Voice of Asia News

بھارت نے کشمیریوں کے تمام بنیادی حقوق سلب کررکھے ہیں، کل جماعتی حریت کانفرنس

سرینگر(وائس آف ایشیا )غیرقانونی طورپربھارت کے زیرقبضہ جموں و کشمیر میںکل جماعتی حریت کانفرنس نے کہاہے کہ بھارت نے جموںوکشمیر پرجابرانہ قبضہ کررکھا ہے اور اپنے ناجائز قبضے کو برقرار رکھنے کیلئے کشمیریوں کے تمام بنیادی حقوق سلب کررکھے ہیں ۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق کل جماعتی حریت کانفرنس کے ترجمان نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں کہاکہ بھارت مقبوضہ علاقے میں تمام بین الاقوامی قوانین کی دھجیاں اڑاکر کشمیریوں کو قتل ، گرفتاراورنظربند کررہا ہے اوران کی املاک کو تباہ کررہاہے ۔انہوں نے کہابھارت 5اگست 2019 کے بعدمقبوضہ علاقے میں آبادی کا تناسب تبدیل کرنے اور کشمیریوں کی آوازکو دبانے کے لئے نت نئے قوانین نافذ کررہا ہے جن میں اراضی قوانین ، ڈومیسائل قوانین اور میڈیا ایکٹ شامل ہے ۔انہوںنے کہاکہ مقبوضہ جموںوکشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے کے بعد کشمیریوں کی آواز کو دبانے کے لئے سینکڑوں حریت پسند رہنمائوں اورکارکنوںکو جیلوں میں نظربند کیاگیا ہے جن میں محمد یاسین ملک، شبیر احمد شاہ ، عبدالحمید فیاض، آسیہ اندرابی ، نعیم احمد خان ، الطاف احمد شاہ اور ایاز اکبر شامل ہیں۔ترجمان نے کہاکہ بھارت مقبوضہ جموںوکشمیر کی سنگین صورتحال سے عالمی برادری کی توجہ ہٹانے کے لئے کنٹرول لائن پر معصوم شہریوں کو نشانہ بنارہاہے ۔ انہوںنے کہا کہ فسطائی ذہنیت کا حامل بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی اپنے ہمسایہ ممالک کو مرعوب کرنے کے لئے دھمکیاں دے کر نہ صرف علاقائی بلکہ عالمی امن کو بھی خطرے میں ڈال رہا ہے ۔ انہوںنے امریکہ سمیت عالمی طاقتوں سے اپیل کی کہ وہ کنٹرول لائن پر بھارتی جارحیت اور مقبوضہ کشمیر میںجاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کانوٹس لیں اور علاقائی امن کے لئے پیدا ہونے والے خطرات کو روکنے کے لئے بھارت پر دبائو ڈالیں ۔

ترجمان نے عالمی برادری سے مطالبہ کیا کہ وہ تنازعہ کشمیر کو کشمیریوں کی خواہشات اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرارادوں کے مطابق حل کرانے کے لیے اپنا کردار ادا کرے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے