Voice of Asia News

گیارہ بچوں پر مشتمل ہسپانوی خاندان کرونا کا شکار

میڈرڈ ( وائس آف ایشیا ) اسپین میں تیزی کے ساتھ پھیلنے والے کرونا وائرس کے نتیجے میں ہزاروں افراد ہلاک اور بیمار ہو چکے ہیں۔ برطانوی اخبار اپنی ایک رپورٹ میں اسپین کے ایک ایسے خاندان کا پتا چلایا جس کے گیارہ بچے ہیں اور وہ بچوں سمیت پورا خاندان کرونا کا شکار ہو چکا ہے۔کرونا کا شکار ہونے کے بعد متاثرہ خاندان کو شمالی مغربی اسپین میں الگ تھلگ کردیا گیا ہے۔ان سب میں کرونا وائرس کی تشخیص ہونے کے بعد علاقے میں تشویش کی لہر دوڑ گئی تھی۔خاندان میں بچوں کی ماں ا?یرین گریواس اس خاندان کی پہلی رکن تھیں جن کا ‘کوویڈ۔19کے ٹیسٹ کا مثبت نتیجہ ا?یا۔خاندانی سربراہ جوس ماریا سیپرین نے مقامی میڈیا کو بتایا کہ بچے ایک ایک کر کے متاثر ہوتے گئے۔ان میں سے کچھ کی صحت بہتر ہوگئی اور کچھ کی بدستور تشویشناک ہے،متاثرہ بچوں کی شناخت 15 سالہ کارمین ،14 سالہ فرنینڈو،14 سالہ لوئس 12 سالہ جوان پابلو ،11 سالہ جڑواں بچے میگئل اور مینوئل 10 سالہ الارو 8 سالہ ائرین 5 سالہ ایلیسیا 4 سالہ ہیلینا 3 سالہ جوز ماریا اور ایک سالہ بچی شامل ہیں،متاثرہ خاندان کے سربراہ نے مزید کہا کہ بچے بعض اوقات بیماری کی علامات ظاہر کرتے ہیں۔وہ سر درد اور قے کا شکار ہو جاتے ہیں اور پھر بہتر محسوس کرتے ہیں اور اگلے دن شاید وہ اسے یاد بھی نہیں کرتے ہیں۔اس خاندان کو دوسرے لوگوں سے الگ تھلگ کردیا گیا ہے کیونکہ ان کی وجہ سے کئی دوسرے افراد اس بیماری کا شکار ہو سکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر نے ہمیں بتایا کہ ہمیں وائرس کی وجہ سے مکمل طور پر گھر میں بند رہنا ہو گا اور کم سے کم دو ہفتے میں گھر سے باہر نہیں جا سکتے۔
وائس آف ایشیا،07 اپریل2020خبر نمبر 15

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے