Voice of Asia News

امریکا کی جانب سے جاپان کو اوکیناوا واپس کیے جانے کے 50 سال مکمل ہونے پر تقریب،شہنشاہ اور ملکہ کی آن لائن شرکت

ٹوکیو (وائس آ ف ایشیا) امریکا کی جانب سے جاپان کے جنوبی شہر اوکیناوا کی جنگ کے بعد جاپانی حکومت کو واپسی کے 50 سال مکمل پر شاندار تقریب کا انعقاد کیا گیا ۔ جاپانی خبررساں ادارے کے مطابق تقریب میں شہنشاہ نارُو ہیٹو اور ملکہ مَساکو نے ٹوکیو سے آن لائن شرکت کی۔ تقریب سے خطاب میں شہنشاہ نے کہا کہ جب میں اوکیناوا کے لوگوں کی تاریخ کو اپنے تصور میں لاتا ہوں (جو مشکلات سے بھرے راستے پر چلتے رہے) شدید جذبات سے لبریز ہوجاتا ہوں۔وزیر اعظم فُومیو کِشیدا نے کہا کہ اوکیناوا کی واپسی کے 50 سال بعد بھی اس کے لوگ امریکی فوجی اڈوں کی وجہ سے خاصا بھاری بوجھ برداشت کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت اس بات کو دل سے سمجھتی ہے اور بوجھ کم کرنے کے لیے پُرعزم رہے گی۔اوکیناوا کے گورنر تماکی ڈینی نے کہا کہ وہ حکومت سے کہنا چاہیں گے کہ وہ پوری قوم کو اوکیناوا کی واپسی کی اہمیت اور دائمی امن کی اہمیت سے آگاہ کرے۔ انہوں نے حکومت سے کہا کہ وہ ایک پُرامن اور خوشحال اوکیناوا کے قیام کے لیے خلوص نیت سے کوشش کرے جہاں صوبے کے تمام شہری حقیقی معنوں میں خوشی محسوس کر سکیں۔ واضح رہے کہ اوکیناوا، جاپان میں تقریباً 70 فیصد امریکی فوجی تنصیبات کی میزبانی کرتا ہے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں