ویمنز ورلڈ کپ فٹ بال ٹورنامنٹ میں کل آخری چار لیگ میچز کھیلے جائینگے

پیرس(وائس آف ایشیا) ویمنز ورلڈ کپ فٹ بال ٹورنامنٹ میں کل جمعرات کو آخری چار لیگ میچز کھیلے جائینگے۔ اس کے بعد میگا ایونٹ کا پری کوارٹر فائنل مرحلہ 22 جون سے شروع ہوگا۔ فرانس میں رواں میگا ٹورنامنٹ میں ٹیموں کے درمیان عالمی ٹائٹل کے حصول کیلئے زبردست مقابلوں کا سلسلہ جاری ہے، اسی سلسلے میں آج جمعرات کو ا?خری چار لیگ میچز کھیلے جائینگے اور دو میچز گروپ ای کے کھیلے جائینگے جبکہ دو میچز گروپ ایف کے ہونگے۔انکے بعد میگا ایونٹ کا پری کوارٹر فائنل لائن اپ مکمل ہوجائیگا۔ میگا ایونٹ کا پری کوارٹر فائنل مرحلہ 22 جون سے شروع ہوگا۔ ویمنز ورلڈ کپ میں کل جمعرات کو گروپ ای کا پہلا میچ ہالینڈ اور کینیڈا کی ٹیموں کے درمیان کھیلا جائیگا دوسرا میچ اسی گروپ کا کیمرون اور نیوزی لینڈ کی ٹیموں کے درمیان کھیلا جائے گا۔تیسرا میچ گروپ ایف میں شامل ٹیموں سویڈن اور امریکا کی ٹیموں کے درمیان کھیلا جائے گا جبکہ میگا ایونٹ کا آخری لیگ میچ گروپ ایف کی ٹیموں تھائی لینڈ اور چلی کی ٹیموں کے درمیان کھیلا جائے گا۔میگا ایونٹ کا پری کوارٹر فائنل مرحلہ 22 جون سے شروع ہوگا جو 25 جون کو ختم ہوگا، اس کے بعد میگا ایونٹ کے کوارٹر فائنلز 27، 28 اور 29 جون کو کھیلے جائینگے جس کے بعد چار ٹیمیں سیمی فائنل مرحلے کے لئے کوالیفائی کریں گی۔ میگا ایونٹ کا پہلا سیمی فائنل میچ 2 جولائی کو کھیلا جائے گا جبکہ دوسرا سیمی فائنل میچ 3 جولائی کو کھیلا جائیگا۔ میگا ایونٹ کی دو فائنلسٹ ٹیموں کے درمیان فائنل معرکہ 7 جولائی کو ہوگا۔




پاکستان کرکٹ ٹیم آئی سی سی ورلڈ کپ ٹورنامنٹ میں اپنے چھٹے میچ کیلئے تیاریوں میں مصروف

لندن (وائس آف ایشیا) بارہویں آئی سی سی ون ڈے ورلڈ کپ کرکٹ ٹورنامنٹ میں پاکستانی ٹیم اپنا چھٹا میچ 23 جون کو جنوبی افریقہ کے خلاف لندن میں کھیلے گی جس کی تیاری کے لئے پاکستان ٹیم بھرپور ٹریننگ میں مصروف ہے۔ گرین شرٹس کو عالمی ٹائٹل کی دوڑ میں شامل رہنے کیلئے اس میچ میں لازمی فتح درکار ہے تاہم سیمی فائنل میں پہنچنے کیلئے جنوبی افریقہ سمیت چاروں میچز میں فتوحات حاصل کرنا ہوں گی۔انگلینڈ میں رواں میگا ٹورنامنٹ میں شریک ٹیموں کے درمیان عالمی ٹائٹل کے حصول کیلئے زبردست جنگ جاری ہے، اسی سلسلے میں پاکستانی ٹیم اپنا چھٹا اور اہم میچ 23 جون کو جنوبی افریقہ کے خلاف کھیلے گی۔ دونوں ٹیموں نے اب تک صرف ایک، ایک میچ میں کامیابی حاصل کر رکھی ہے، عالمی ٹائٹل کی دوڑ میں شامل رہنے کیلئے دونوں ٹیموں کے درمیان یہ میچ برابر اہمیت کا حامل ہے اسلئے دونوں ٹیموں کے درمیان سخت مقابلے کی توقع کی جا رہی ہے۔




بھارت سے شکست، جذباتی شائقین بیحد مایوس ہوئے اور اپنے غم و غصے کا اظہار کیا

مانچسٹر(وائس آف ایشیا) ورلڈ کپ 2019 ء کے سب سے ہائی وولٹیج میچ میں پاکستان کی بھارت کے ہاتھوں شکست کے بعد پاکستانی شائقین جہاں بیحد مایوس ہوئے اور اپنے غم و غصے کے اظہار کیلئے سوشل میڈیا کا سہارالینے لگے وہیں سوشل میڈیا سے شہرت یافتہ کرکٹ کے متوالے مومن ثاقب نے بھی اپنے دل کی بھڑاس نکال دی۔ مومن ثاقب کی پاک بھارت ٹاکرے میں قومی ٹیم کی شرمناک ناکامی کے بعد نجی چینل کوجذباتی مگر مزاحیہ انداز میں انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ جس ملک میں روٹی پانی کا مسئلہ ہوتا ہے وہاں کے لوگوں کی کرکٹ کی طرح کی چھوٹی چھوٹی خوشیاں ہوتی ہیں اور وہ خوشیاں بھی پاکستانی ٹیم نے ان سے چھین لی ہیں۔انھوں نے شیشہ پارلر والی ویڈیوکا حوالہ دیتے ہوئے قومی ٹیم پر طنز کیا کہ ’کل رات پتا چلا ہے کہ ٹیم برگر اور پیزے کھاتی رہی،شیر شاہ پیتی رہی، گلاب جامن کھاتی رہی، انہیں کرکٹ چھوڑ کر ’دنگل‘ میں حصہ لینا چاہیے،ثاقب اتنے جذباتی ہو گئے کہ ان کے آنسوبہنے والے تھے۔انہوں نے کہا کہ’ ہم ان سے اتنی امیدیں بنائے بیٹھے ہیں اور انہیں برگر کھانے کی پڑی ہے، انہیں اپنی فٹنس کا کوئی خیال نہیں، انہیں لاہور لیکر جاؤ، وہاں کڑاہی کھلاؤار انکے پیٹ بڑے کروادو۔انہوں نے پاس کھڑے لوگوں سے کہا کہ مارو، مجھے مارو، یہ مذاق ہو رہا ہے کیا؟ہم یہاں کیا کرنے آئے ہیں، ہم انکو سپورٹ کرنے آتے ہیں، اتنا پیسہ اور وقت لگا کے آتے ہیں،اور یہ لوگ کیا کر رہے ہیں۔پاکستانی کپتان سرفراز احمد کے فیصلوں کے حوالے سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ سرفراز صاحب سے کہو کہ نیند کی گولیاں کھائیں، اپنی نیند پوری کریں، سرفراز نے دھوکا دے دیا ہے، ہمیں ان سے بڑی امیدیں تھیں۔انہوں نے سرفراز کوپنجابی لہجے میں مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ، سرفراز صاحب ’کوئی لیڈر شپ ویکھو، کی کرنا ہے، کی نہیں کرنا ، بیٹنگ کرنی ہے؟ باؤلنگ کرنی ہے؟موسم کی ہے؟،آخر میں انہوں نے کہا میرے پاس کوئی الفاظ نہیں ہیں، مجھے معاف کردیں آپ لوگ سب ، مجھے چھٹی دے دیں۔واضح رہے 23 سالہ مومن ثاقب کا تعلق لاہور سے ہے، انہوں نے حال ہی میں کنگز کالج لندن سے کمپیوٹر سائنس میں بیچلرز کی ڈگری مکمل کی ہے اور انسٹاگرام پر انکی پروفائل پر 48 ہزار سے زیادہ فالورز ہیں۔




,سی سی آئی نےافغان کرکٹ بورڈ کی اپنی ٹی ٹونٹی لیگ بھارت میں کرانے کی درخواست مسترد کردی

نئی دہلی( وائس آف ایشیا) بھارتی کرکٹ بورڈ نے افغانستان کرکٹ بورڈ کو لفٹ کرانے سے انکار کردیا،بی سی سی آئی نے افغان کرکٹ بورڈ کی اپنی ٹی ٹونٹی لیگ بھارت میں کرانے کی درخواست مسترد کردی ۔بھارتی اخبار کے مطابق بی سی سی آئی نے افغانستان میں کرکٹ کے فروغ میں بھرپور حصہ لیا ہے اور ایسا کم ہی ہوتا ہے کہ وہ افغان بورڈ کو منع کرے۔بی سی سی آئی کے عہدیدار کا کہنا ہے کہ افغانستان کرکٹ بورڈ نے اپنی کرکٹ لیگ بھارتمیں کرانے کی درخواست کی تھی لیکن اس پر غور کرنا مناسب نہیں ہوگا کیونکہ ہماری اپنی لیگ (آئی پی ایل) ہوتی ہے۔افغان بورڈ کے حکام نے 16 مئی کو ممبئی میں ایک اجلاس کے دوران بی سی آئی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر راہول جوہری اور جنرل منیجر کرکٹ آپریشنز صبا کریم سے اس بارے میں درخواست کی تھی۔افتتاحی افغانستان پریمیئر لیگ 5سے 21 اکتوبر 2018ءشارجہ میں کھیلی گئی تھی، جس میں پانچ ٹیمیں شریک تھیں، محمد نبی کی قیادت میں بلخ لیجنڈز نے ٹائٹل اپنے نام کیا تھا۔افغان بورڈ کے سی ای او اسد اللہ خان نے دہرادم اور نوئیڈا کے بعد تیسرے ہوم گراﺅنڈ کے لئے بھی کہا تھا جس پر بھارتی بورڈ کو اعتراض نہیں ہے، لکھنو ممکنہ طور پر بھارت میں افغانستان کا تیسرا ہوم گراﺅنڈ ہوگا۔                                      




آئی اوسی کی تنبیہ ،مودی سرکار کی عقل ٹھکانے آگئی

 لاہور( وائس آف ایشیا) انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی کی سخت تنبیہ اثر کر گئی۔بھارتی حکومت نے انڈین اولمپک ایسوسی ایشن ( آئی او اے ) اور ورلڈ باڈی انٹر نیشنل اولمپک کمیٹی (آئی او سی) کو تحریری ضمانت دی ہے کہ وہ انٹرنیشنل ایونٹس میں کوالیفائی کرنے والے ایتھلیٹس کو بھارت آنے کے لیے ویزے دینے کا پابند ہوگا، اس کے بعد بھارت کو مستقبل میں دوبارہ انٹرنیشنل ایونٹس کی میزبانی کے لیے دوبارہ زیر غور لایاجاسکے گا۔اسی طرح پاکستانی ایتھلیٹس کے بھارت میں شیڈول ایونٹ میں شرکت کا راستہ بھی صاف ہوگیا، بھارتی حکومت نے انڈین اولمپک ایسوسی ایشن کو لکھ کر دے دیا ہے کہ اب سیاست نہیں کریں گے اور بھارت میں ہونے والے ایونٹس میں ایتھلیٹس کو بلا تفریق ویزا دیں گے۔یاد رہے کہ مودی سرکار کے آنے کے بعد سے بھارت میں ہونے والے کھیلوں کے عالمی مقابلوں میں پاکستانی ایتھلیٹس کو شرکت کرنے کے لیے ویزے دینے کا عمل روک دیا گیا تھا جس کے بعد پاکستانی ایتھلیٹس کوالیفائی کرنے کے باوجود ان ایونٹس میں شرکت سے محروم ہورہے تھے جس کے بعد پاکستان اولمپک کمیٹی نے آئی او سی کے ساتھ اس معاملے کو اٹھایا جس کی جانب سے بھارتی اولمپک کمیٹی کو سخت تنبیہ کیے جانے کے بعد بھارتی حکومت کے ہوش بھی ٹھکانے آگئے۔




افغان کھلاڑیوں کا ریسٹورنٹ میں جھگڑا،کپتان کا اظہار لاعلمی

مانچسٹر ( وائس آف ایشیا ) ورلڈ کپ کرکٹ ٹورنامنٹ کے دوران مانچسٹر میں پاکستانی کرکٹرز کے شیشہ اسکینڈل کے بعد افغانستان کے کھلاڑیوں کے ریسٹورنٹ میں جھگڑے کا واقعہ رونماہوا ہے۔مانچسٹر میں یہ واقعہ اسی علاقے میں پیش آیا ہے جہاں شعیب ملک اور دیگر کرکٹرز کی ویڈیو منظر عام پر آئی تھی۔ پریس کانفرنس میں جب افغان کپتان گلبدین نائب سے اس واقعے کے بارے میں دریافت کیا گیا تو انہوں نے لاعلمی ظاہر کی اور کہا کہ اس بارے میں سکیورٹی آفیسر یا منیجر بتا سکتے ہیں۔جب ان سے مزید سوالات ہوئے تو انہوں نے پریس کانفرنس سے واک آ?ٹ کی دھمکی دی اور غصے میں دکھائی دیے۔ مقامی میڈیا کے مطابق انگلینڈ کے میچ سے ایک روز قبل رات کو افغانستان کے کھلاڑی ایک ریسٹورنٹ میں کھانا کھانے گئے جس دوران ایک شخص نے ان کی ویڈیو بنانے کی کوشش کی جس پر جھگڑا ہوا اور پولیس کو طلب کر لیا گیا،رات سوا گیارہ بجے پیش آنے والے واقعے کے بعد کھلاڑی ریسٹورنٹ سے چلے گئے۔گریٹر مانچسٹر پولیس نے واقعے کی تصدیق کی ہے اور کہا ہے کہ تحقیقات جاری ہیں لیکن کوئی گرفتاری عمل میں نہیں آئی ہے۔ٹورنامنٹ میں افغان ٹیم کو اب تک کھیلے گئے پانچوں میچز میں شکست ہوئی ہے۔




ٹاس جیت کر بولنگ کا فیصلہ وقار یونس کو بھی ہضم نہ ہوا

لندن( وائس آف ایشیا)پاکستان کا ٹاس جیت کر بولنگ کے فیصلہ وقار یونس کو بھی ہضم نہ ہوا۔بھارت کیخلاف ورلڈکپ میچ میں پاکستان کے ٹاس جیت کر پہلے بولنگ کے فیصلے پرحیرت کا اظہارکرتے ہوئے سابق ہیڈکوچ وقار یونس نے کہا ہے کہ ٹیم میں 2 اسپنرز شامل کرنے کا مقصد ہوتا ہے کہ دوسری اننگزمیں حریف کیلیے مشکلات پیدا کی جاسکیں لیکن اس کے باوجود کپتان سرفراز احمد نے پہلے بیٹنگ کو ترجیح کیوں نہیں دی؟آئی سی سی کیلیے اپنے کالم میں انھوں نے لکھا کہ پہلے بولنگ کا فیصلہ کرہی لیا گیا تھا تو بھارتی بیٹسمینوں کو آزادانہ اسٹروکس کھیلنے کا موقع کیوں فراہم کیا گیا؟ بولرزکی غیرمستقل مزاجی کی وجہ سے حریف ٹیم کی بیٹنگ لائن کو رنز بنانے کیلیے زیادہ محنت نہیں کرنا پڑی۔ انھوں نے صرف خراب گیندوں کا انتظارکیا اور رنز بٹورے، محمد عامر انگلش کنڈیشنزکوسمجھتے ہوئے اچھی لائن اور لینتھ کے ساتھ بولنگ کرنے میں کامیاب ہوئے، ان کے سوا کسی بولر میں دم خم نظر نہیں آیا، سیمی فائنل تک رسائی کی موہوم سی امید باقی ہے، محمد حسنین جیسے برق رفتار پیسر کو آزمانا پاکستان ٹیم کے فائدے میں ہوگا۔وقار یونس نے کہا کہ پاکستان ٹیم کے مزاج اور فٹنس میں بہتری لانے کی اشد ضرورت ہے، بھارتی ٹیم کے ہرکھلاڑی کو اپنے رول کا اندازہ ہے، صرف ٹیلنٹ کے بھروسے میچ جیتنے کا زمانہ گزر گیا،گرین شرٹس کو پیشہ ورانہ بنیادوں پر محنت کرتے ہوئے اپنا معیار بہتر بنانا ہوگا۔
 




شیشہ بار ویڈیو پر شعیب ملک کی وضاحت بھی سامنے آگئی

لندن( وائس آف ایشیا)قومی ٹیم کے آل راؤنڈر شعیب ملک کا کہنا ہے کہ جس ویڈیو کا میڈیا میں چرچا ہے وہ 15 جون کی نہیں 13جون کی ہے۔ 20 سال تک انٹرنیشنل کرکٹ میں ملک کی خدمت کی ہے، بڑے افسوس کی بات ہے کہ مجھے وضاحت پیش کرنا پڑ رہی ہیں، کرکٹرز کی نجی زندگی اور فیملیز کا احترام کیا جانا چاہیے۔واضح رہے کہ پی سی بی نے کھلاڑیوں کیلئے 11بجے کرفیو ٹائم مقرر کررکھا ہے، وائرل ہونے والی تصویر اور ویڈیو میں شعیب ملک کے ساتھ امام الحق، وہاب ریاض، ثانیہ مرزا رات گئے شیشہ بار میں دوستوں کے ساتھ موجود ہیں، اس حوالے سے ثانیہ مرزا کاموقف تھا کہ وہ بیٹے کے ساتھ ڈنر کیلیے گئے تھے، نجی مصروفیات کی ویڈیو بنانا غلط ہے۔دوسری جانب پی سی بی نے کرکٹرز کے خلاف ایکشن لینے سے انکار کرتے ہوئے موقف اختیارکیا تھا کہ یہ ویڈیو میچ سے 48گھنٹے پہلے کی ہے، بھارت کے خلاف میچ سے ایک رات پہلے تمام کھلاڑی ہوٹل میں موجود تھے۔
 




انضمام الحق کی انگلینڈ میں موجودگی ٹیم کیلئے تباہ کن ثابت

  لندن( وائس آف ایشیا) چیف سلیکٹر انضمام الحق کی انگلینڈ میں موجودگی ٹیم کیلئے تباہ کن ثابت ہوئی۔چیف سلیکٹر انضمام الحق کی زیر سربراہی قائم سلیکشن کمیٹی کی تین سالہ مدت مکمل ہو چکی، اسے ورلڈکپ اسکواڈ منتخب کرنے کا اضافی ٹاسک دیا گیا تھا، میگا ایونٹ سے قبل انھوں نے بورڈ حکام کے سامنے اس خواہش کا اظہار کیا کہ قومی ٹیم کی کارکردگی کا جائزہ لینے کیلئے انگلینڈ جانا چاہتے ہیں، ساتھ ہی یہ بھی کہا کہ اس دوران بیٹسمینوں کی رہنمائی بھی کریں گے۔انضمام کو پی سی بی نے بزنس کلاس کا فضائی ٹکٹ دے کر بھیجا، انھیں 500ڈالر ڈیلی الاونس دیا گیا، اس دوران بورڈ کی اچھی خاصی رقم خرچ ہو گئی،ذرائع نے بتایاکہ انگلینڈ جانے کے بعد سابق کپتان نے ٹیم مینجمنٹ کے کام میں مداخلت شروع کردی۔عموما 15کھلاڑیوں کا انتخاب کرنے کے بعد سلیکشن کمیٹی کا کام ختم ہو جاتا ہے مگر حیران کن طور پر ورلڈکپ جیسے اہم ایونٹ میں ایسا نہیں ہوا، انضمام کو کپتان سرفراز احمد اور کوچ مکی آرتھر کے ساتھ ٹور سلیکشن کمیٹی میں بھی شامل کر لیا گیا، یوں پلیئنگ الیون کے انتخاب میں ان کی رائے بھی شامل رہی، اس دوران انھوں نے بعض مخصوص کھلاڑیوں کی شمولیت کیلیے اپنے اختیارات کا ناجائزفائدہ اٹھایا۔ٹیم مینجمنٹ انضمام الحق سے خوش نہ تھی، سونے پر سہاگہ یہ ہوا کہ وہ قومی ٹیم کے ٹریننگ سیشنزمیں جاکرکھلاڑیوں کومفید مشوروں سے نوازنے لگے، کوچز کی بھاری بھرکم فوج نے اسے اپنے کام میں مداخلت تصور کیا۔ذرائع نے بتایا کہ ورلڈکپ میں ٹیم کا تیاپانچہ ہونے کے بعد اب چیف سلیکٹر اپنے رشتہ داروں کے پاس چلے گئے ہیں، بقیہ میچز میں کھلاڑیوں کو ان کی خدمات حاصل نہیں ہوں گی۔
 




ٹیم میں گروپنگ چل رہی ہے، سرفراز احمد

مانچسٹر( وائس آف ایشیا) پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے وہاب ریاض، امام الحق اور عماد وسیم پر گروپنگ کا الزام لگادیا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق اولڈ ٹریفرڈ کے میدان پر بھارت کے خلاف میچ کے دوران جب سرفراز آؤٹ ہوکر پویلین لوٹے تو غصے سے بولے کہ ٹیم میں گروپنگ چل رہی ہے۔میچ ختم ہونے سے پہلے ہی کپتان کھلاڑیوں پر چڑھ دوڑے اور کہا کہ مجھے سب پتہ ہے کون کون گروپنگ کررہا ہے۔ذرائع نے بتایا کہ میچ کے بعد کوچ اور کپتان نے کھلاڑیوں کی کلاس لی جبکہ سرفراز نے وہاب ریاض، امام الحق اور عماد وسیم پر گروپنگ کا الزام لگادیا۔اس موقع پر ہیڈ کوچ مکی آرتھر نے کہا کہ جو ہونا تھا ہوگیا ، اب آگے دیکھو اگلے چاروں میچز جیتو تاکہ سیمی فائنل کی دوڑ میں شامل رہو۔دوسری جانب ذرائع نے یہ بھی بتایا ہے کہ شکت کے بعد قومی ٹیم میں کوچ اور کپتان کے خلاف تنازعات بھی سامنے آنے لگے ہیں۔بتایا جارہا ہے کہ ٹاس جیت کر فیلڈنگ کا فیصلہ کوچ کا تھا جبکہ شعیب ملک اور شاداب خان کو کھیلنے پر بھی وہ اصرار کرتے رہے۔ذرائع نے بتایا کہ فخر زمان کو سست رفتار میں کھیلنے کا مشورہ بھی کوچ نے دیا تھا اور کئی معاملات پر کپتان اور کوچ ایک صفحے پر نہیں تھے۔
 




پی سی بی گورننگ بورڈ کا اجلاس آج ہوگا

 لاہور( وائس آف ایشیا) پاکستان کرکٹ بورڈ کے آج(بدھ کو) ہونے والے گورننگ بورڈ اجلاس میں قومی ٹیم کی ورلڈکپ میں کارکردگی سمیت اہم ایشوز پر تبادلہ خیال ہوگا۔عدالتی احکامات کی روشنی میں باغی رکن شاہ دوست کو بھی بدھ کو لاہور میں بلائے جانے والے گورننگ بورڈ کے اجلاس میں طلب کرلیا گیا ہے، کوئٹہ سے تعلق رکھنے والے شاہ دوست نے اجلاس میں تصدیق کردی ہے، ان کی جانب سے وسیم خان کی تقرری سمیت دیگر ایشوز پر سخت موقف اپنائے جانے کا امکان ہے۔کوئٹہ اجلاس میں بغاوت کرنے والے اراکین کبیر احمد خان، شاہ ریز عبداﷲ روکھڑی اور ایاز بٹ بورڈ سے اپنے رویے کی معذرت کرچکے ہیں تاہم شاہ دوست اور پی سی بی کے درمیان پڑنے والا میچ جاری ہے، نیشنل کرکٹ اکیڈمی میں شیڈول اس اجلاس کی صدارت بورڈ سربراہ احسان مانی کریں گے۔ایم ڈی وسیم خان بھی اجلاس میں شرکت کے لیے انگلینڈ سے لاہور پہنچ رہے ہیں، اجلاس کے بعداحسان مانی انگلینڈ روانہ ہوجائیں گے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ احسان مانی آئی سی سی کی دعوت پر یہ میچز دیکھنے جارہے ہیں جس کے بعد وہ 15 جون سے آئی سی سی کے سالانہ اجلاس میں بھی شرکت کریں گے۔ اجلاس میں سرکلرز کے ذریعے طے پانے والے امورز کی منظوری لی جائے گی۔پی سی بی میں اختیارات کی منتقلی کے حوالے سے آئینی ترامیم سمیت نئے ڈومیسٹک نظام پر بریفینگ بھی ایجنڈے کا حصہ ہے، قومی ٹیم کی پر فارمنس باقاعدہ ایجنڈے کا حصہ نہیں تاہم انفرادی طور پر کسی ممبر کی جانب سے اس پر بات ضرور ہوسکتی ہے۔
 




قومی کھلاڑیوں کی پاک بھارت میچ سے قبل ریستوران میں مو ج مستیا ں کی ویڈیو وائرل

مانچسٹر(وائس آف ایشیا)قومی ٹیم کے کھلاڑیوں کی پاک بھارت مقابلے سے قبل موچ مستیا ں کرنے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی ہے۔ ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ شعیب ملک اور ثانیہ مرزا ،فاسٹ باؤلر وہاب ریاض اور ان کی اہلیہ اور قومی اوپنر امام الحق رات گئے کسی ریستوران میں موجود ہیں جب کہ وہاب ریاض کی اہلیہ شیشہ پیتی بھی نظر آرہی ہیں۔

Our preparations for world cup.Shoaib Malik with sania mirza Wahab Riaz and Imam ul Haq spotted last night.While someone’s smoking sheesha besides them..What can i say now…

Posted by Trolling Habibi on Sunday, June 16, 2019

قومی کرکٹر ز کی جانب سے اس اہم ترین مقابلے سے قبل موج مستیاں کرنے پر سوشل میڈیا پر ان کے خلاف شدید تنقید ہورہی ہے۔یاد رہے کہ آئی سی سی ورلڈ کپ 2019ء کے 22ویں میچ میں بھارت نے پاکستان کو ڈک ورتھ لوئیس میتھڈ کے تحت 89رنز سے شکست دیدی ہے۔ بھارت کے 337رنز کے ہدف کے تعاقب میں پاکستانی اوپنرز ٹیم کو عمدہ آغاز نہ دے سکے اور امام الحق 7رنز بنا کر شنکر کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آ?ٹ ہوئے ،دوسری وکٹ پر بابر اعظم اور فخر زمان نے 104 رنز کی شراکت قائم کی،اس دوران پاکستانی اوپنر نے اس دوران اپنی نصف سنچری مکمل کی۔337 رنز کے بڑے ہدف کے تعاقب میں117 کے سکور پر بابر اعظم 48 رنز بناکر کلدیپ یادیو کی گیند پر بولڈ ہوگئے۔126 کے سکور پر اوپنر فخر زمان 62رنز بناکر آ?ٹ ہوگئے، ان کی وکٹ بھی کلدیپ یادیو کے حصے میں آئی۔129کے سکور پر 26ویں اوورز میں پانڈیا نے لگاتار دو گیندوں پر محمد حفیظ اور شعیب ملک جیسے سینئر بیٹسمینوں کی وکٹیں اپنے نام کرلیں۔عماد وسیم اور کپتان سرفراز احمد نے انڈر پریشر ٹیم کا سکور آگے بڑھانے کی کوشش کی، کپتان سرفراز احمد اس موقع پر شدید دبا?میں نظر آئے اور 30 گیندوں پر صرف 12 رنز بناکر آؤٹ ہوگئے۔بارش رکنے پر پاکستان کو جیت کیلئے ڈک ورتھ لوئیس میتھڈ کے تحت302رنز کا ہدف ملا تاہم سرفراز الیون مقررہ 40اوور ز میں 6وکٹوں کے نقصان پر 212رنز بنا سکی۔ اس سے قبل مانچسٹر کے اولڈ ٹریفورڈ گراؤنڈ میں قومی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے ٹاس جیت کر فیلڈنگ کا فیصلہ کیا ،بھارت کی جانب سے روہت شرما اور کے ایل راہول نے اننگز کا آغاز کیا۔دونوں بلے بازوں نے فاسٹ باؤلر محمد عامر کیخلاف محتاط انداز اپنایا لیکن حسن علی کے خلاف جارحانہ کھیل پیش کیا اور پہلی وکٹ کی شراکت میں 131 رنز بنائے،روہت شرما نے 2 چھکوں اور 6 چوکوں کی مدد سے 34 گیندوں پر اپنی نصف سنچری مکمل کی جب کہ کے ایل راہول نے 69 گیندوں پر نصف سنچری بنائی جس میں ایک چھکا اور تین چوکے بھی شامل تھے،بھارت کا سکور 136 تک پہنچا تو راہول وہاب ریاض کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوگئے، انہوں نے 78 گیندوں پر 57 رنز کی اننگز کھیلی،دوسری وکٹ پر روہت شرما اور کپتان ویرات کوہلی نے سکو ر آگے بڑھانا شروع کیا ، دوسری وکٹ پر روہت شرما اور کپتان ویرات کوہلی نے 98 رنز کی پارٹنرشپ بنائی اور شرما 85 گیندوں پر 3 چھکوں اور 9 چوکوں کی مدد سے اپنے کیرئیر کی 24ویں سنچری بنانے میں کامیاب رہے،بھارت کا مجموعی سکور 234 تک پہنچا تو روہت شرما 140 رنز بنا کر حسن علی کا شکار بنے۔ہارک پانڈیا26رنز بنا کر محمد عامر کا شکار بنے ، دھونی بڑی اننگز نہ کھیل سکے اور صرف 1رن بنا کر عامر کی دوسری و کٹ بنے ،میچ میں46 اعشاریہ 4 اوورز میں بھارت نے 4 وکٹ پر 305رنز بنائے تھے کہ بارش ہوگئی،تھوڑے وقفے کے بعد میچ دوبارہ شروع ہوا۔48 ویں اوورز میں کپتان ویرات کوہلی 77رنز بناکر محمد عامر کا تیسرا شکار بن گئے،انہوں نے میچ میں7 چوکے لگائے۔پاکستان کی طرف سے محمد عامر نے 10اوورز میں 47رنز کے عوض 3،وہاب ریاض نے 10اوور میں 71رنز دیکر ایک اور حسن علی نے 9اوورز میں 84رنز دیے اور ایک وکٹ اپنے نام کی۔




حیران ہوں پاکستان نے ٹاس جیت کر بیٹنگ کیوں نہیں کی،وسیم اکرم

مانچسٹر(وائس آف ایشیا)سوئنگ کے سلطان وسیم اکرم نے کہا ہے کہ وہ ٹیم پر تنقید کرتے کرتے تھک گئے ہیں۔ سمجھ سے بالاتر ہے کہ پانچ بولرز کے ساتھ میدا ن میں جاتے وقت ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کیوں نہیں کی؟ جب پانچ بولرز کے ساتھ جاتے ہیں تو اس کا مطلب ہے آپ ایک بیٹسمین کم کر رہے ہیں ۔وسیم اکرم نے ورلڈ کپ میں پاکستان کرکٹ ٹیم کی ایک اور شکست پر مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ بھارت کیخلاف میچ میں تخمیناتی اسکور260تک تھا، وہ لنکاشائر سے کھیلے ہیں لیکن کسی پاکستانی کھلاڑی نے میچ سے قبل ان سے مشورہ نہیں لیا ، اگر کوئی پوچھتا تو وہ ضرور بتاتے۔انہوں نے مزید کہا کہ ورلڈ کپ کے دوران بس ایک بار شاہین شاہ آفریدی ان کے پاس آئے بات کرنے کیلئے۔ٹورنامنٹ میں پاکستان کے مستقبل کے حوالے سے وسیم اکرم کا کہنا تھا کہ کسی کو مایوس نہیں کرنا چاہتا لیکن ورلڈ کپ میں پاکستان کا سفر کافی مشکل ہوگیا ہے۔ اب چار میچز جیت کر بھی معاملات اپنے ہاتھ میں نہیں اور ایسی صورتحال بہت گمبھیر ہوتی ہے جب آپ کو اپنے تمام میچز جیتنے ہوں اور دیگر ٹیموں کے رزلٹ پر بھی انحصار کرنا ہے۔وسیم اکرم نے پاکستانی فیلڈرز پر بھی تنقیدکی ۔انہوں نے کہا کہ حاضر دماغی بہت ضروری ہے۔ فیلڈنگ میں جان لگانا پڑتی ہے۔ پاکستانی کھلاڑی کبھی دستانے پہن کر اور کبھی انرز پہن کر فیلڈنگ کی پریکٹس کرتے ہیں، ایسا اور کہاں ہوتا ہے؟ جب دستانے پہن کر پریکٹس کریں گے تو کنڈیشن میں ایڈجسٹ کیسے ہوں گے۔




اب پاکستان کیلئے ٹورنامنٹ مشکل ہوگیا ہے، سرفراز احمد

مانچسٹر(وائس آف ایشیا)کرکٹ ورلڈ کپ میں بدترین کارکردگی دکھانے والی پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے بھارت سے شکست کے بعد پہلے فیلڈنگ کے فیصلے کا دفاع کیا ہے۔میچ کے بعد گفتگو کرتے ہوئے سرفراز احمد نے کہا کہ بولرز نے رائٹ ایریا میں بولنگ نہیں کی، ٹاس جیت کر بولنگ کا فیصلہ اچھا تھا۔قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان نے اس بات کا اعتراف کرلیا کہ اب پاکستان کیلئے ٹورنامنٹ مشکل ہوگیا ہے تاہم انہوں نے یہ امید بھی ظاہر کی کہ ابھی چار میچز باقی ہیں اچھا سے اچھا کرنے کی کوشش کریں گے۔انہوں نے کہا کہ فیلڈنگ میں کمی رہ گئی، روہت شرما کا رن آؤٹ چھوڑنا برا ثابت ہوا، کھلاڑیوں کا مورال گرا ہوا نہیں ہے، ابھی بھی پاکستان کے پاس موقع ہے، کھلاڑیوں کو آگے دیکھنا چاہیے۔سرفراز نے کہا کہ ویرات کوہلی بھی پہلے بولنگ کرنا چاہتے تھے۔ مسلسل بارش کے بعد پہلے بولنگ ہی بنتی ہے، ٹیم میں سب کھلاڑی ایک دوسرے کے ساتھ ہیں کوئی جھگڑا نہیں، پاکستان کیلئے ورلڈ کپ ختم نہیں ہوا۔دوسری جانب فاتح بھارتی کپتان ویرات کوہلی نے کہا کہ بولنگ پلان کے مطابق کی جائے تو میچ آسان ہوجاتا ہے۔ویرات کوہلی نے کہا کہ اچھی اوپننگ پارٹنرشپ کی وجہ سے بڑا اسکور بنانے میں کامیاب ہوئے، ہم نے سوائے چیمپئنز ٹرافی فائنل کے پاکستان کیخلاف اچھی کرکٹ کھیلی۔خیال رہے کہ ورلڈکپ کے میچ میں بھارت نے ڈک ورتھ لوئس سسٹم کے تحت 89رنز سے شکست دی۔ ٹورنامنٹ میں پاکستان کے 4میچز باقی ہیں اور قومی ٹیم کی سیمی فائنل میں رسائی کی امیدیں دم توڑتی نظر آرہی ہیں۔




بھارت سے شرم ناک شکست ، قومی ٹیم کے لیے اگر مگر کا کھیل شروع ہوگیا

مانچسٹر(وائس آف ایشیا) 2019ء میں پاکستان کی بھارت کے ہاتھوں شکست کے بعد سیمی فائنل میں جگہ بنانے کے لیے اگر مگر کا کھیل شروع ہوگیا۔انگلینڈ میں جاری کرکٹ ورلڈکپ کے بڑے میچ میں ڈک ورتھ لوئس میتھڈ کے ذریعے بھارت نے پاکستان کو 89 رنز سے شکست دی ہے۔گرین شرٹس اب تک ایونٹ میں اپنے 5 میچز کھیل چکی ہے جس میں اسے 3 میں شکست کا سامنا کرنا پڑا جب کہ ایک میں کامیابی حاصل ہوئی اور ایک میچ بارش کی نذر ہوا۔قومی ٹیم پوائنٹس ٹیبل پر 3 پوائنٹس کے ساتھ 9 ویں نمبر پر موجود ہے، پاکستان اگر اپنے اگلے چاروں میچز جیتے تو اس کے 11 پوائنٹس ہوں گے۔نیوزی لینڈ، جنوبی افریقہ اور بنگلادیش آگے آنے والے میچز نہ جیتیں اور ویسٹ انڈیز بھی کم از کم دو میچز ہار جائے تو پاکستان سیمی فائنل میں پہنچ سکتا ہے، ورنہ قومی ٹیم کی وطن واپسی ہوگی۔دلچسپ بات یہ ہے کہ ورلڈکپ 1992ء میں بھی پاکستانی ٹیم کے ابتدائی پانچ میچز میں صرف 3 ہی پوائنٹس تھے، تو یہ کہا جاسکتا ہے کہ اگر قسمت نے ساتھ دیا اور پلیئرز نے پرفارم کیا تو27سال پرانی تاریخ ایک بار پھر دہرائی جاسکتی ہے۔




بھارت سے شکست کے بعد قومی ٹیم کا ورلڈکپ میں رہنا مشکل بن گیا

مانچسٹر(وائس آف ایشیا) ورلڈکپ میں پاکستان کی بھارت کے ہاتھوں شکست کے بعد سیمی فائنل میں جگہ بنانے کے لیے اگر مگر کا کھیل شروع ہوگیا۔انگلینڈ میں جاری کرکٹ ورلڈکپ کے بڑے میچ میں ڈک ورتھ لوئس میتھڈ کے ذریعے بھارت نے پاکستان کو 89رنز سے شکست دی ہے۔گرین شرٹس اب تک ایونٹ میں اپنے 5 میچز کھیل چکی ہے جس میں اسے 3میں شکست کا سامنا کرنا پڑا جب کہ ایک میں کامیابی حاصل ہوئی اور ایک میچ بارش کی نذر ہوا۔قومی ٹیم پوائنٹس ٹیبل پر 3 پوائنٹس کے ساتھ 9ویں نمبر پر موجود ہے، پاکستان اگر اپنے اگلے چاروں میچز جیتے تو اس کے 11پوائنٹس ہوں گے۔نیوزی لینڈ، جنوبی افریقہ اور بنگلادیش آگے آنے والے میچز نہ جیتیں اور ویسٹ انڈیز بھی کم از کم دو میچز ہار جائے تو پاکستان سیمی فائنل میں پہنچ سکتا ہے، ورنہ قومی ٹیم کی وطن واپسی ہوگی۔دلچسپ بات یہ ہے کہ 1992ورلڈکپ میں بھی پاکستان ٹیم کے ابتدائی پانچ میچز میں صرف 3ہی پوائنٹس تھے، تو یہ کہا جاسکتا ہے کہ اگر قسمت نے ساتھ دیا اور پلیئرز نے پرفارم کیا تو کچھ بھی ہوسکتا۔




بولنگ پلان کے مطابق کی جائے تو میچ آسان ہو جاتا ہے، کوہلی

مانچسٹر(وائس آف ایشیا)بھارتی کپتان ویرات کوہلی کا کہنا ہے کہ بولنگ پلان کے مطابق کی جائے تو میچ آسان ہو جاتا ہے۔ویرات کوہلی نے کہا کہ اچھی اوپننگ پارٹنرشپ کی وجہ سے بڑا اسکور بنانے میں کامیاب ہوئے اور کہا کہ سوائے چیمپئنز ٹرافی فائنل کے بھارت نے پاکستان کے خلاف اچھی کرکٹ کھیلی۔140رنز بنانے والے روہت شرما نے کہا کہ ہماری ٹیم نے بیٹنگ اور بولنگ اچھی کی مگر بابر اور فخر کی پارٹنرشپ کی وجہ سے ہم دباو میں آگئے تھے۔واضح رہے کہ آئی سی سی ورلڈ کپ کے 22 ویں میچ میں بھارت نے پاکستان کو 89 رنز سے ہرایا۔




کرکٹ فینز کو ایوارڈ دینے کی تقریب، چاچا کرکٹ کو بھی اعزاز سے نوازا گیا

مانچسٹر(وائس آف ایشیا)مانچسٹر میں کرکٹ فینز کو ایوارڈ دینے کی تقریب میں پاکستان کے چاچا کرکٹ کو بھی اعزاز سے نوازا گیا۔بھارتی منتظمین کی جانب سے مانچسٹر میں کرکٹ فینز کو ایوارڈ دینے کی تقریب منعقد ہوئی۔پاکستان کے چاچا کرکٹ کو بھی ایوارڈ سے نوازا گیا۔ اس موقع پر چاچا کرکٹ نے پاکستان کا سبز ہلالی پرچم ہاتھ میں تھام رکھاتھا ۔پاکستان کے چاچا کرکٹ کے علاوہ بھارت کے سدھیر گوتھم اور سری لنکن فین کو بھی ایوارڈ سے نوازا گیا۔ایوارڈ دینے کی تقریب کے دوران چاچا کرکٹ اور بھارتی شائق سدھیر اسٹیج پر ڈھول کی تھاپ پر بھنگڑے بھی ڈالتے رہے۔
وائس آف ایشیا15جون 2019 خبر نمبر24




بھارت کیخلاف سو فیصد کارکردگی دکھائیں گے، محمد عامر

لندن(وائس آف ایشیا)پاکستان ٹیم کے فاسٹ بالر محمد عامرنے سپورٹ کرنے پر پوری دنیا میں موجود شائقین سے اظہارتشکر کیا۔سوشل میڈیا پر محمد عامرنے لکھا کہ شائقین کی دعائیں اور ان کا سپورٹ کرنا ہمارے جذبے کے لئے ایندھن کی طرح ہے جو اس کو مزید بڑھا دیتا ہے۔پاک بھارت میچ سے متعلق محمد عامر نے لکھا کہ ہم گراونڈ میں اپنی 100فیصد کارکردگی دکھائیں گے۔میچ سے متعلق انہوں نے مزید لکھا کہ نتیجہ جو بھی ہو شائقین پاکستان ٹیم کو سپورٹ کرنا نہ چھوڑیں۔یاد رہے کہ محمد عامر نے گزشتہ میچ میں آسٹریلیا کے خلاف صرف 30رنز کے عوض 5وکٹیں حاصل کی تھیں۔واضح رہے کرکٹ ورلڈکپ 2019میں روایتی حریف پاک بھارت ٹاکرا اتوار کو ہوگا۔جس کے لئے انگلینڈ میں موجود دونوں ٹیموں کی زبردست تیاریاں جاری ہیں ۔
وائس آف ایشیا15جون 2019 خبر نمبر23




بھارتی چیلنج کا سامنا کرنے کیلئے تیار ہیں، بابر اعظم

لندن(وائس آف ایشیا) بابراعظم کا کہنا ہے کہ بھارتی چیلنج کا سامنا کرنے کیلئے تیار ہیں۔پاکستان ٹیم کے ٹریننگ سیشن کے بعد میڈیا سے گفتگو میں بابر اعظم نے کہاکہ حریف کا بولنگ اٹیک اچھا لیکن ہمارے بیٹسمین بھی تیارہیں، ہرکھلاڑی100فیصد دینے کیلئے پر عزم ہے، یہ تاثر غلط ہے کہ پاکستان ٹورنامنٹ کی کمزور ٹیم ہے، جو گزر گیا اس کے بارے میں نہیں سوچ رہے اور نئے میچ پر توجہ ہے۔انہوں نے کہا کہ بھرپور محنت اور پلاننگ کے ساتھ بھارت کوہرائیں گے، کوئی اضافی دباؤ محسوس نہیں کررہا، بڑے میچ میں بڑی کارکردگی دکھانا چاہتا ہوں، جسپریت بمرا کے خلاف کوئی خاص پلاننگ نہیں۔ایک سوال پر بابر اعظم نے ویرات کوہلی کو اپنا آئیڈیل قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی ویڈیوز دیکھ کر اپنے کھیل کوبہتر بنانے کی کوشش کرتا ہوں،بھارتی کپتان بڑے بیٹسمین ہیں، ان کے کھیل میں بہتری وقت اورتجربے کے ساتھ آئی ہے، میں بھی کوشش کر رہا ہوں کہ فتح کا مشن مکمل کرنے کی عادت ڈالوں۔
وائس آف ایشیا15جون 2019 خبر نمبر22