Breaking News
Voice of Asia News

مقبوضہ کشمیر میں 1988سے اب تک40ہزار سے زائد شہریوں کو شہید کیا گیا

سرینگر (وائس آف ایشیا) مقبوضہ جموں وکشمیر میں نومبر 2020میں بھارتی فورسز کے ہاتھوں15کشمیریوں کو شہید کردیا گیا۔ 2020میں سرینگر، شوپیاں، اننت ناگ اور پلوامہ میں مختلف132آپریشنز میں219نوجوان عسکریت پسندوں کو شہید کیا گیا۔ جبکہ مختلف واقعات میں31شہری بھی شہید ہوئے۔مقبوضہ کشمیر میں جاری تحریک آزادی کشمیر میں سال 1988سے اب تک مجموعی طور پر40 ہزار سے زائد شہریوں کو شہید کیا گیا۔ نومبر2020 کے دوران بھارتی فورسز نے مبینہ طور پر مختلف4واقعات میں کم از کم7افراد کو گرفتارکیا جن میں زیادہ ترنوجوان شامل ہیں۔ یہ گرفتاریاں مختلف علاقوں میں جاری کم و بیش290سرچ آپریشنز کے دوران کی گئیں۔گذشتہ سال اگست میں نئی دہلی نے آرٹیکل 370کو منسوخ کرتے ہوئے مقبوضہ جموں و کشمیر کے علیحدگی پسند گروپوں کو عملی طور پر کچلنے کی حکمت عملی اپنائی ہے۔ مرکزی دھارے میں شامل سیاسی جماعتوں کے لئے بھی اپنی سرگرمیاں کرنے کے لئے بہت کم جگہ ہے اور ان میں سے کسی نے بھی ابھی تک نئی دہلی کے جموں و کشمیر کی خودمختاری کو واپس لینے کے یکطرفہ فیصلے کے خلاف کھلے عام آواز نہیں اٹھائی ہے۔مقبوضہ جموں وکشمیر میں رواں سال 2020میں132واقعات میں250کشمیریوں کو شہید کر دیا گیا۔جن میں جنوری میں 22،فروری میں 12، مارچ میں 13، اپریل میں 33 ،مئی میں 16،جون میں 51، جولائی میں 24، اگست میں 20،ستمبر میں 20، اکتوبر24 میں اور نومبر میں 15کشمیریوں کو شہید کیا گیا۔جبکہ 52سیکورٹی اہلکار ہلاک ہوئے۔ پولیس کے مطابق رواں سال اسلحہ برآمدگی کے157واقعات ریکارڈ کئے گئے۔ اس سال دھماکوں کے 36واقعات میں42شہریوں اور ایک سیکورٹی اہلکار کی اموات ہوئیں جبکہ23سیکورٹی اہلکارزخمی ہوئے۔سال 2020میں131مختلف واقعات میں 273افراد کو گرفتار کیا گیا۔سرکاری اعداد وشمارکے مطابق2019 میں مقبوضہ جموں و کشمیر میں 160 حریت پسند وں کوشہید اور 102 کو گرفتار کیا گیا۔2019 میں مجموعی طور پر 158 حریت پسند شہید کیے گئے جبکہ 2018 میں 254 اور 2017 میں 213 حریت پسند شہید ہوئے تھے۔ مقبوضہ کشمیر میں جاری تحریک آزادی کشمیر میں سال 1988سے اب تک مجموعی طور پر40750 شہریوں کو شہید کیا گیا جن میں 25185حریت پسند اور 15565عام شہری شامل ہیں۔ان اعداد و شمار میں 1988سے 2000تک 12396حریت پسنداور 10310عام شہریوں کی شہادت کی تعداد غیر مصدقہ ہے۔1988سے اب تک مقبوضہ کشمیر میں6990سیکورٹی اہلکار ہلاک ہوئے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے