Voice of Asia News

ترکی کے کارگو طیارے جنگی سازوسامان لئے طرابلس پہنچ گئے، ترھونہ اگلا ہدف

تریپولی (وائس آف ایشیا ) لیبیا میں نیشنل آرمی کا کہنا ہے کہ ترکی کے کارگو طیارے جنگی ساز و سامان اور گولہ بارود کی بھاری مقدار لئے استنبول شہر سے طرابلس پہنچ گئے ہیں۔لیبیا کی نیشنل آرمی کے عہدیدارغیاث سباق نے بتایا کہ ترکی کے فوجی کارگو طیارے گولہ بارود لئے طرابلس پہنچ گئے ہیں اور ان کا اگلا ہدف ترھونہ شہر ہے جہاں قومی وفاق حکومت لیبی فوج کے مراکز پرحملہ کرنا اور شہر کو لیبی فوج کے قبضے سے چھڑانا چاہتی ہے۔غیث اسباق نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ ترھونہ شہر کے اطراف میں لیبیا کی قومی وفاق فورسز لیبی فوج کو شکست دینے کیلئے ترکی فوج اور جنگجوؤں سمیت دیگر نوعیت کی امداد فراہم کررہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت لیبیا کی قومی وفاق حکومت کی وفادار فورسز کا اہم ترین ہدف ترھونہ شہر ہے اور لیبی حکومت دوسرے اتحادیوں کے ساتھ مل کر ترھونہ کو نیشنل ٓرمی کے قبضے سے چھڑانے کے لیے بھرپور کارروائی کی تیاری کررہی ہے۔اسباق نے کہا کہ لیبیا کی قومی وفاق حکومت نے شامی جنگجوؤں کی بڑی تعداد کو اسلحہ اور گولہ بارود سے لیس کرکے ترھونہ شہر کیاطراف میں تعینات کیا ہے۔ القرہ بوللی، مسلاتہ، تاجوار، تارغلات اور دیگر علاقوں میں شامی جنگجو تعینات کیے گئے ہیں جنہوں نے ترھونہ کو ملانے والے تمام راستے اور رسد کی گذرگاہیں بند کررکھی ہیں۔ادھر لیبیا کی قومی وفاق حکومت کی وفادار فورسز نے ترھونہ شہر کے عوام پر طیاروں سے انتباہی پمفلٹ تقسیم کیے گئے ہیں جن میں شہریوں سے کہا گیا ہے کہ وہ لیبی فوج کے مراکز سے دور رہیں اور اپنے گھروں کے اندر رہیں کیونکہ کسی بھی وقت لیبی فوج کے مراکز پر بمباری کی جاسکتی ہے۔
وائس آف ایشیا،23 مئی2020خبر نمبر 6

image_pdfimage_print

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے