانی نے پولیس کارروائی کو بلاجواز قرار دیتے ہوئے کہا کہ ریاست میں سیاسی قائدین اور کارکنوں کو سیاسی طور اپنی سرگرمیاں جاری رکھنے کی اجازت نہیں دی جارہی ہے اور یہاں جان بوجھ کر سیاسی بے یقینی کا ماحول پیدا کرکے یہاں کے عوام کو پشت بہ دیوار کردیا جارہا ہے۔ دریں اثناء بھارتی فوج اور فورسز کے ہاتھوں شمالی کشمیر کے اوڑی علاقے میں کنٹرول لائن کے قریب سے گرفتار4 نوجوانوں کو کئی روز تک پوچھ تاچھ اور مکمل تحقیقات کے بعد پولیس نے والدین کی سپرد کیا ہے ۔ اس دوران ذرائع نے والدین کے سپرد گی کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا چاروں کو کونسلنگ کے بعد رہا کر کے والدین کے حوالے کیا ہے تاکہ مذکورہ لوگ قومی دائرے میں رہ کر عزت کی زندگی گزار سکیں گے ۔ خیال رہے اس قبل گزشتہ دنوں فوج نے چارنوجوانوں جن میں عادل احمد ڈار ساکن یاری پورہ کولگام ،طاہر شمیم لون ساکن کپرن شوپیان ،سمیر بٹ ساکن سیرسوپور اورنوید پرا ساکن پٹن بارہمولہ کو پاکستان کے زیر انتظام کشمیر میں اسلحہ کی تربیت حاصل کرنے کیلئے جانے کے دوران فوج نے انکی گرفتاری کا دعوی کیا تھا ۔ ادھرڈوڈہ میں ایک طالب علم نہانے کے دوران پانی کی تیز لہروں گم ہوا۔ اس دوران طالب علم کی تلاش بڑے پیمانے پر شروع کی گی ہے تاہم آخری اطلاعات ملنے تک طالب علم کی لاش برآمد نہیں ہوئی۔ خطہ چناب کے نئی داں گری علاقے میں بہنے والے دریا نیروں میں بارہویں جماعت کا طالب علم 17سالہ شعیب ملک ولدفاروق احمد ملک ساکن ہانچ گھاٹ سخت گرمی کے دوران نہانے کے دوران لاپتہ ہوا ، تاہم ان کے ساتھ مزید طالب علموں کو کچھ لوگوں نے وہاں سے بچا لیا ۔مقامی ذرائع نے بتایا شعیب احمد اپنے کچھ ساتھیوں کے ساتھ دریائے نیرو میں نہارہا تھا جس کے دوران وہ پانی کی تیز دھار کی زدمیں آکربہہ گیا۔اس دوران وہاں موجود دوطلبا کو بچا لیا گیا تاہم تیسرے طالب علم کا تاحال کوئی پتہ نہیں چلا ہے ۔پولیس نے جائے واردات پر پہنچتے ہی بچاؤ کارروائی ہاتھ میں لی۔ آخری اطلاعات ملنے تک شعیب کے بارے میں کوئی اتہ پتہ نہیں ملا تھا۔ پولیس نے اس سلسلے میں ایک کیس درج کر کے تحقیقات شروع کی ہے ۔ وادی میں بھارتی فورسز کے ہاتھوں نوجوانوں کی شہادت کیخلاف احتجاج کا سلسلہ جاری ہے ۔اس دوران مختلف علاقوں میں لوگوں نے احتجاجی مظاہرے کئے اور ریلیاں نکالیں تاہم کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا۔وادی کے بیشتر علاقوں میں تعزیتی ہڑتال کے باعث کاروباری مراکز اور تجارتی ادارے بند،انٹر نیٹ اور موبائل سروس معطل رہی ۔




مفادات کو لاحق خطرات سے نمٹنے میں بالکل نہیں ہچکچاؤ ں گا، سعودی ولی عہد

ریاض ( وائس آف ایشیا)سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے کہا ہے کہ عوام، ملکی خود مختاری، علاقائی سالمیت اور اہم مفادات کو لاحق خطرات سے نمٹنے میں بالکل نہیں ہچکچاؤ ں گا۔ انٹرویو میں انہوں نے ایران پر آئل ٹینکروں کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ ایران نے تہران آئے جاپانی وزیر اعظم کا بھی احترام نہیں کیا اور ان کی سفارتی کوششوں کا جواب دو آئل ٹینکروں پر حملوں کی صورت میں دیا، جن میں سے ایک آئل ٹینکر جاپان کا تھا۔انہوں نے کہا کہ میں خطے میں جنگ نہیں چاہتا تاہم اپنے عوام، ملکی خود مختاری، علاقائی سالمیت اور اہم مفادات کو لاحق خطرات سے نمٹنے میں بالکل نہیں ہچکچاؤ ں گا۔واضح رہے کہ سعودی عرب سے پہلے امریکا اور برطانیہ نے بھی آئل ٹینکروں پر حملوں کا الزام ایران پر عائد کیا تھا، جس کی ایران نے تردید کی ہے۔




مسئلہ کشمیر :کشمیریوں کی خواہش کے مطابق حل ہونا چاہیے، طیب اردگان

 
دوشنبے ( وائس آف ایشیا)ترکی کے صدر رجب طیب اردگان نے کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ کی قرار دادوں اور کشمیریوں کی خواہش کے مطابق حل ہونا چاہیے۔تاجکستان کے دارالحکومت دوشنبے میں عالمی سکیورٹی کانفرنس سے خطاب کے دوران انہوں نے پاکستانی موقف کی تائید کرتے ہوئے کہا کہ مسئلہ کشمیر مذاکرات کے بعد ہی حل ہو سکتا ہے۔ا نہوں نے کہا کہ کشمیر پاکستان اور بھارت کے درمیان ایک دیرینہ تنازع ہے جس کا حل ناگزیر ہے۔امریکہ کی طرف سے بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے فیصلے پر ردِ عمل دیتے ہوئے ترک صدر نے دوٹوک الفاظ میں کہا کہ ہم ہٹ دھرمیوں پر مبنی پالیسیوں کو مسترد کرتے ہیں، مقبوضہ بیت المقدس فلسطین کا دل ہے اور ہم اپنے مسلم ملک فلسطین کے ساتھ ہیں۔انہوں نے کہا کہ ترکی ہمسائیہ ملک شام میں جنگ کے خاتمے اور استحکام کے قیام کی بھرپور کوششیں کر رہا ہے اور داعش، وائے پی جی، پی کے کے سمیت دیگر تنظیموں کو بھاری نقصان پہنچایا ہے جو شام کا مستقبل خطرے میں ڈال رہی ہیں۔




عمران خان نہیں چاہتے ان کی صفوں میں داغدار لوگ بیٹھیں ، فردوس عاشق اعوان

 
اسلام آباد ( وائس آف ایشیا)وزیر اعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ ملک میں جو غلط ہوتا رہا اس کو بدلنے کا مینڈیٹ عمران خان لے کر آئے ہیں اور پاکستان تحریک انصاف لے کر آئی ہے۔عمران خان کبھی بھی نہیں چاہیں گے کہ ان کی صفوں میں داغدار دامن والے لوگ بیٹھیں۔ ایک موثر قانون سازی تباہ حال نظام کو اپنے پاؤں پر کھڑا کر سکتی ہے تاہم پارلیمنٹ میں حکومت کے پاس دو تہائی اکثریت نہیں اور قانون سازی کے لئے ہمارے پاس نمبرز پورے نہیں اور یہ اپوزیشن جماعتوں نے ہماری مدد کر نی ہے۔ ان خیالات کا اظہار فردوس عاشق اعوان نے نجی ٹی وی سے انٹرویو میں کیا۔انہوں نے کہا کہ ہماری پراسیکیوشن کا شعبہ بہت زیادہ کمزور ہے، ہمارے قوانین میں بھی کمزوریاں ہیں۔ ہمارے پبلک پراسیکیوٹر کے سامنے جب ہارورڈ اور دیگر اداروں سے پڑھا تکنیکی ذہن رکھنے والا وکیل کھڑ ا ہو جاتا ہے تو وہ وائٹ کالر کرائم کو تحفظ دینے میں کامیاب ہو جاتا ہے، جبکہ ہمارے پراسیکیوٹرز کی اتنی استعداد کار نہیں ہوتی اور وہ اپنا صحیح موقف اور مقدمہ ٹھیک انداز سے پیش نہیں کر سکتا ۔ انہوں نے کہا کہ میں پر امید ہوں کہ بجٹ اجلاس کے بعد پارلیمنٹ کی قائمہ کمیٹیاں دوبارہ اپنا کام شروع کریں گی اور حکومت نے جو قانون سازی تجویز کی ہے وہ پارلیمنٹ میں آئے گی۔




پاک بھارت ٹاکرا ،ترجمان پاک فوج کا بھارتی صحافی کو کرارا جوب

راولپنڈی( وائس آف ایشیا) ترجمان پاک فوج میجر جنرل آصف غفور نے کہا ہے کہ ہمارا ایمان ہے کہ رب سب کا، ہر کسی کا حق ہے کہ وہ اﷲ سے دعا کریں، آپ کا بھی حق ہے کہ آپ دعا کریں لیکن دوسروں کے لیے انکار نہ کریں جو ٹیم اچھا کھیلے گی وہ جیتے گی، ہوسکتا ہے ہم جیت جائیں، ہوسکتا ہے ہم ہار جائیں، لیکن ہماری دعائیں ہماری ٹیم کے ساتھ ہیں۔ ورلڈ کپ 2019 کا سب سے بڑے اور سنسنی خیز مقابلے پر صرف پاک بھارت کرکٹ شائقین کی ہی نہیں بلکہ دنیا بھر کی نظریں جمی رہیں کیونکہ دونوں ممالک کے درمیان میچ نہیں بلکہ جنگ ہوتی ہے۔پاک بھارت مقا بلے کی تیاریاں گذشتہ کئی روز سے جاری ر ہیں جہاں دونوں طرف کے شائقین سوشل میڈیا پر ایک دوسرے سے گتھم گتھا رہے اور اپنی اپنی ٹیم کی جیت کے لیے دعا گو رہے ، وہیں بھارتی اپنی روایتی ہٹ دھرمی برقرار رکھتے ہوئے پاکستان کو نیچا دکھانے کا کوئی موقع ہاتھ سے جانے نہیں دے رہے تھے تاہم پاک فوج بھی اپنی ٹیم کا حوصلہ بڑھانے کے لیے میدان میں اتر آئی ۔پاک بھارت ٹاکرے پر اپنی سطحی سوچ کا مظاہرہ کرتے ہوئے نائلہ عنایت نامی صحافی نے ٹویٹ کرتے ہوئے لکھالاہور میں بارش ہورہی ہے، بس اب مانچسٹر میں بھی بارش ہوجائے۔ نائلہ عنایت کے اس ٹویٹ پرکشمیری نژاد بھارتی صحافی آدیتیہ راج کول نے پاکستانیوں کے جذبات بھڑکاتے ہوئے جوابی ٹویٹ کی یہ ہر پاکستانی کا خواب ہے کہ پاک بھارت میچ کے دوران بارش ہوجائے۔اس بے ہودہ مذاق کو مزید آگے بڑھاتے ہوئے نائلہ عنایت نے اس ٹوئٹ کے جواب میں ترجمان پاک فوج میجر جنرل آصف غفور کی ایک تصویر شیئر کی جس میں وہ ہاتھوں کو دعا کے انداز میں اٹھائے ہوئے ہیں۔ نائلہ عنایت شاید یہ تصویر شیئر کرتے ہوئے ظاہر کرنا چاہا رہی تھیں ہر پاکستانی اس وقت بارش کی دعا کررہا تاکہ پاکستان بھارت کے ہاتھوں شکست سے بچ جائے۔آدیتیہ راج نے اس تصویر پر تبصرہ کرتے ہوئے ترجمان پاک فوج کو مخاطب کرتے ہوئے لکھا اﷲ میاں ہماری طرف ہیں، غفور صاحب۔ان ٹوئٹس پر ترجمان پاک فوج نے آدیتیہ راج کول کی ٹو یٹ پر جواب دیتے ہوئے ان کی بولتی بند کرادی۔ ترجمان پاک فون نے لکھا کہ ہمارا ایمان ہے کہ رب سب کا، ہر کسی کا حق ہے کہ وہ اﷲ سے دعا کریں، آپ کا بھی حق ہے کہ آپ دعا کریں لیکن دوسروں کے لیے انکار نہ کریں۔ میچ کے بارے میں میں کہنا چاہتا ہوں کہ یہ صرف ایک کھیل ہے، جو ٹیم اچھا کھیلے گی وہ جیتے گی، ہوسکتا ہے ہم جیت جائیں، ہوسکتا ہے ہم ہار جائیں، لیکن ہماری دعائیں ہماری ٹیم کے ساتھ ہیں۔