Voice of Asia News

یوٹیلیٹی سٹور کارپوریشن میں کروڑوں کا غبن کرنے والے کو پھر سے عہد پر

لاہور (وائس آف ایشیا) یوٹیلیٹی سٹور کارپوریشن میں کروڑوں کا غبن کرنے والے کو پھر سے اعلیٰ عہد پر لگا دیا گیا تمام عدالتوں نے اس شخص کو کسی بھی سرکری نو لاہورکری دینے سے منع کر رکھا ہے،افسران کے جائز ناجائز کاموں میں ہمشہ سے سر گرم رہتا ہے بتایا گیا ہے کہ 1999میں رزیرااعظم پاکستان کی فوڈ سٹمپ سکیم کے جعلی ووچرز چھاپ کر کروڑں کا آٹا غائب کرنے والے ندیم اقبال کے خالاف ایف آئی اے نے مقدمہ در ج کیا اور اس کو نوکری سے نکال دیا گیا بعدازاں ندیم اقبال یوٹیلیٹی سٹور میں آگیااور یہاں آتے ہی اس نے ایک نام نہاد یونین بناکر اس کا خود ہی چیرمین بن گیا اور اس یونین کے ذریعے افسران سے ناجائز کام کرواتا رہا اور یوٹیلیٹی سٹور کے ملازمین کو بھی طرح طرح سے بلیک میل کرتا رہا اور کئی افراد کو نوکری کا جھانسہ دیکر پیسے بٹورنے بھی سرگرم رہا اورندیم اقبال نے اپنی اور افسران کی کریشن پر پردہ ڈالنے کے لیے جس میں چینی اور دیگر اشیاء میں کروڑوں کا غبن کیا گیا تھا وئرہاوس کو آگ لگوانے میں بھی پیش پیش رہا جس کی انکوئری میں ثابت ہو گیا کہ وئر ہاوس کو آگ لگائی گئی ہے جس سے کارپوریشن کو 25کروڑکا نقصان ہوا محکمہ انکوئری اور وانون نافذ کرنے والے اداروں کے جانب سے جرم ثابت پونے کے بعد ماتخت عدالتوں سے لے کر اعلیٰ عدلیہ نے بھی ندیم اقبال کو کسی بھی سرکاری ادارے میں کام کرنے سے روک دیا اور عدالت نے یہ فیٖصلہ دیا کہ ندیم اقبال کام کرنے کے قابل نے ہے اس لیے اس کو کوئی بھی اہم ذمہ داری نہ دی جائے اور نہ ہی کوئی سرکاری محکمہ میں نوکری دی جائے ان واضح احکامات کے باوجود خفیہ ہاتھوں نے اپنا کام کر دیکھایا۔ ندیم اقبال کو دوبارہ نہ صرف نوکری پر بحال کیا اس کو اعلیٰ عہد پر لگا دیا گیا جہاں اس نے پھر سے اپنا گھناؤنا کا م شروع کر دیا ہے

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے